17 اپريل, 2014 | 16 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

لیاری میں آپریشن، چون ملزمان گرفتار

رینجرز کے مطابق لیاری گینگ وار کے اہم ملزمان کو بھی حراست میں لیا گیا ہے ۔ رائٹرز تصویر

کراچی: لیاری میں رینجرز کے سرچ آپریشن کے بعد کم از کم چون افراد گرفتار ہوئے ہیں۔ کارروائی کے دوران اسلحہ اور مسروقہ موٹرسائیکلیں بھی برآمد ہوئی ہیں۔

سرچ آپریشن علی الصباح شروع ہوا جس  کے دوران رینجرز کی بھاری نفری نے ریکسر لین، نوالین،کلاکوٹ،چاکیواڑہ،بغدادی اور نیاآباد کے علاقوں کامحاصرہ کرکے داخلی وخارجی راستوں کو بند کردیا تھا۔

آپریشن کےدوران رینجرز نے سات موٹرسائیکلیں اور چھ دستی بم برآمد کرکے چون افراد کوحراست میں لے لیا۔ گرفتار ہونےوالوں میں اقبال کرمانی ، اور وکیل چھوٹا شامل ہیں۔ گرفتارشُدگان میں گینگ وار کے لوگ بھی شامل ہیں۔

اسی دوران سکیورٹی فورسز نے افشانی گلی کی طرف پیش قدمی کی اور تاجو کے اڈے پربھی قبضہ کرلیا۔دوسری طرف آپریشن کےخلاف علاقہ مکینوں نے احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پرٹائرجلائے۔تاہم رینجرز نے مظاہرین کومنتشر ہونےپر مجبورکردیا۔علاقے سے گرفتار مشکوک افراد کوتفتیش کے لیے نامعلوم مقام پرمنتقل کردیا گیاہے۔

خبررساں ایجنسی اے پی پی کے مطابق رینجرز نے لیاری کے علاقوں افشانی گلی، آٹھ چوک، چیل چوک اور نیازی کالونی کے علاقوں میں بھی آپریشن کیا ۔

 

اس حصے سے مزید

علماء و مشائخ کنونشن میں مذہب کے نام پر ناانصافی کی مذمت

کنونشن میں حکومت پر زور دیا گیا کہ وہ ان افراد کے خلاف کارروائی کرے، جو شدت پسندی اور دیگر واقعات میں ملوث ہیں۔

خیرپور میں گیس پائپ لائن دھماکے سے تباہ

پولیس کے مطابق دھماکے کے بعد سندھ کے مختلف شہروں میں گیس کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔

کراچی کی دوسری خاتون پولیس ایس ایچ او

پولیس حکام نے ادارے میں صنفی توازن قائم کرنے کے لیے ایک اور خاتون کو سٹیشن ہاؤس افسر تعینات کیا ہے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

جمہوریت، سیکولر ازم اور مذہبی سیاسی جماعتیں

مذہب کے نام پر کوئی متفقہ سیاسی نظام بن ہی نہیں سکتا کیونکہ مذاہب کے درجنوں دھڑے کسی ایک ایشو پر متفق نہیں ہو سکتے۔

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

یکسانیت اور رنگا رنگی

یکسانیت جانی پہچانی بلکہ اطمینان بخش بھی ہوسکتی ہے، لیکن اس کا مطلب ہے چیلنج سے بچنا، جس کے بغیر کامیابی ممکن نہیں۔

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟