23 جولائ, 2014 | 24 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

رمشا کی رہائی کا حکم جاری

کورٹ روم کے باہر پولیس کھڑے ہوئے۔ رائٹرز فوٹو

   اسلام آباد: اسلام آباد کی مقامی عدالت نے قرآن پاک کی مبینہ توہین کے الزام میں گرفتار بچی رمشا کی درخواست ضمانت منظورکر تے ہوئے پانچ لاکھہ روپے کے دو ضمانتی مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔

آج ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اعظم خان نے کیس کی سماعت کے بعد اپنے فیصلے میں رمشا کو رہا کرنے کے علاوہ سیکورٹی خدشات کی وجہ سے اسے حفاظتی تحویل میں بھی دے دیا۔

قبل ازیں، سماعت کے دوران جج نے دونوں جانب سے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا تھا۔

رمشا کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ لڑکی  کی عمر کم ہونے کی وجہ سے اسے ضمانت پر رہا کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ پولیس کی جانب سے درج واقعے کی ایف آئی آر میں کہیں نہیں لکھا کہ لڑکی نے قرآن کی توہین کی ہے۔

دوسری جانب، درخواست گزار کے وکیل نے الزام عائد کیا کہ لڑکی اپنے جرم کا اعتراف کر چکی ہے، لہذا اسے ضمانت پر رہا نہ کیا جائے۔

کیس کے تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ امام مسجد خالد جدون نے ثبوتوں کے ساتھ ہیر پھیر کرتے ہوئے جان بوجھ کر قرآن کے اوراق کو اس تھیلی میں ڈالا جو رمشا آٹھائے ہوئے تھی۔

درخوست گزار نے الزام لگایا کہ پولیس اور ڈاکٹر عالمی دباؤ کے تحت لڑکی کو آزاد کروانے کیلیے کیس کو خراب کر رہے ہیں۔

انہوں نے خدشہ ظاہر کیا کہ اگر لڑکی کو ضمانت پر رہا کیا گیا تو اسے بیرون ملک بھیج دیا جائے گا۔

دوسری جانب، ضلعی اٹارنی نے عدالت کو بتایا کہ رمشا نے مجسٹریٹ کے سامنے اپنی عمر سولہ سال بتائی ہے اور یہ کہ مدعی کو دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔

آج سماعت کے موقع پر سیکورٹی اہلکاروں کی بڑی تعداد کے علاوہ ، سول سوسائٹی اور عمالی میڈیا کے نمائندے بھی موجود تھے۔

اس حصے سے مزید

زرداری-بائیڈن ملاقات پرافواہیں

ایک سماجی تقریب میں سابق صدر کے امریکی نائب صدر سےطے شدہ افطار- ڈنر کی خبروں نے سیاسی ماحول گرما دیا۔

'وزرائے اعلیٰ نجکاری عمل پر ہوشیار رہیں'

رضا ربانی نے چاروں وزرائے اعلیٰ کو ایک خط کے ذریعے صوبائی مفادات کے تحفظات کیلئے اقدامات اٹھانے کو کہا ہے۔

عمران خان لوگوں کو خدمت کی طرف راغب کریں، پرویز رشید

یہ وقت لانگ مارچ کا نہیں آئی ڈی پیز کی دیکھ بھال کا ہے، وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

کیا بڑا بہتر ہے؟

ہم اپنی جنوب ایشیائی شناخت سے پیچھا کیوں چھڑانا چاہتے ہیں جو تاریخی اعتبار سے عرب کے مقابلے میں کہیں زیادہ مالامال ہے؟

پاکستان کے عام آدمی کا احوال

پڑھے لکھے نوجوان جو پاکستان کے چھوٹے شہروں میں رہتے ہیں وہ سب سے زیادہ مشکلات کا شکار ہیں

بلاگ

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔

کھیلنے دو: گراؤنڈز کہاں ہیں؟

سیدھی سی بات ہے، ملائی تبھی زیادہ اور بہترین ہوگی جب دودھ زیادہ ہوگا-

مووی ریویو: پیزا - پلاٹ اچھا ہے

اگرچہ سکرین پلے کافی کمزور ہے مگر فلم کی کہانی میں آنے والے موڑ دیکھنے والوں کی دلچسپی برقرار رکھتے ہیں۔

جہادی برائے فروخت

اگر اب بھی سمجھ نہ آئی تو پاکستان کا حشر بھی عراق و شام سے مختلف نہیں ہوگا۔