02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

پر تشدد احتجاج میں ملوث 185 افراد کے خلاف کارروائی

راولپنڈی: مبینہ طور پر پرُ تشدد مظاہروں میں ملوث افراد کو انسداد دہشت گردی کی ایک عدالت میں پیش کیا جا رہا ہے۔— آن لائن فوٹو

کراچی: پاکستان کی عدالتوں نے کم از کم 185 افراد کے خلاف یوم عشق رسول کے موقع پر دنگے فساد اور لوٹ مار کے مقدموں میں ریمانڈ دیا ہے۔

جمعے کو حکومت کی جانب سے توہین آمیز فلم کے خلاف احتجاج منانے کے اعلان کے بعد پر تشدد واقعات میں کراچی اور پشاور میں تئیس افراد ہلاک جبکہ دو سو سے زائد زخمی ہو گئے تھے۔

ہفتے کو راولپنڈی کی عدالتوں نے ستتر مشتبہ افراد کو چودہ دن کے ریمانڈ پر اڈیالہ جیل بھیج دیا۔

اسی طرح،  کراچی میں سینما، بینک، پولیس گاڑیاں نزرآتش اور سرکاری و نجی املاک کو نقصان پہنچانے کے الزام میں انسداد دہشت گردی کی ایک عدالت اور ایک مجسٹریٹ نے کم از کم بھہتر ملزموں کو ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے دیا۔

دو دن قبل پاکستان کے سب سے بڑے شہر میں پانچ سینما گھر، تین بینک اور لا تعداد دکانوں کی لوٹ مار کے بعد نذر آتش کرنے کے واقعات پیش آئے تھے۔

لاہور میں ایک انسداد دہشت گردی کی عدالت نے چھتیس ملزموں کو عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

ان مشتبہ افراد پر دہشت گردی، سرکاری و نجی املاک کو نقصان پہنچانےاور نذر آتش کرنے کے علاوہ اقدام قتل اور پولیس پر حملوں کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

فیصل آباد میں بھی پولیس نے ہوائی فائرنگ اور پتھراؤ کے الزمات کے تحت چار سو سے زائد افراد کے خلاف دو مقدمے درج کیے ہیں۔

ان فراد میں سے تقریباً دو سو کا تعلق کالعدم سپاہ صحابہ پاکستان سے ہے۔

فیصل آباد میں جمعے کو پر تشدد واقعات میں ساٹھ افراد زخمی ہوئے تھے جن میں سے ایک کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے۔

اس حصے سے مزید

نام نہاد لیڈر ملک کو میدانِ جنگ بنانا چاہتے ہیں، شہباز شریف

وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ کچھ نام نہاد لیڈر آئین و قانون کی دھجیاں اڑاتے ہوئے ریاستی اداروں کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔

'حکومت اور مظاہرین کی ہٹ دھرمی سے جمہوریت کو نقصان ہوگا'

جماعت اسلامی کے جنرل سیکرٹری لیاقت بلوچ کا کہنا ہے کہ قوم کو سیاسی بحران پر تشویش ہے اور وہ مسئلے کا فوری حل چاہتی ہے۔

پی ٹی آئی اور پی اے ٹی 80 سےزائد کارکنان گرفتار

پنجاب کے مختلف شہروں میں اسلام آباد کے مظاہرین پر مبینہ تشدد کے خلاف ریلیاں نکالی گئیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

احتیاطی نظربندی کا غلط قانون

فوجی اور سویلین حکومتوں نے باقاعدگی سے احتیاطی نظربندی کو اپنے مخالفین کو خاموش کرنے اوردھمکانے کے لیے استعمال کیا ہے۔

توجہ طلب شعبہ

بجلی کی لائنیں لگانے اور مرمت کرنے کو دنیا کے دس خطرناک ترین پیشوں میں شمار کیا جاتا ہے-

بلاگ

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔

تاریخ کی تکرار

پولیس پر تشدد اور دہشت گردی کا الزام لگانے والے کیا اپنے گھروں پر کسی ایرے غیرے نتھو خیرے کو چڑھائی کی اجازت دیں گے؟

آبی مسائل کا ذمہ دار ہندوستان یا خود پاکستان؟

پاکستان میں پانی اور بجلی کے بحران کی وجہ پچھلے 5 عشروں سے پانی کے وسائل کی خراب مینیجمنٹ ہے۔

نوازشریف: قوت فیصلہ سے محروم

نواز شریف اپنے بادشاہی رویے کی وجہ سے پھنس چکے ہیں، جو فیصلے انہیں چھ ماہ پہلے کرنے چاہیے تھے وہ آج کر رہے ہیں۔