19 اپريل, 2014 | 18 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

لاہور میں دو بم دھماکے، کم ازکم بیس زخمی

بادامی باغ فروٹ منڈی میں دھماکوں کے بعد شہر میں سکیورٹی ہائی الرٹ اور اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔ – فائل فوٹو

لاہور: بدھ کے روز لاہور کے علاقے بادامی باغ میں واقع فروٹ منڈی میں یکے بعد دیگرے دو دھماکوں سے بیس سے زائد افراد زخمی ہوگئے جن میں پانچ کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے، اسکے ساتھ پورے شہر میں سکیورٹی ہائی الرٹ اور اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پہلا بم فروٹ منڈی کے داخلی دروازے کے پاس ریڑھی کے نیچے نصب کیا گیا تھا جبکہ دوسرا دھماکہ فروٹ منڈی سےمتصل ٹرک اڈے میں ہوا۔

دھماکے کے بعد پولیس اور ریسکیو اہلکاروں کی بھاری نفری نے جائے وقوعہ کو گھیرے میں لے لیا اور زخمیوں کومیاں منشی اورمیواسپتال منتقل کردیا گیا،جبکہ اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کرکے سینئرڈاکٹرزکو بھی طلب کرلیاگیا۔

لاہور کے مختلف علاقوں میں فروٹ منڈی دھماکوں کے بعد سیکیورٹی سخت کردی گئی ہے۔

وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے دھماکے کے زخمیوں کو بہترین طبی امداد فراہم کرنے کی ہدایات کرتے ہوئے آئی جی پولیس لاہور سے واقعے کی جلد از جلد رپورٹ طلب کرلی ہے۔

اس حصے سے مزید

'طالبان کے مطالبات قبول کرنے میں کوئی حرج نہیں'

جماعتِ اسلامی کے امیر سراج الحق کا کہنا تھا کہ حکومت کو چاہیے کہ وہ مطالبات پر سنجیدگی سے غور کرے۔

وزیر اعظم کیخلاف توہینِ عدالت کی درخواست مسترد

لاہور ہائی کورٹ نے اپنے فیصلے میں مؤقف اختیار کیا کہ وزیرِ اعظم کو آئین کے تحت استثنیٰ حاصل ہے۔

ڈیرہ غازی خان: ٹریفک حادثے میں 14 ہلاکتیں

یہ واقعہ ڈیرہ غازی خان کے علاقے کوٹ چٹھہ میں اس وقت پیش آیا جب ایک تیز رفتار بس اسٹاپ پر کھڑے لوگوں پر چڑھ گئی۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔

ریویو: بھوت ناتھ - ریٹرنز

مرکزی کرداروں سے لیکر سپورٹنگ ایکٹرز سب اپنی جگہ کمال کے رہے اور جس فلم میں بگ بی ہوں اس میں چار چاند تو لگ ہی جاتے ہیں۔

میانداد کا لازوال چھکا

جب بھی کوئی بیٹسمین مقابلے کی آخری گیند پر اپنی ٹیم کو چھکے کے ذریعے جتواتا ہے تو سب کو شارجہ ہی یاد آتا ہے۔