01 اگست, 2014 | 4 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

بلوچستان بدامنی کیس میں عبوری حکم جاری

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری ۔ فوٹو آن لائن

کوئٹہ: سپریم کورٹ رجسٹری میں بلوشستان بدامنی کیس کی سماعت شروع۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں عدالت عظمٰی کا تین رکنی بینچ کوئٹہ رجسٹری میں بلوچستان میں امن و امان سے متعلق کیس کی سماعت کررہا ہے۔

سماعت شروع ہوئی تو چیف جسٹس نے چیف سیکریٹری بابر یعقوب فتح سے پوچھا کہ آپ کو کہا تھا کہ لاپتہ افراد کے بارے میں آج حتمی رپورٹ جمع کرائیں۔

جس پر چیف سیکریٹری نے کہا کہ مزید مہلت دی جائے تاکہ بہتر نتائج عدالت کے سامنے لائے جاسکیں۔

چیف جسٹس نے کہا ہے کہ انہوں نے حکم دیا کہ جاکر لاپتہ افراد کو لے آئیں لیکن نیتجہ صفر ہے، ٹارگٹ کلنگ ختم ہوئی اور نہ ہی اغوا برائے تاوان۔

چیف جسٹس نے سیکرٹری دفاع کے متعلق دریافت کیا، جس پر ایڈووکیٹ جنرل جواب دیا کہ وہ چلے گئے ہیں۔

سپریم کورٹ نے بلوچستان بدامنی کیس میں عبوری حکم جاری کرتے ہوئے اسلحہ اور گاڑیوں کی غیرقانونی راہداریاں منسوخ کرتے ہوئے ذمہ داروں کے خلاف مقدمات درج کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

عدالت نے کمانڈر ایف سی ڈیرہ بگٹی کی چھٹیاں منسوخ کرکے انہیں پیش ہونے کا بھی حکم دیا ہے۔

اس حصے سے مزید

کوئٹہ: مسلح افراد کی فائرنگ سے دو افراد ہلاک

پولیس کا کہنا ہے کہ ہلاک ہونے والے دونوں افراد کا تعلق ہزارہ برادری سے تھا، جن کی لاشوں کو ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

پشین: تیزاب کے حملے میں چھ خواتین زخمی

حکام کا کہنا ہے کہ چار افراد نے گھر میں داخل ہو کر ان خواتین پر تیزاب پھینکا اور موقع سے فرار ہوگئے۔

افتخار چوہدری کا عمران خان کے خلاف کارروائی جاری رکھنے کا عزم

مجھ پر الزامات پوری عدلیہ پر الزامات لگانے کے مترادف ہیں جن کے خلاف ہرممکن کارروائی کروں گا، سابق چیف جسٹس


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ہمارا پارٹ ٹائم لیڈر

اتنی ناکارہ لیڈرشپ کی مثال مشکل سے ملیگی جس میں کسی دوراندیشی کی کوئی جھلک نہ ہو-

بجٹ اور صحت کا شعبہ

ایسا لگتا ہے کہ صحت کے بجٹ کی بڑھتی ہوئی ضروریات کیلئے عطیات دینے والے ملکوں کے پیسے پر زیادہ انحصار کیا جاتا ہے

بلاگ

پکوان کہانی: موسم گرما کی سوغات 'آم

پرانے وقتوں کے لوگوں کی دلچسپ تصور اور حکمت کی بدولت، پھلوں کا بادشاہ عام انسان کی غذا بن گیا۔

پاکستان میں اسٹارٹ اپس اب تک ناکام کیوں؟

آجکل یہ فیشن سا بن گیا ہے کہ ہر کوئی یہی کہتا نظر آ رہا ہے کہ اس کے پاس 'اسٹارٹ اپ' ہے-

ساغر صدیقی : ایک دل شکستہ شاعر

وہ خوبصورت نظمیں لکھتے، پھر بلند آواز میں خالی نگاہوں سے پڑھتے، پھر ان کاغذات کو پھاڑ دیتے جن پر وہ نظمیں لکھی ہوتیں

پکوان کہانی: کابلی پلاؤ - شمال کی شان

گوشت میں پکے چاول اس خطے کے جنگجوؤں کی ذہنی مطابقت اور جسمانی ساخت کے لیے موزوں تھے۔