01 اگست, 2014 | 4 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

سرحد پار حملہ، نو عسکریت پسند ہلاک

طالبان گن پکڑے ہوئے۔—فائل فوٹو

ٹیمرگرا: دیر لوئر کے قبائلی علاقے میں جمعرات کے روز سیکیورٹی فورسز کی سرحد بار حملے میں جوابی  فائرنگ سے نو عسکریت پسند ہلاک اور تیرہ زخمی ہوگئے۔

سرکاری ذرائع کے مطابق افغانستان سے بڑی تعداد میں عسکریت پسند پاکستان میں سورج غروب ہونے سے پہلے داخل ہوئے اور ٹیریپاؤ کنڈاؤ کے قریب ایک چیک پوسٹ پر حملہ کیا۔

ذرائع کے مطابق حملہ آوروں اور سیکورٹی اہلکاروں کے درمیان آدھے گھنٹے تک فائرنگ ہوتی رہی لیکن سیکیورٹی فورسز میں سے کسی بھی ہلاکت کی خبر نہیں آئی۔

البتہ سرحدی علاقے کے قریب بارودی سرنگ پھٹنے سے دو سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہوگئے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق گزشتہ دو سالوں میں عسکریت پسندوں کے طرف سے کیے گئے ستر سے زیادہ  حملوں میں متعدد سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔ لیکن کسی بھی آزاد ذرائع سے اس بات کی تصدیق نہیں ہوپائی ہے۔

اس حصے سے مزید

باجوڑایجنسی:سرحد پار سے عسکریت پسندوں کا حملہ، ایف سی اہلکار ہلاک

عسکری حکام کے مطابق پاک افغان سرحد پر تحصیل مہمند میں جمعہ کے روز یہ واقعہ پیش آیا۔

سعودی ایئر لائن کا پشاور سروس 7 اگست تک بند رکھنے کا فیصلہ

سعودی ایئرلائن نے پشاورکے باچا خان انٹرنیشنل ائر پورٹ سے اپنا فلائٹ آپریشن اکتیس جولائی کو بحال کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

صوابی: فائرنگ سے بچے سمیت تین ہلاک

مسلح شخص نے ایک موٹرسائیکل سوار پر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں ایک آٹھ سالہ بچہ ہلاک اور اس کے انکل زخمی ہوگئے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ہمارا پارٹ ٹائم لیڈر

اتنی ناکارہ لیڈرشپ کی مثال مشکل سے ملیگی جس میں کسی دوراندیشی کی کوئی جھلک نہ ہو-

بجٹ اور صحت کا شعبہ

ایسا لگتا ہے کہ صحت کے بجٹ کی بڑھتی ہوئی ضروریات کیلئے عطیات دینے والے ملکوں کے پیسے پر زیادہ انحصار کیا جاتا ہے

بلاگ

پکوان کہانی: موسم گرما کی سوغات 'آم

پرانے وقتوں کے لوگوں کی دلچسپ تصور اور حکمت کی بدولت، پھلوں کا بادشاہ عام انسان کی غذا بن گیا۔

پاکستان میں اسٹارٹ اپس اب تک ناکام کیوں؟

آجکل یہ فیشن سا بن گیا ہے کہ ہر کوئی یہی کہتا نظر آ رہا ہے کہ اس کے پاس 'اسٹارٹ اپ' ہے-

ساغر صدیقی : ایک دل شکستہ شاعر

وہ خوبصورت نظمیں لکھتے، پھر بلند آواز میں خالی نگاہوں سے پڑھتے، پھر ان کاغذات کو پھاڑ دیتے جن پر وہ نظمیں لکھی ہوتیں

پکوان کہانی: کابلی پلاؤ - شمال کی شان

گوشت میں پکے چاول اس خطے کے جنگجوؤں کی ذہنی مطابقت اور جسمانی ساخت کے لیے موزوں تھے۔