22 اگست, 2014 | 25 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی میں فائرنگ کے واقعات، دس ہلاک

کراچی میں پولیس- فائل فوٹو

کراچی: شہر میں فائرنگ کے واقعات میں مزید دس افراد ہلاک ہوگئے۔ جبکہ ایس آئی یو  پولیس نے فشریز کے ڈائریکٹر سے بھتہ طلب کرنے والے لیاری گینگ وار کے دو ملزمان کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

دہشت گردی کے تازہ واقعے میں مچھر کالونی سے ایک شخص کی لاش ملی۔ مقتول کو گولیاں مار کر قتل کیا گیا تھا۔

سہراب گوٹھ پل کے قریب نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے ایک شخص کو ہلاک کردیا۔

سولجر بازار جماعت خانہ کے قریب فائرنگ سےایک شخص ہلاک ہوگیا۔

اس سے قبل ماڈل کالونی میں فائرنگ کے نتیجے میں ایک شخص ہلاک اور دو زخمی ہوگئے جنہیں جناح اسپتال منتقل کردیا گیا۔

کھارادر میں فائرنگ سے زخمی ہونے والا شخص اسپتال پہنچ کر چل بسا۔

رنچھوڑلائن میں فائرنگ سے خاتون ہلاک جبکہ دو افراد زخمی ہوئے۔

لیاقتّ آباد چار نمبر کے مکان سے ایک شخص کی لاش ملی۔

رامسوامی اور پی آئی بی کالونی میں دو افراد اندھی گولیوں کا نشانہ بنے۔ جبکہ چاکیواڑہ میں ایک شخص کو ہلاک کردیا گیا۔

دوسری جانب ایس آئی یو پولیس نے فشری کے ڈائریکٹر سے بھتہ طلب کرنے والے دو اور اے سی ایل سی نے موٹر سائیکل لفٹر گروہ کے سرغنہ کو گرفتار کر کے اسلحہ برآمد کرلیا۔

اس حصے سے مزید

حکومت سخت رویے سے گریز کرے، الطاف حسین

ایم کیو ایم کے قائد نے پی ٹی آئی اور پی اے ٹی کو مشورہ دیا ہے کہ وہ ملکی مفاد کی خاطر معاملے کو ٹھنڈا کردیں۔

کراچی اسٹاک ایکسچینج: مندی کے رجحان میں کمی

جمعرات کو کے ایس ای ہنڈریڈ انڈیکس 400 پوائنٹس کے اضافے کے ساتھ 29 ہزار کی سطح عبور کرگیا ہے۔

'ریڈ زون سے ٹی وی کیمرے ہٹادیں، انقلاب ختم ہوجائے گا'

یہ بات ماہرِ سیاسیات و اقتصادیات ڈاکٹر اکبر زیدی نے پاکستان میں سماجی تبدیلیوں کے موضوع پر اپنے لیکچر کے دوران کہی۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

کچھ جوابات

وزیر اعظم کا اعلان کردہ کمیشن مسئلے سلجھانے کے بجائے زیادہ الجھا دے گا۔

بڑھتی مایوسی

مایوسی تب اور بڑھتی ہے جب عوام دیکھتے ہیں کہ حکمران عوامی پیسے سے اپنے کام چلانے میں شرم بھی محسوس نہیں کرتے۔

بلاگ

پاکستان ایک "ساس" کی نظر سے

68 سالہ جین والر کو پاکستان بہت پسند آیا، اتنا زیادہ کہ بقول ان کے مجھے پاکستان سے محبت ہوگئی ہے۔

مووی ریویو: گارڈینز آف گیلیکسی ایک ویژول ٹریٹ ہے

جو یادوں کے ایسے دور میں لے جاتی ہے جب ایکشن کے بجائے مزاح کسی کامک کا سرمایہ اور اسے بیان کرنے کا ذریعہ ہوا کرتا تھا۔

اب مارشل لاء کیوں ناممکن؟

ایوب، ضیاء اور مشرّف، تینوں ہی مغربی قوّتوں کے جغرافیائی سیاسی کھیلوں میں اسٹریٹجک کردار کے بدلے جیتے تھے۔

عمران خان کے نام کھلا خط

گزشتہ ایک ہفتے کے واقعات پی ٹی آئی ورکرز کی تمام امیدوں اور توقعات کو بچکانہ، سادہ لوح اور غلط ثابت کر رہے ہیں۔