20 ستمبر, 2014 | 24 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

احتساب عدالت نے شریف خاندان کو دوبارہ نوٹس جاری کردیئے

Nawaz-sharif-AP670
پاکستان مسلم لیگ ن کے سربراہ، نوازشریف: فا ئل تصویر اے پی

راولپنڈی: شریف خاندان کے خلاف نیب ریفرنس بحالی کی سماعت پندرہ ستمبر تک ملتوی۔ احتساب عدالت نے شریف خاندان کو دوبارہ نوٹس جاری کردیئے۔

شریف برادران کے وکیل اکرم شیخ کا کہنا ہے پرانے کیسز کھولنے کا کوئی فائدہ نہیں اور ان ریفرنسز کی سماعت غیر معینہ مدت ملتوی کی جائے۔

احتساب عدالت راولپنڈی کے جج عبد الخالق کی عدالت میں شریف برادران کے خلاف نیب ریفرنس کی بحالی کی سماعت کی۔

وکیل اکرم شیخ نے عدالت کو بتایا کہ ہائیکورٹ نے ان ریفرنسز کی سماعت غیر میعنہ مدت کے لیے  ملتوی کی تھی۔

احتساب عدالت کے جج عبدالخالق نے استفسار کیا کہ کیا حدیبیہ پیپر ملز میں اسحاق ڈار شریف خاندان کے خلاف وعدہ معاف گواہ بنے تھے؟

جس پر اکرم شیخ نے جواب دیا کہ انہیں معلوم نہیں۔

نیب کے پراسیکیوٹر چوہدری ریاض نے کہا کہ مقدمات غیر معینہ مدت کیلئے نیب نے نہیں عدالت نے ملتوی کیے تھے۔

اکرم شیخ نے  اپنے دلائل میں کہا کہ ہائیکورٹ نے ان ریفرنسز کے خلاف حکم امتناعی دے رکھا ہے۔

خیال رہے کہ شریف خاندان کے کیسز دو ہزارایک میں  ملزمان کے بیرون ملک جانے پر غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کئے گئے تھے۔

لیکن شریف برادران کے ملک میں واپس لوٹنے کے بعد احتساب عدالت نے ایک بار پھر مقدمات کی سماعت شروع کی تھی جو سنہ دو ہزار دس میں ایک بار پھر غیر معینہ مدت تک کے لیے ملتوی کردی گئی تھی۔

اس کے علاوہ اٹھارہ جولائی کو احتساب عدالت نے نیب سے میاں نواز شریف اور شہباز شریف کے خلاف کرپشن کے تین ریفرنسز سے متعلق ریکارڈ طلب کرتے ہوئے نواز شریف اور شہباز شریف کو اٹھائیس جولائی کے لیے نوٹس جاری کردیے تھے۔

اس حصے سے مزید

ناقص انتخابی سیاہی کے استعمال پر اداروں کے ایک دوسرے پر الزامات

ای سی پی نے پی سی ایس آئی آر کی جانب سے فراہم کردہ سیاہی کے معیار کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

نیا آئی ایس آئی چیف، وزیراعظم کے لیے مشکل انتخاب

ڈائریکٹر جنرل آئی ایس آئی لیفٹننٹ جنرل ظہیر الاسلام یکم اکتوبر کو ریٹائر ہورہے ہیں۔

'دھرنوں کے خلاف مذمتی قرارداد زرداری کی منظوری کے بعد پیش ہوئی'

پیپلزپارٹی کی جانب سے یہ اصرار کیا گیا کہ وہ اس کی پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری سے منظوری لیں گے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

رودرہیم کا سبق

بچوں پر ہونیوالے جنسی تشدد پر ہماری شرمندگی کی سمت غلط ہے۔ شرم کی بات تو یہ ہے کہ ہم اس کو روکنے کی کوشش نہ کریں-

رکاوٹیں توڑ دو

اشرافیہ تعلیمی نظام کا بیڑہ غرق کرنے پر تلی ہوئی ہے جو خاص طور سے 1970ء کی دہائی کے بعد سے بد سے بدتر ہورہاہے۔

بلاگ

مووی ریویو: دختر -- دلوں کو چُھو لینے والی کہانی

اپنی تمام تر خوبیوں اور کچھ خامیوں کے ساتھ اس فلم کو پاکستانی نکتہ نگاہ سے پیش کیا گیا ہے۔

پھر وہی ڈیموں پر بحث

ڈیموں سے زراعت کے لیے پانی ملتا ہے، پانی پر کنٹرول سے بجلی پیدا کی جاسکتی ہے اور توانائی بحران ختم کیا جاسکتا ہے۔

شاہد آفریدی دوبارہ کپتان، ایک قدم آگے، دو قدم پیچھے

اس بات کی ضمانت کون دے گا کہ ماضی کی طرح وقار یونس اور شاہد آفریدی کے مفادات میں ٹکراؤ پیدا نہیں ہوگا۔

وارے نیارے ہیں بے ضمیروں کے

ماضی ہو یا حال، اربابِ اختیار و اقتدار کی رشوت اور بدعنوانی کے خلاف کھوکھلی بڑھکوں کی حیثیت محض لطیفوں سے زیادہ نہیں۔