23 اگست, 2014 | 26 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

دس فیصد خواتین ووٹوں کی تجویز ناقابل عمل ہے ، ق لیگ

نگراں حکومت اٹھارہ مارچ کو قائم ہو گی، قمر زماں کائرہ۔ — اے پی پی فوٹو

اسلام آباد: حکمراں اتحاد میں شامل مسلم لیگ ق نے انتخابات میں خواتین کے کم از کم دس فیصد ووٹوں کی تجویز کو ناقابل عمل قرار دیا ہے۔

جمعرات کو چیف الیکشن کمشنر جسٹس (ر) فخر الدین جی ابراہیم کی زیر صدارت کمیشن اور تمام بڑی سیاسی جماعتوں کا اہم اجلاس اسلام آباد میں ہوا۔

اجلاس میں عام انتخابات کے لیے اٹھائے گئے مختلف اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ق لیگ کے صدر چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ نگراں وزیر اعظم کے لیے مشاورت کا عمل شروع نہیں ہوا۔

ان کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن کے پاس انتظامی اختیارات بھی ہونے چاہیں۔

پارٹی کے سیکرٹری جنرل مشاہد حسین نے بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کے ووٹ کے حق کی حمایت کی لیکن ساتھ ہی وطن آکر حلقے میں ووٹ ڈالنے کی شرط بھی لگائی۔

مشاہد حسین نے بتایا کہ ان کی جماعت نے سیاسی جماعتوں کو ریاستی فنڈنگ کی بھی تجویز دی ہے۔

دوسری جانب، وفاقی وزیراطلاعات ونشریات قمرزمان کائرہ نے کہا کہ اٹھارہ مارچ کو نگراں حکومت کا قیام عمل میں آئے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ نگران حکومت پر اتفاق رائے نہ ہونے پر بھی انتخابات میں دیر نہیں ہو گی۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ حکومت شفاف انتخابات کرانا چاہتی ہے، جس کے لیے الیکشن کمیشن نے سیاسی جماعتوں سے تجویزیں طلب کی ہیں۔

انہوں نے الیکشن کمیشن کی طرف سے مشاورت کوخوش آئند قراردیا اور کہا کہ کمیشن کی نیت پر شک نہیں جاسکتا۔

کائرہ نے دعوی کیا کہ انتخابات میں حصہ لینے والےننانوے فیصد امیدواروں کو دہری شہریت کے قانون کا علم ہی نہیں تھا لہذا انہوں  نے ناسمجھی میں کاغذات نامزدگی پردستخط کردیے

اس حصے سے مزید

آئندہ 48 گھنٹے’حساس‘ ہیں، وفاقی وزیر داخلہ

چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ فوج کو اس آزمائش سے نکالیں اور آپریشن کی طرف ان کو لے کر جائیں جہاں ان کی ضرورت ہے۔

تحریک انصاف اور حکومت میں مذاکرات ختم، کل پھر ہوں گے

ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا کہ تحریک انصاف اور عوامی تحریک کے دھرنوں کے باعث موجودہ سیاسی صورتحال کیا رخ اختیار کرے گی۔

تحریک انصاف کے اراکین قومی اسمبلی سے مستعفی

عمران خان سمیت پاکستان تحریک انصاف کے 34 اراکین قومی اسمبلی کے استعفے اسپیکر کےدفتر میں جمع کرا دیے گئے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

کچھ جوابات

وزیر اعظم کا اعلان کردہ کمیشن مسئلے سلجھانے کے بجائے زیادہ الجھا دے گا۔

بڑھتی مایوسی

مایوسی تب اور بڑھتی ہے جب عوام دیکھتے ہیں کہ حکمران عوامی پیسے سے اپنے کام چلانے میں شرم بھی محسوس نہیں کرتے۔

بلاگ

پاکستان ایک "ساس" کی نظر سے

68 سالہ جین والر کو پاکستان بہت پسند آیا، اتنا زیادہ کہ بقول ان کے مجھے پاکستان سے محبت ہوگئی ہے۔

مووی ریویو: گارڈینز آف گیلیکسی ایک ویژول ٹریٹ ہے

جو یادوں کے ایسے دور میں لے جاتی ہے جب ایکشن کے بجائے مزاح کسی کامک کا سرمایہ اور اسے بیان کرنے کا ذریعہ ہوا کرتا تھا۔

اب مارشل لاء کیوں ناممکن؟

ایوب، ضیاء اور مشرّف، تینوں ہی مغربی قوّتوں کے جغرافیائی سیاسی کھیلوں میں اسٹریٹجک کردار کے بدلے جیتے تھے۔

عمران خان کے نام کھلا خط

گزشتہ ایک ہفتے کے واقعات پی ٹی آئی ورکرز کی تمام امیدوں اور توقعات کو بچکانہ، سادہ لوح اور غلط ثابت کر رہے ہیں۔