23 جولائ, 2014 | 24 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

بلوچستان میں ٹارگٹ کلنگ کی فہرست طلب

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری ۔ فوٹو آن لائن

کوئٹہ: چیف جسٹس افتخارمحمد چوہدری نے بلوچستان میں گزشتہ چھ ماہ کے دوران ٹارگٹ کلنگ کا شکار بننے والوں کی فہرست طلب کرلی ہے۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے پیر کے روز بلوچستان بدامنی کیس کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس نے آئی جی پولیس سے استفسار کیا کہ کوئٹہ سمیت بلوچستان میں لوگ مارے جارہے ہیں اور ایسے حالات میں پولیس کہاں ہے۔

انہوں نے مزید کہا: پولیس احکامات کی خلاف ورزی کر رہی ہے اور صورتحال یہ ہے کہ ایک سیشن جج کو اس کے محافظ سمیت قتل کردیا گیا۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ اس وقت پولیس کہاں تھی گزشتہ روز کوئٹہ میں سات لوگوں کو ماردیا گیا اور بولان میں شناخت کے بعد لوگ قتل کردیئے گئے۔

اس موقع پرانہوں نےآئی جی پولیس کو حکم دیا کہ چھ ماہ کے دوران ٹارگٹ کلنگ کا شکار بننے والوں کی لسٹ بنا کر پیش کریں۔

چیف جسٹس نے کہا کہ بلوچستان میں اسمگلنگ کی گاڑیاں چل رہی ہیں اور لوگ سرعام اسلحہ لیکر چلتے ہیں۔

اس حصے سے مزید

مستونگ میں دو خواتین پر تیزاب سے حملہ

تیزاب سے جھلسنے والی خواتین کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے ، جہان اُن کی حالت تشویش ناک ہے، حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب

کوئٹہ میں 3 خواتین پر تیزاب پھینک دیا گیا

سریاب کے علاقے میں حملے کا شکار ہونیوالی خواتین کو تشویش ناک حالت میں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

مشترکہ اسلامی فوج کی تجویز

اگر مسلمان ملک اسرائیلی جارحیت کا جواب دینے میں سنجیدہ ہیں تو انہیں نیٹو کی طرز پر ایک فوج بنانا ہو گی، ق لیگی رہنما۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

بے وجہ پوائنٹ اسکورنگ

ہوسکتا ہے عمران خان پی ایم ایل-ن کی حکومت گرانا چاہتے ہوں لیکن کیا وہ واقعی ملک اور اسکے جمہوری اداروں کے لئے خطرہ ہیں؟

کیا بڑا بہتر ہے؟

ہم اپنی جنوب ایشیائی شناخت سے پیچھا کیوں چھڑانا چاہتے ہیں جو تاریخی اعتبار سے عرب کے مقابلے میں کہیں زیادہ مالامال ہے؟

بلاگ

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔

کھیلنے دو: گراؤنڈز کہاں ہیں؟

سیدھی سی بات ہے، ملائی تبھی زیادہ اور بہترین ہوگی جب دودھ زیادہ ہوگا-

مووی ریویو: پیزا - پلاٹ اچھا ہے

اگرچہ سکرین پلے کافی کمزور ہے مگر فلم کی کہانی میں آنے والے موڑ دیکھنے والوں کی دلچسپی برقرار رکھتے ہیں۔

جہادی برائے فروخت

اگر اب بھی سمجھ نہ آئی تو پاکستان کا حشر بھی عراق و شام سے مختلف نہیں ہوگا۔