25 اپريل, 2014 | 24 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

بلوچستان میں لاپتہ افراد بازیاب کرانے کا حکم

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری ۔ فوٹو آن لائن

اسلام آباد:سپریم کورٹ نے سیکرٹری دفاع کو بلوچستان میں لاپتہ افراد بازیاب کرانے کا حکم دینے کے علاوہ کہا ہے کہ تین روز میں غیرقانونی اسلحہ اور گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا جائے۔

ہفتے کو سپریم کورٹ کوئٹہ رجسٹری میں بلوچستان بدامنی کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے صوبے سے لاپتہ شخص کاہو بگٹی کو پیش نہ کرنے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سیکرٹری دفاع کو حکم دیا کہ لاپتہ افراد کو بازیاب کرایا جائے۔

دوران سماعت چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ جج اور پولیس افسران قتل کیے جارہے ہیں اور کوئی محفوظ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ صوبے میں بائیس سیکورٹی ایجنیساں کام کر رہی ہیں، ان کی فہرست فراہم کی جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ جو کام شروع کیا ہے اسے پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے۔

اس موقع پر جسٹس جواد ایس خواجہ نے سیکرٹری دفاع کو حکم دیا کہ تین دن کے اندر غیرقانونی اسلحہ اور گاڑیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کیا جائے۔

اس موقع پر سیکرٹری دفاع نے کہا کہ آئی ایس آئی اور ایم آئی کی طرف سے جاری کی گئی راہداریاں منسوخ کریں گے۔

گزشتہ سماعت میں سپریم کورٹ نے عبوری حکم جاری کرتے ہوئے اسلحہ اور گاڑیوں کی غیرقانونی راہداریاں منسوخ کرتے ہوئے ذمہ داروں کے خلاف مقدمات درج کرنے کا حکم دیا تھا۔

عدالت نے کمانڈر ایف سی ڈیرہ بگٹی کی چھٹیاں منسوخ کرکے پیش ہونے کا بھی حکم دیا تھا۔

چیف جسٹس نے آج اپنے ریمارکس میں کہا کہ اقوام متحدہ کا وفد لاپتہ افراد کے معاملے کا جائزہ لینے پاکستان پہنچ رہا ہے، معاملات درست کرلیں۔

ان کا کہنا تھا کہ عالمی وفد کچھ کہے یا نہیں کہے لیکن مشاہدہ تو ضرور کرے گا۔

بعد ازاں، سماعت انیس ستمبر تک ملتوی کردی گئی، آئندہ سماعت اسلام آباد میں ہوگی۔

اس حصے سے مزید

چمن میں دھماکہ، سات افراد زخمی

دھماکہ مال روڈ کے پاس ایک نجی بینک کے قریب پیش آیا، تمام زخمیوں کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

چمن: ڈپٹی کمشنر کے دفتر کے باہر دھماکا، تین زخمی

واقعے کے نتیجے میں دو خواتین سمیت تین افراد زخمی ہوئے جنہیں طبی امداد دی جارہی ہے، پولیس۔

کوئٹہ: فائرنگ سے تین افراد ہلاک

فائرنگ ایک گاڑی پر کی گئی، جس میں سوار دو افراد ہلاک ہوگئے، جبکہ ایک راہگیر بھی فائرنگ کی زد میں آکر ہلاک ہوا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

مقدّس ریپ

دو دن وہ اسی گاؤں میں ماں کے بازؤں میں تڑپتی رہی۔ گھر میں پیسے ہی کہاں تھے کہ علاج کے لئے بدین تک ہی پہنچ پاتے۔

میڈیا اور نقل بازی کا کینسر

ایسا نہیں کہ میں کوئی پہلا انسان ہوں جس کے خیالات پر نقب لگائی گئی ہو، مگر آخری ضرور بننا چاہتا ہوں

!مار ڈالو، کاٹ ڈالو

مجھے احساس ہوا کہ مجھے اس پر شدید غصہ آ رہا ہے اور میں اسے سچ بولنے پر چیخ چیخ کر ڈانٹنا چاہتا ہوں-

خطبہء وزیرستان

کس سازش کے تحت 'آپکو' بدنام کرنے کے لئے دھماکے کیے جاتے ہیں؟ کس صوبے کے مظلوم عوام آپکے بھائی ہیں؟