01 ستمبر, 2014 | 5 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

افغانستان کی پاکستان کو تنبیہ

افغان وزیر خارجہ زلمے رسول۔ — اے ایف پی

اقوام متحدہ: افغانستان نے پاکستان سے ایک مرتبہ پھر مطالبہ کیا ہے کہ وہ فوری طور پر سرحد پار گولہ باری بند کر دے۔

افغان وزیر خارجہ زلمے رسول  نے جمعرات کو پاکستان کے سرحد پار حملوں کو 'گہری تشویش' کا باعث قرار دیتے ہوئے کہا کہ ان حملوں سے افغنانیوں میں 'غیر مثالی غصہ اور تذبذب' پایا جاتا ہے۔

افغانستان ماضی میں بھی پاکستان پر کنڑ صوبے میں گولہ باری کا الزام عائد کر چکا ہے۔

زلمے رسول نے پندرہ ملکی کونسل کے ایک اجلاس میں کہا کہ وہ ایک مرتبہ پھر ان حملوں کی فوری روک تھام کا مطالبہ کرتے ہیں کیونکہ ان حملوں نے درجنوں شہریوں کی جانیں لی ہیں جبکہ کئی زخمی بھی ہوئے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ کابل پاکستان سے ان حملوں کو مکمل طور پر بند کرنے کے لیے رابطے میں ہے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان اپنے ہمسایہ ملک سے 'قریبی' تعلقات کا خواہاں ہے۔

اس موقع پر انہوں نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو بھی خبردار کیا کہ اس طرح کے حملے جاری رہنے سے دونوں ملکوں میں پہلے سے کشیدہ تعلقات مزید خراب ہو سکتے ہیں۔

پاکستان پر الزام ہے کہ وہ طالبان کی پشت پناہی کر رہا ہے جو کابل حکومت گرانا چاہتے ہیں۔

جوابًا، پاکستان کا کہنا ہے کہ افغانستان میں چھپے ہوئے پاکستانی طالبان سرحد پار کر کے ان کے سیکورٹی اہلکاروں پر حملے کرتے ہیں۔

دوسری جانب، افغانستان میں اقوام متحدہ کے نمائندہ خصوصی نے اجلاس کو بتایا کہ ' ملک کے مختلف حصوں میں طالبان کے خلاف عوام کے اُٹھ  کھڑے ہونے کی اطلاعات کا جائزہ لینا ضروری ہے'۔

انہوں نے کہا کہ تحفظ اور انصاف کی خواہش نے مقامی آبادیوں کو صورتحال اپنے ہاتھوں میں لینے پر مجبور کر دیا ہے۔

اس حصے سے مزید

جلال آباد: طالبان کا حملہ، چھ افراد ہلاک، پچاس زخمی

افغان حکام کے مطابق زخمیوں میں زیادہ تر عام شہری ہیں، جبکہ حملہ آوروں اور سیکیورٹی فورسز کے درمیان لڑائی جاری ہے۔

عبداللہ کے انکار پر افغان الیکشن کا آڈٹ معطل

ڈاکٹر غنی کی ترجمان کے مطابق انہیں اقوام متحدہ اور الیکشن کمیشن پر اعتماد ہے، اور وہ اس آڈٹ کے نتائج تسلیم کریں گے۔

حقانی نیٹ ورک کے رہنماؤں کی معلومات فراہم کرنے پر رقم بڑھادی گئی

حقانی نیٹ ورک کے چار رہنماؤں کیلئے 50،50 لاکھ ڈالرکی رقم مقرر، سراج الدین حقانی کیلئے رقم بڑھا کر ایک کروڑ ڈالر کردی گئی


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مودی اور مسئلہ کشمیر

کیا پاکستان مسئلہ کشمیر کو ایسے ہی رہنے دینا چاہتا ہے، تاکہ کشمیر سے زیادہ اہم افغانستان کے مسئلے پر توجہ دے سکے؟

اسلام آباد کا تماشا

عمران خان کو یہ تسلیم کرنا چاہیے کہ جوڈیشل کمیشن ایک کمزور وزیر اعظم کے اثر و رسوخ سے آزاد ہو کر تحقیقات کر سکے گا.

بلاگ

نوازشریف: قوت فیصلہ سے محروم

نواز شریف اپنے بادشاہی رویے کی وجہ سے پھنس چکے ہیں، جو فیصلے انہیں چھ ماہ پہلے کرنے چاہیے تھے وہ آج کر رہے ہیں۔

حالیہ بحران پر کچھ سوالات

مستقبل میں کیا ہو گا، بحران کا کیا حل نکلے گا، ان سوالات کے جوابات موجود نہیں ہیں، پر اس حوالے سے کئی سوالات موجود ہیں۔

پکوانی کہانی- سندھی بریانی

ہر قسم کی بریانیوں میں سے یہ بریانی منفرد حیثیت رکھتی ہے جو سندھی طریقے سے بہت زیادہ مصالحوں کے ساتھ تیار ہوتی ہے۔

‫ڈرامہ ریویو: وہ۔۔۔ دوبارہ (خوف و دہشت کا احساس)

انسان چاہے بد روحوں سے جتنا بھی ڈرے مگر ان پر بنی فلموں یا ڈراموں کو دیکھنے کا شوق پھر بھی اس کا پیچھا نہیں چھوڑتا۔