24 جولائ, 2014 | 25 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

پنجاب، گلگت بلتستان میں ٹریفک حادثے، بیس افراد ہلاک

امدادی کارکن۔ اے ایف پی فوٹو

اسلام آباد: آج صبح ملک کے مختلف شہروں میں ہونے والے تین مختلف ٹریفک حادثات میں بیس افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوگئے۔ اطلاعات کے مطابق زخمیوں میں سے بعض کی حالت تشویشناک ہے۔

ہلاکتوں کا سبب بنے والے حادثات راولپنڈی، استور اور میرپور کے قریب پیش آئے۔

تفصیلات کے مطابق منگل کی صبح نہڑ سے راولپنڈی جانے والی ایک مسافر بس کہوٹہ کے قریب گاؤں پنجاڑ کے قریب کھائی میں جاگری۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق حادثے کے وقت بس میں کم ازکم ستر مسافرسوار تھے، جن میں سے چھ افراد موقع پر ہی ہلاک ہوگئے۔ پانچ زخمی اسپتال منتقل کیے جانے کے دوران دم توڑ گئے۔

اسپتال ذرائع کا کہنا ہے کہ زخمیوں کی تعداد بیس ہے، جن میں سے چند کی حالت نازک ہے۔

پولیس نے ابتدائی طور پر کہا ہے کہ حادثہ تیز رفتاری کے باعث پیش آیا۔

دوسرا المناک حادثہ گلگت بلتستان کے علاقے استور میں پیش آیا، جہاں مسافر ویگن دریائے پری شنگ میں جاگری،جس کے نتیجے میں آٹھ افراد ہلاک اور بیس زخمی ہوگئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ حادثے کے وقت ویگن میں گنجائش سے زیادہ مسافر سوار تھے۔ پولیس کے مطابق ایک موقع پراووَر لوڈنگ کے باعث ڈرائیور ویگن پر قابو نہ رکھ سکا اور وہ دریا میں جاگری۔

مقامی افراد اور پولیس اہلکاروں نے امدادی کارروائیاں کرتے ہوئے تمام زخمیوں اور لاشوں کو سول اسپتال، استور منتقل کردیا، جہاں اسپتال حکام کے مطابق زخمیوں میں سے بیشتر کی حالت نازک ہے۔

علاوہ ازیں،آزاد کشمیر کے علاقے میرپور سے دینہ جانے والی کار تیز رفتاری کے باعث درخت سے ٹکراگئی، جس کے باعث ایک خاتون ہلاک اور تین افراد زخمی ہوگئے۔

دوسری طرف، ایوان صدر سے جاری بیان کے مطابق صدر آصف علی زرداری نے آج صبح پیش آنے والے المناک ٹریفک حادثات میں ہونے والی ہلاکتوں گہرے دکھ  کا اظہار کیا ہے۔

اس حصے سے مزید

کسی جنرل سے رابطہ نہیں ہے،طاہر القادری

پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ کا کہنا ہے کہ ہم فوج کو دعوت نہیں دے رہے، ملک میں مارشل لاء نہیں لگے گا۔

پاک و ہند سیکریٹری خارجہ 25 اگست کو ملیں گے

ترجمان وزارت خارجہ کے مطابق نوازشریف اور نریندر مودی نے مئی میں نئی دہلی میں اس ملاقات پر اتفاق کیا تھا۔

چوہدری نثار سے امریکی سفیر رچرڈ اولسن کی ملاقات

خطے میں استحکام کے لیے پاک امریکہ تعاون اور رابطہ کاری کو فروغ دینا ہوگا، وزیر داخلہ چوہدری نثار۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

بے وجہ پوائنٹ اسکورنگ

ہوسکتا ہے عمران خان پی ایم ایل-ن کی حکومت گرانا چاہتے ہوں لیکن کیا وہ واقعی ملک اور اسکے جمہوری اداروں کے لئے خطرہ ہیں؟

کیا بڑا بہتر ہے؟

ہم اپنی جنوب ایشیائی شناخت سے پیچھا کیوں چھڑانا چاہتے ہیں جو تاریخی اعتبار سے عرب کے مقابلے میں کہیں زیادہ مالامال ہے؟

بلاگ

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔

کھیلنے دو: گراؤنڈز کہاں ہیں؟

سیدھی سی بات ہے، ملائی تبھی زیادہ اور بہترین ہوگی جب دودھ زیادہ ہوگا-

مووی ریویو: پیزا - پلاٹ اچھا ہے

اگرچہ سکرین پلے کافی کمزور ہے مگر فلم کی کہانی میں آنے والے موڑ دیکھنے والوں کی دلچسپی برقرار رکھتے ہیں۔

جہادی برائے فروخت

اگر اب بھی سمجھ نہ آئی تو پاکستان کا حشر بھی عراق و شام سے مختلف نہیں ہوگا۔