20 اپريل, 2014 | 19 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی : آئل فیکٹری میں لگی آگ تاحال بے قابو

آگ بجھانے کےعمل میں پاک فضائیہ اور شہرکے تمام فائر بریگیڈز شامل ہیں۔ فائل فوٹو

کراچی: کراچی کے علاقے شیر شاہ میں  آئل فیکٹری میں لگنے والی آگ پر دس گھنٹے گزر جانے کے باوجود قابو نہیں پایا جاسکاہے ۔ آگ کو حکام نے تیسرے درجے کی قرار دے دیا ہے۔

آگ بجھانے کےعمل میں پاک فضائیہ اور شہرکے تمام فائر بریگیڈز شامل ہیں ۔ جبکہ اطراف کی فیکٹریوں کو بھی خالی کرانے کے احکامات جاری کردیے ہیں۔

جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب شیرشاہ میں پراچہ چوک کے قریب کوکنگ آئل مل میں اچانک آگ بھڑک اٹھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے فیکٹری کے مختلف حصوں کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔

مل انتظامیہ کے مطابق آگ فلنگ ڈپارٹمنٹ میں لگی تاہم وہاں کوئی عملہ موجود نہیں تھا۔

فائر برگیڈ نے آگ کو تیسرے درجے کی قرار دیتے ہوئے شہر بھر کے فائر ٹینڈرز طلب کر لیے جبکہ سائٹ انڈسٹریل ایریا اور پی اے ایف نے بھی اپنے فائر ٹینڈرز بھیج دیئے ہیں۔

آگ کی شدت دیکھتے ہوئے گورنر سندگ ڈاکٹر عشرت العباد نے کمشنر کراچی اور ایڈمنسٹریٹر کو تمام وسائل بروکار لا کر آگ پر قابو پانے کی ہدایت جاری کیں۔

جبکہ ڈان نیوز سے بات چیت کرتے ہوئے کراچی ایڈمنسٹریٹر کا کہنا تھا کہ آگ کے بجھانے کا کوئی ٹائم فریم نہیں دے سکتے۔

مل کے بڑے حصے میں دھواں بھر جانے والے باعث امدادی کارروائیوں میں مشکلات کا سامنا ہے۔ دھویں کے باعث آگ بجھانے کے دوران  دو فائر فائٹرز  متاثر ہوئے جنھیں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

اس حصے سے مزید

سکھر: بس- ٹرالر میں تصادم، 41 افراد ہلاک

حادثہ اس وقت پیش آیا جب کراچی سے ڈیرہ غازی خان جانے والی بس پنوں عاقل کے قریب سامنے سے آنے والے ٹریلرسے ٹکراگئی۔

معروف صحافی حامد میر قاتلانہ حملے میں زخمی

سینئر صحافی اور مایہ ناز ٹیلی ویژن اینکر پرسن حامد میر قاتلانہ حملے میں زخمی ہو گئے، حالت خطرے سے باہر۔

لشکر جھنگوی کے چھ مبینہ عسکریت پسند گرفتار

پولیس نے کالعدم فرقہ وارانہ گروپ سے تعلق رکھنے والے چھ افراد کو گرفتار کرنے کا دعوٰی کیا ہے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔