01 اگست, 2014 | 4 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

کامرہ حملے کا زخمی سیکورٹی اہلکار ہلاک

کامرہ: پاکستانی فوجی منہاس ائیر بیس پر پہرہ دے رہے ہیں۔ - رائٹرز

اٹک: کامرہ میں پاکستان فضائیہ کی منہاس ائیر بیس پر دہشت گردوں کے حملے میں زخمی ہونے والا ایک اور اہلکار دم توڑ گیا۔

پاکستان ائیر فورس کے ترجمان طارق محمود کے مطابق محمد اقبال کامرہ کمپلیکس کے اسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوا۔

اس طرح بدھ اور جمعرات کی درمیان رات کو ہونے والے حملے میں ہلاک ہونے والے سیکورٹی اہلکاروں کی تعداد دو ہو گئی ہے۔

گذشتہ روز ہلاک والے سپاہی محمد آصف کو فوجی اعزاز کےساتھ ملتان میں سپردخاک کردیا گیا۔

دوسری جانب، حملے کی تحقیقات کاعمل جاری ہے اور ائیربیس سکیورٹی کے فلائٹ لیفٹیننٹ آفیسر کی مدعیت میں اٹک کے تھانہ صدر میں دو ایف آئی آر درج کرا دی گئی ہیں۔

ایف آئی آر میں حملے کے دوران مارے گئے نودہشت گردوں کوملزم نامزد کیا گیا ہے جبکہ حملہ آوروں کی شناخت کے لیے نادرا کی ٹیم نے کامرہ کا دورہ کرکے ان کی انگلیوں کے نشانات حاصل کیے ہیں۔۔

اس حصے سے مزید

رحیم یار خان: ماں بیٹی کو تیزاب سے جھلسا دیا گیا

پولیس نے آمنہ کے سابق شوہر احمد سمیت چار نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر کے کاروائی شروع کردی ہے۔

ق لیگ، طاہر القادری پی ٹی آئی مارچ میں شامل ہو سکتے ہیں

ڈاکٹر قادری چوہدری شجاعت کے ذریعے پی ٹی آئی اور اپنے نمائندوں کے درمیان بات چیت کے حتمی نتائج کے منتظر۔

تمام غیر قانونی تقرریاں منسوخ کی جائیں: ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل

وزیراعظم کو لکھے گئے خط میں ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل نے مختلف اداروں کے سربراہوں کی تقرریوں پر اعتراضات اُٹھائے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ہمارا پارٹ ٹائم لیڈر

اتنی ناکارہ لیڈرشپ کی مثال مشکل سے ملیگی جس میں کسی دوراندیشی کی کوئی جھلک نہ ہو-

بجٹ اور صحت کا شعبہ

ایسا لگتا ہے کہ صحت کے بجٹ کی بڑھتی ہوئی ضروریات کیلئے عطیات دینے والے ملکوں کے پیسے پر زیادہ انحصار کیا جاتا ہے

بلاگ

پکوان کہانی: موسم گرما کی سوغات 'آم

پرانے وقتوں کے لوگوں کی دلچسپ تصور اور حکمت کی بدولت، پھلوں کا بادشاہ عام انسان کی غذا بن گیا۔

پاکستان میں اسٹارٹ اپس اب تک ناکام کیوں؟

آجکل یہ فیشن سا بن گیا ہے کہ ہر کوئی یہی کہتا نظر آ رہا ہے کہ اس کے پاس 'اسٹارٹ اپ' ہے-

ساغر صدیقی : ایک دل شکستہ شاعر

وہ خوبصورت نظمیں لکھتے، پھر بلند آواز میں خالی نگاہوں سے پڑھتے، پھر ان کاغذات کو پھاڑ دیتے جن پر وہ نظمیں لکھی ہوتیں

پکوان کہانی: کابلی پلاؤ - شمال کی شان

گوشت میں پکے چاول اس خطے کے جنگجوؤں کی ذہنی مطابقت اور جسمانی ساخت کے لیے موزوں تھے۔