16 اپريل, 2014 | 15 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

لاہور: مقامی فیکٹری میں آگ لگنے سے 22 افراد ہلاک

فائر بریگیڈ کا اہلکار آگ بجھانے کی کوشش کررہا ہے۔ فوٹو اے پی

لاہور: لاہور میں گلشن راوی میں بند روڑ پرجوتوں کی فیکٹری میں آگ لگنے سے 22 افراد ہلاک ہو گئے۔

ریسکیوحکام نے متاثرہ فیکٹری سے متعدد مزدوروں کو نکال لیا ہے جن کی حالت نازک بتائی جارہی ہے۔

زیادہ تر افراد جھلسنے اور دم گھٹنے سے ہلاک ہوئے۔

میو اسپتال کے ایم او نے حادثے میں 22 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔

ذرائع کے مطابق ابھی بھی کچھ افراد فیکٹری میں پھنسے ہوئے ہیں جبکہ آگ پر قابو پالیا گیا ہے۔

چوتے کے سول بنانے والی اس کارخانے میں ایک روز قبل استعمال ہونے والے کیمیائی مادے کے ڈرم اور خام مال منگوائے گئے تھے۔

اطلاعات کے مطابق سب سے پہلے فیکٹری کے جنریٹر میں آگ لگی جس نے پوری فیکٹری کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔

لاشوں اور زخمیوں کو میو اور منشی ہسپتال منتقل کیا چاچکا ہے۔

ہلاک شدگان میں ایک کمسن بچہ بھی شامل ہے جو خیال کیا جاتا ہے کہ وہ فیکٹری مالک کا بیٹا ہے ۔ اس واقعے میں فیکٹری کا مالک بھی ہلاک ہوچکا ہے۔

اس حصے سے مزید

پیر کے کہنے پر ماموں کے ہاتھوں بھانجے قتل

پیر نے ملزم کو مراد پوری ہونے کے لیے مبینہ طور پر خون بہانے کا مشورہ دیا تھا۔

شیخوپورہ: وین حادثے میں چھ افراد ہلاک

حادثہ وین کے ٹائر پھٹنے سے پیش آیا، آٹھ افراد زخمی ۔

لاہور: عدالت نے نو ماہ کے بچے کا مقدمہ خارج کردیا

پولیس کی جانب سے غلفت برتنے پر کیس کے تفتیشی افسر کے خلاف شوکاز نوٹس جاری۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

cathy gontar
06 اکتوبر, 2012 03:24
Why is this not reported in USA? Americans grieve for Pakistani brothers.
مقبول ترین
بلاگ

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟

جادو کا چراغ: نبض کے بھید اور ایک برباد محبت

بوڑھے دانا طبیب نے مختلف ناموں پر بدلتی نبض کو دیکھ کر لڑکی کی پراسرار بیماری کا علاج کیا-

سارے جہاں سے مہنگا - ریویو

فلم میں ایک اچھوتا خیال پیش کیا گیا ہے کہ کس طرح 'جگاڑ' کر کے ایک مڈل کلاس آدمی مہنگائی کا توڑ نکالتا ہے۔