19 اپريل, 2014 | 18 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کابینہ کے اجلاس میں دہشتگردی کے خلاف دوبل منظور

وزیراعظم راجہ پرویز اشرف وفاقی کابینہ کے اجلاس کے دوران۔ اے پی پی فوٹو

اسلام آباد: حکومت 'فئیرٹرائل بل' کو پارلیمان میں پیش کرے گی۔ حکومت کا موقف ہے کہ اس بل کے ذریعے جدید ترین ٹیکنالوجی اور آلات کی مدد سے تحقیقات کرسکتے ہیں۔

آگر یہ بل منظور ہوجاتا ہے تو اس بل کے ذریعے لوگوں کی فون کالز ٹیپ ہوسکتیں ہیں اور اس کے علاوہ تمام ذاتی مواصلات بھی رسائی حاصل ہوگی تاکہ دہشت گردوں تک پہنچا جاسکے۔

فئیرٹرائل بل کے تحت ای میل ،ڈاک اوردیگرمواصلاتی موادبھی بطورشواہد استعمال ہونگے۔

ای میلز، ایس ایم ایس، فون کالز اور صوتی اور تصویری ریکارڈنگ بھی قابل قبول ثبوت قرار دیئے جائیں گے جبکہ مشتبہ افراد کو سیشن اور ڈسٹرکٹ کورٹ جج کی طرف سے وارنٹ جاری کے بعد چھ مہینے تک تحویل میں رکھا جائے گا۔

وفاقی کابینہ نے بدھ کے روز 'تحقیات کے لیئے فئیرٹرائل کے بل سن دو ہزار بارہ' کو منظور کیا جس کے بعد یہ بل اب پارلیمان میں پیش کیا جائے گا۔

اس بل کا ڈرافٹ کے مطابق جو کہ ڈان کو موصول ہوا ہے، آگر یہ بل منظور ہوجاتا ہے تو یہ لوگوں کی نجی زندگی میں بےجا مداخلت کا باعث بن سکتا ہے۔

اس بل کے ڈرافت کے مطابق پاکستانی شہری خواہ وہ کہیں پر بھی ہو، چاہے ہوائی جہاز پر ہو، بحری جہاز پر ہوں بشرط یہ کہ پاکستان میں رجسٹرڈ ہے۔

اس کے علاوہ وفاقی کابینہ نے 'انسداددہشت گردی بل سن دو ہزار بارہ' کی منظوری دیدی۔

بل کا مقصد دہشتگردوں کی مالی معاونت کی فراہمی کو روکنا ہے۔ بل کے تحت دہشتگردوں سے روابط رکھنے والوں کے خلاف بھی کارروائی کی جاسکے گی۔

قانون  کے تحت دہشتگردوں کی مالی معاونت کرنے والوں کے اثاثے اور جائیدادیں ضبط کی جاسکیں گی۔

بل کا اطلاق اندرون و بیرون ملک دونوں مالی معانت کرنے والوں پر ہوگا۔

خیال رہے کہ عالمی مالیاتی ٹاسک فورس نے پاکستان کو تنبیہ کی تھی کہ اگر دہشتگردوں کی مالی معاونت روکنے کے لئے قانون سازی نہ کی گئی تو اسے پابندیوں کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔

اس حصے سے مزید

پرویز مشرف کو آج شام کراچی منتقل کرنیکا فیصلہ

سابق صدر پرویز مشرف کو اسلام آباد سے کراچی منتقل کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے، پی این ایس شفا ہسپتال منتقل ہوں گے۔

'دہشت گردی ختم کیے بغیر مضبوط دفاع کا قیام ناممکن'

مضبوط معیشت اور دہشت گردی ختم کیے بغیر ملکی دفاع کا قیام ناممکن ہے،وزیر اعظم کا کاکول اکیڈمی میں پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب

'سپریم کورٹ نے جمہوریت کو سہارا دینا سیکھا'

چیف جسٹس تصدق حسین جیلانی کا کہنا تھا کہ عدلیہ نے آئین شکنی کی روایت ختم کرکے سماجی کردار وسیع کیا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔

ریویو: بھوت ناتھ - ریٹرنز

مرکزی کرداروں سے لیکر سپورٹنگ ایکٹرز سب اپنی جگہ کمال کے رہے اور جس فلم میں بگ بی ہوں اس میں چار چاند تو لگ ہی جاتے ہیں۔

میانداد کا لازوال چھکا

جب بھی کوئی بیٹسمین مقابلے کی آخری گیند پر اپنی ٹیم کو چھکے کے ذریعے جتواتا ہے تو سب کو شارجہ ہی یاد آتا ہے۔