01 اگست, 2014 | 4 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

خیبرایجنسی میں دھماکہ، نیٹو کنٹینرز کو جزوی نقصان

نیٹوکے سامان کے ساتھ ایک پاکستانی ٹرک افغانستان جانے کیلئے تیار۔ رائٹرز تصویر

پشاور: خیبرایجنسی میں جمرود بائی پاس روڈ پر سڑک کنارے ریمورٹ کنٹرول نصب بم پھٹنے سے نیٹو کنٹینرز کو جزوی نقصان پہنچا ہے۔

خاصہ دار فورس کے مطابق جمرود بازار بائي پاس روڈ پر نيٹو سپلائی پر حملے کے لئے بم نصب کيا گيا تھا تاہم بم اس وقت پھٹا جب نيٹو سپلائي کا قافلہ گزر چکا تھا۔

دھماکے کے بعد سيکيورٹي اور خاصہ دار فورس نے علاقے کو گھيرے ميں لے ليا۔

دوسری طرف پشاور کے کینٹ بازار میں سیکورٹی فورسز کے سرچ آپریشن کے دوران تین عسکریت پسند ہلاک ہوگئے۔

پوليس کے مطابق فورسز کی قيد سے چند عسکریت پسندوں کے فرار ہونے کے بعد پشاور کے کینٹ ایریا میں سرچ پریشن کیا گیا۔

اس حصے سے مزید

وزیراعلیٰ پنجاب کا بنوں میں آئی ڈی پیز کیمپوں کا دورہ

شہباز شریف کا کہنا تھا ان حالات کو درست کرنے کا وقت ہے اور وہ ملک میں قیامِ امن تک چین سے نہیں بیٹھیں گئے۔

پاک افغان سر حد پر دہشت گردوں کا حملہ، پاکستان کا شدید احتجاج

عسکری ذرائع کے مطابق تقریباً ستر سے اسی دہشت گردوں نے گزشتہ رات افغانستان کی حدود سے پاکستانی چیک پوسٹ پر حملہ کیا۔

لوئر دیر: رکن صوبائی اسمبلی کے حجرے میں فائرنگ سے چھ ہلاکتیں

ضلع کرک میں بھی دوگروہوں کے درمیان پرانی دشمنی پر فائرنگ ہوئی جس کے نتیجے میں تین افراد ہلاک اور دو زخمی ہوئے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

بجٹ اور صحت کا شعبہ

ایسا لگتا ہے کہ صحت کے بجٹ کی بڑھتی ہوئی ضروریات کیلئے عطیات دینے والے ملکوں کے پیسے پر زیادہ انحصار کیا جاتا ہے

جنگ اور ہوائی سفر

پرواز کرنے کا معجزہ، جو انسانی ذہانت کا خوشگوار مظہر ہے، انسان کے انتقامی جذبات اور خون کی پیاس کی نذر ہوگیا ہے

بلاگ

ساغر صدیقی : ایک دل شکستہ شاعر

وہ خوبصورت نظمیں لکھتے، پھر بلند آواز میں خالی نگاہوں سے پڑھتے، پھر ان کاغذات کو پھاڑ دیتے جن پر وہ نظمیں لکھی ہوتیں

پکوان کہانی: کابلی پلاؤ - شمال کی شان

گوشت میں پکے چاول اس خطے کے جنگجوؤں کی ذہنی مطابقت اور جسمانی ساخت کے لیے موزوں تھے۔

ایک پاکستانی صحافی کی امریکا یاترا

میں نے جب یہ پوچھا کے کیا وہ پاکستان جانا چاہے گا تو اس کا کہنا تھا کے ہاں مجھے پاکستان جانے کا بہت شوق ہے۔

مووی ریویو: 'کک' صرف سلمان خان کی فلم نہیں

باصلاحیت اداکاروں کے ساتھ فلم بنا کر ساجد ناڈیا والا نے خود کو ایک قابل ڈائریکٹر منوا لیا ہے۔