21 ستمبر, 2014 | 25 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

بلوچستان میں لاپتہ افراد بازیاب کرانے کا حکم

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری ۔ فوٹو آن لائن

اسلام آباد:سپریم کورٹ نے سیکرٹری دفاع کو بلوچستان میں لاپتہ افراد بازیاب کرانے کا حکم دینے کے علاوہ کہا ہے کہ تین روز میں غیرقانونی اسلحہ اور گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا جائے۔

ہفتے کو سپریم کورٹ کوئٹہ رجسٹری میں بلوچستان بدامنی کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے صوبے سے لاپتہ شخص کاہو بگٹی کو پیش نہ کرنے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سیکرٹری دفاع کو حکم دیا کہ لاپتہ افراد کو بازیاب کرایا جائے۔

دوران سماعت چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ جج اور پولیس افسران قتل کیے جارہے ہیں اور کوئی محفوظ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ صوبے میں بائیس سیکورٹی ایجنیساں کام کر رہی ہیں، ان کی فہرست فراہم کی جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ جو کام شروع کیا ہے اسے پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے۔

اس موقع پر جسٹس جواد ایس خواجہ نے سیکرٹری دفاع کو حکم دیا کہ تین دن کے اندر غیرقانونی اسلحہ اور گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا جائے۔

اس موقع پر سیکرٹری دفاع نے کہا کہ آئی ایس آئی اور ایم آئی کی طرف سے جاری کی گئی راہداریاں منسوخ کریں گے۔

گزشتہ سماعت میں سپریم کورٹ نے عبوری حکم جاری کرتے ہوئے اسلحہ اور گاڑیوں کی غیرقانونی راہداریاں منسوخ کرتے ہوئے ذمہ داروں کے خلاف مقدمات درج کرنے کا حکم دیا تھا۔

عدالت نے کمانڈر ایف سی ڈیرہ بگٹی کی چھٹیاں منسوخ کرکے پیش ہونے کا بھی حکم دیا تھا۔

چیف جسٹس نے آج اپنے ریمارکس میں کہا کہ اقوام متحدہ کا وفد لاپتہ افراد کے معاملے کا جائزہ لینے پاکستان پہنچ رہا ہے، معاملات درست کرلیں۔

ان کا کہنا تھا کہ عالمی وفد کچھ کہے یا نہیں کہے لیکن مشاہدہ تو ضرور کرے گا۔

بعد ازاں، سماعت انیس ستمبر تک ملتوی کردی گئی، آئندہ سماعت اسلام آباد میں ہوگی۔

اس حصے سے مزید

کوئٹہ میں دھماکا،11افراد زخمی

دھماکا جناح ٹاؤن کےعلاقے پنج فٹی میں ہوا، زخمی افراد میں خاتون شامل ہیں،پولیس کےمطابق دھماکا خیز مواد سائیکل میں نصب تھا

تربت میں بم دھماکا، ایک شخص ہلاک

تربت میں سڑک کنارے نصب بم پھٹنے سے ایک شخص ہلاک اور دو زخمی ہو گئے، مستونگ میں دو آئل ٹینکر نذر آتش کر دیے گئے۔

کوئٹہ: پاک فوج کا طیارہ گر کر تباہ

حادثے کے نتیجے میں طیارے میں سوار پائلٹ کیپٹن عمر اور کیپٹن حسنین محمود زخمی ہوگئے، جنہیں کوئٹہ منتقل کردیا گیا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

پاکستان کی "مڈل کلاس" بغاوت

پاکستان کے مڈل کلاس لوگ ہی جمہوریت کے سب سے بڑے مخالف ہیں اور کچھ کیسز میں تو جمہوریت کی مخالفت بغاوت کی حد تک شدید ہے۔

!میرے پیارے اسلام آباد

میں آپ سے معافی چاہتا ہوں کہ میں نے آپ کی جانب دو دھرنے بھیجے ہیں، جنہوں نے آپ کا امن و سکون تباہ کر دیا ہے۔

بلاگ

بلوچ نیشنلزم میں زبان کا کردار

لسانی معاملات پر غیر دانشمندانہ طریقہ سے اصرار مزید ناراضگی اور پیچیدگیوں کا سبب بن سکتا ہے، جو شاید مناسب قدم نہیں۔

خواندگی کا عالمی دن اور پاکستان

تعلیم کو سرمایہ کاروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے جن کے لیے تعلیم ایک جنس ہے جسے بیچ کر منافع کمایا جاسکتا ہے-

ڈرامہ ریویو: چپ رہو - حساس ترین موضوع پر بہترین پیشکش

زیادتی جیسے واقعات ہر وقت خبروں میں رہتے ہیں اس حوالے سے یہ ڈرامہ شعور اجاگر کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔

میں باغی ہوں

اس ملک میں کہیں قانون کی حکمرانی نہیں، ہر جگہ لوٹ مار مچی ہے- کسی کو قانون کا پاس نہیں- تبدیلی آئی تو سب کا احتساب ہوگا-