02 اکتوبر, 2014 | 6 ذوالحجہ, 1435
ڈان نیوز پیپر

سی این این، ٹائم میگزین کے فرید زکریا معطل

فرید زکریا۔ رائٹرز فوٹو

نیویارک: سی این این کے میزبان اور ٹائم میگزین کے ایڈیٹر-ایٹ-لارج فرید زکریا کو سرقے کے الزام میں معطل کردیا گیا ہے۔

این ڈی ٹی وی کے مطابق فرید زکریا پر الزام ہے کہ انہوں نے ٹائم میگزین میں چھپنے والے اپنے کالم میں کسی دوسرے مصنف کے مضمون کے کچھ حصے استعمال کیے تھے۔

ان کا یہ کالم ٹائم میگزین کے بیس آگست کے شمارے میں چھپا تھا جس میں انہوں نے جل لیپور کے دی نیو یارکر میں تئیس اپریل کو چھپنے والے ایک مضمون کے کچھ حصے 'چرائے' تھے۔

البتہ فرید زکریا نے جمعے کے روز اپنی غلطی تسلیم کرتے ہوئے معافی مانگ لی ہے۔ انھوں نے اعتراف کیا ہے کہ ان سے بہت بڑی غلطی ہوئی ہے۔

ٹائم میگزین کے ترجمان کا کہنا ہے کہ میگزین نے ان کی معافی قبول کرلی ہے لیکن ان کے کالم کو ایک مہینے کے لیئے معطل کردیا جائے گا۔

دوسری طرف سی این این نے بھی فرید زکریا کے پروگرام کو غیر معینہ مدت کے لیئے معطل کردیا۔

اب سی این این پر فرید زکریا کے پروگرام 'جی پی ایس' کی جگہ کوئی اور پروگرام دیکھایا جائے گا۔

اس حصے سے مزید

عید الاضحیٰ پر پاکستانی سینماﺅں پر تین نئی فلمیں

اگر آپ تین روزہ تعطیلات کے دوران سینماﺅں کا رخ کرنا چاہتے ہیں تو ان فلموں کا مختصر جائزہ آپ کے لیے مددگار ثابت ہو۔

پاکستانی رائٹر پر انڈیا کی کہانی چوری کرنے کا الزام

سمیرا فضل پر الزام ہے کہ انہوں نے اپنے ڈرامے 'میرا نصیب' کی کہانی ہندوستانی ادیب کی کتاب 'سسٹر آف مائی ہارٹ' سے لی ہے۔

ڈاکومینٹری 'آؤٹ لاڈ ان پاکستان' کے نام ایمی ایوارڈ

کائنات سومرو کی داستان، جس نے ظالموں کی درندگی کا شکار ہونے کے بعد عدالت کا دروازہ کھٹکھٹایا تھا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

جنوبی پنجاب کا کیس

پنجاب اس وقت دنیا کی سب سے بڑی وفاقی اکائیوں میں سے ہے۔ آبادی اور رقبے کے لحاظ سے یہ دنیا کے کئی ممالک سے بھی بڑا ہے۔

ماؤں اور بچوں کے قاتل ہم

پاکستان سے کم فی کس آمدنی رکھنے والے ممالک پیدائش کے دوران ماؤں اور بچوں کی اموات پر قابو پا چکے ہیں۔

بلاگ

کیا آپ کی گائے برانڈڈ ہے؟

ہرعید الاضحیٰ کے ساتھ جانوروں پر شوبازی بڑھتی ہی جارہی ہے، جس سے اس مذہبی تہوار کی روحانیت خطرے میں پڑ گئی ہے۔

غیر ملکی سرمایہ کاری: حقیقت یا سراب؟

حکومت نے کئی ارب روپے سے میٹرو بس منصوبہ شروع کر رکھا ہے مگر عوام کو سیلاب سے بچانے کے لیے کوئی منصوبہ نہیں ہے۔

گو نواز گو!

اس ملک میں پڑھے لکھے لوگوں کی قدر ہی نہیں۔ جب تک پڑھے لکھوں کو وی آئی پی پروٹوکول نہیں دیا جاتا یہ ملک ترقی نہیں کرسکتا

قدرتی آفات اور پاکستان

قدرتی آفات سے پہلے انتظامات پر ایک ڈالر جبکہ بعد میں سات ڈالر خرچ ہوتے ہیں، اس کے باوجود ہم پہلے سے انتظامات نہیں کرتے۔