17 ستمبر, 2014 | 21 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

کوئٹہ میں موبائل سروس معطل

کوئٹہ میں امن و امان کی ابتر صورتحال کے پیش نظر حکومت نے موبائل سروس معطل کردی ہے۔ فائل فوٹو

کوئٹہ: کوئٹہ میں امن و امان کی ابتر صورتحال کے پیش نظر حکومت نے موبائل سروس معطل کردی ہے۔

ہر سال کی طرح اس سال بھی یوم آزادی کے موقع پر کوئٹہ شہر اور ملحقہ علاقوں میں موبائل کے تمام کمپنیوں کی سروس معطل ہے۔

سروس معطل ہونے سے لوگوں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

سیکیورٹی ذرائع کے مطابق سروس بند ہونے سے عسکریت پسند ایک دوسرے کے ساتھ رابطہ نہیں کرسکتے ہیں اور یوم آزادی کے موقع پر موبائل سروس معطل کرنا امن کے قیام کیلیے ضروری ہے۔

دوسری جانب، کوئٹہ اور بلوچستان کے دیگر علاقوں میں امن وامان قائم رکھنے کیلیے صوبائی حکومت نے سخت حفاطتی انتظامات کیے ہیں۔

کوئٹہ شہر میں اہم سرکاری مقامات اور تنصیبات کے باہر پولیس اور بلوچستان کانسٹیبلری کے ساتھ ساتھ فرنٹیر کور کو بھی تعینات کیا گیا ہے۔

 

اس حصے سے مزید

شمالی وزیرستان: فورسز کی چوکی پر حملہ ناکام، گیارہ شدت پسند ہلاک

ذرائع کے مطابق افغان سرحد کی جانب سے کیے گئے اس دہشت گرد حملے میں تین ایف سی اہلکار بھی ہلاک ہوئے ہیں۔

خیبر ایجنسی: فضائی کارروائی میں 20 مبینہ دہشت گردہلاک، 5 ٹھکانے تباہ

سرکاری ذرائع نے بھی وادی تیراہ، جتوئی اور راجگل میں فضائی کارروائی میں مبینہ دہشت گردوں کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کا کسی صورت اسمبلی تحلیل نہ کرنے کا اعلان

میں نے اسمبلی کے اراکین سے وعدہ کیا ہے کہ میں مستعفی تو ہوسکتا ہوں مگر اسمبلی تحلیل نہیں کروں گا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ڈیم، کینال، بیراج، اور ماحول

ہندوستانی پنجاب میں زیادہ بارشیں ہوئیں، جسکی وجہ سے اپ سٹریم کا پانی پاکستانی چناب اور جہلم میں بہہ آیا ہے

انتخابی اصلاحات: اگلا قدم

بحیثیت قوم ہمیں اس بات کو یقینی بنانا ہوگا، کہ اس معاملے میں سچ سب کے سامنے آئے، اور کوئی شک شبہہ باقی نا رہے۔

بلاگ

اجمل کے بغیر ورلڈ کپ جیتنا ممکن

خود کو ورلڈ کلاس باؤلنگ اٹیک کہنے والے ہمارے کرکٹ حکام کی پوری باؤلنگ کیا صرف اجمل کے گرد گھومتی ہے۔

کریچر - تھری ڈی: گوڈزیلا یا ڈیوی جونز کا کزن؟

یہ کہنا غلط نہ ہوگا بپاشا ہارر تھرلرز تک محدود ہوگئی ہیں جبکہ عمران عبّاس نے انکے گرد چکر کاٹنے کے سوا کچھ نہیں کیا۔

جب خاموشی بہتر سمجھی جائے

اس بات کو تسلیم کرنا ہو گا کہ برطانوی پاکستانیوں کے پاس جنسی استحصال پر بات کرنے کے لیے آزادی نہیں ہے۔

نائنٹیز کا پاکستان - 6

اندازے کے مطابق اس دور میں پاکستانی فوج ہر ماہ اوسط ساڑھے سات کروڑ ڈالر ’مجاہدین‘ پر خرچ کر رہی تھی۔