20 اپريل, 2014 | 19 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی: تین افراد ہلاک، رینجرز اور پولیس ایکشن میں

کراچی میں پرتشدد واقعات کا سلسلہ جاری۔ رائٹرز تصویر

کراچی: کراچی میں کل رات سے اب تک تین افراد کو قتل کر دیا گیا۔ رینجرز کے بعد اب پولیس بھی ایکشن میں آگئی اور سرچ آپریشن شروع کردیا گیا ہے۔

علاوہ ازیں کراچی میں اورنگی ٹاون کے علاقے مییں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے تین افراد زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو نجی اسپتال منتقل کیاگیا جہاں ایک زخمی دوران علاج چل بسا۔

بلدیہ ٹاؤن میں فائرنگ سے دو افراد ہلاک ہوئے۔

دوسری جانب پرانی سبزی منڈی کے قریب پولیس نے سرچ آپریشن کے دوران تین مشتبہ افراد کو حراست میں لے کر نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے۔

آپریشن میں پولیس کمانڈوز نے بھی حصہ لیا۔

ذرائع کے مطابق یہ آپریشن گینگ وار کے ملزمان کی موجودگی کی اطلاع پر کیا گیا۔

اس حصے سے مزید

سکھر: بس- ٹرالر میں تصادم، 41 افراد ہلاک

حادثہ اس وقت پیش آیا جب کراچی سے ڈیرہ غازی خان جانے والی بس پنوں عاقل کے قریب سامنے سے آنے والے ٹریلرسے ٹکراگئی۔

معروف صحافی حامد میر قاتلانہ حملے میں زخمی

سینئر صحافی اور مایہ ناز ٹیلی ویژن اینکر پرسن حامد میر قاتلانہ حملے میں زخمی ہو گئے، حالت خطرے سے باہر۔

لشکر جھنگوی کے چھ مبینہ عسکریت پسند گرفتار

پولیس نے کالعدم فرقہ وارانہ گروپ سے تعلق رکھنے والے چھ افراد کو گرفتار کرنے کا دعوٰی کیا ہے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔