19 اپريل, 2014 | 18 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

مستونگ میں فائرنگ، نو مزدور ہلاک

۔— فائل فوٹو

کوئٹہ: بلوچستان کے علاقے مستونگ میں نامعلوم مسلح افراد کی فائرنگ سے نو مزدور ہلاک جبکہ چار زخمی ہو گئے۔

 واقعہ جمعرات کو کوئٹہ سے تقریباً پچیس کلو میٹر دور دشت میں پیش آیا۔

 سرکاری عہدے دار عرفان شاہ نے اے ایف پی کو بتایا کہ چار سے پانچ افراد پر مشتمل مسلح گروپ نے زیر تعمیر سڑک پر کام میں مصروف مزدوروں پرفائرنگ کردی جس سے نو افراد ہلاک ہو گئے۔

 انہوں نے مزید بتایا کہ حملہ آور جائے واردات سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔

 پولیس افسر محمد اسمائیل نے بھی ہلاکتوں کی تعداد کی تصدیق کی ہے۔

 تاحال کسی نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔

 صوبے کو فرقہ واریت، طالبان کے حملوں اور قبائلی تصادم جیسے مسائل کا سامنا ہے۔

اس حصے سے مزید

کوئٹہ میں فائرنگ، دو افراد ہلاک

موٹر سایئکل سوار حملہ آوروں نے دکان کو نشانہ بنایا جسکے نتیجے میں پنجاب سے تعلق رکھنے والے دو افراد ہلاک ہوگئے، پولیس۔

'ہندوستان بلوچ علیحدگی پسند تحریک کی فنڈنگ کرتا ہے'

سینیئر صوبائی وزیر ثناء اللہ زہری کے مطابق گوادر پورٹ کے قیام سے دیگر ممالک بھی صوبے میں مداخلت کرسکتے ہیں۔

کوئٹہ: ہزارہ برادری کے دو افراد کی ٹارگٹ کلنگ

مسلح افراد نے کوئٹہ کے علاقے سریاب روڈ پر ہفتے کی رات فائرنگ کر کے شیعہ ہزارہ برادری کے دو افراد کو ہلاک کردیا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

ریویو: بھوت ناتھ - ریٹرنز

مرکزی کرداروں سے لیکر سپورٹنگ ایکٹرز سب اپنی جگہ کمال کے رہے اور جس فلم میں بگ بی ہوں اس میں چار چاند تو لگ ہی جاتے ہیں۔

میانداد کا لازوال چھکا

جب بھی کوئی بیٹسمین مقابلے کی آخری گیند پر اپنی ٹیم کو چھکے کے ذریعے جتواتا ہے تو سب کو شارجہ ہی یاد آتا ہے۔

جمہوریت، سیکولر ازم اور مذہبی سیاسی جماعتیں

مذہب کے نام پر کوئی متفقہ سیاسی نظام بن ہی نہیں سکتا کیونکہ مذاہب کے درجنوں دھڑے کسی ایک ایشو پر متفق نہیں ہو سکتے۔

یکسانیت اور رنگا رنگی

یکسانیت جانی پہچانی بلکہ اطمینان بخش بھی ہوسکتی ہے، لیکن اس کا مطلب ہے چیلنج سے بچنا، جس کے بغیر کامیابی ممکن نہیں۔