29 جولائ, 2014 | 1 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

مشرف اثاثہ جات کیس کا فیصلہ محفوظ

مشرف ایسپن آئیڈیاز فیسٹیول میں۔ اے پی فوٹو

راولپنڈی: راولپنڈی کی انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے پرویز مشرف کو اشتہاری قرار دینے جانے اور اکاؤنٹس منجمد کرنے کے خلاف درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کرلیا ہے۔ فیصلہ تین اکتوبر کو سنائے جانے کا امکان ہے۔

راولپنڈی کی انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے پرویز مشرف کی اہلیہ صہبا مشرف کی جانب سے سابق صدر کو اشتہاری قرار دیے جانے اور جائیداد ضبطگی کے خلاف دائر دو الگ الگ درخواستوں کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران صہبا مشرف کے وکیل الیاس صدیقی نے اپنے دلائل میں کہا کہ  کسی بھی ملزم کا جوائنٹ اکاؤنٹ منجمد کرنے سے پہلے تحقیقات کی جاتی ہے جبکہ اس کیس میں ایسا نہیں کیا گیا۔

ایف آئی اے پروسیکیوٹر چوہدری ذوالفقار نے دلائل دیئے کہ صہبا مشرف کی کوئی آمدنی نہیں جبکہ مشترکہ اکاؤنٹس میں بھی پرویز مشرف کی رقم ہے۔

انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف اشتہاری ہیں ان کے وطن واپس آنے سے پہلے کوئی بھی اکاؤنٹ بحالی کی درخواست نہیں دے سکتا۔

چوہدری ذوالفقار کے مطابق گیارہ اکاؤنٹس منجمد کیے گئے جن میں سے سات پرویز مشرف کے ذاتی ہیں۔

وکلاء کی جانب سے دلائل مکمل ہونے کے بعد عدالت نے درخواستوں پر فیصلہ محفوظ کرلیا جو تین اکتوبر کو سنائے جانے کا امکان ہے۔

اس حصے سے مزید

اسلام آباد میں فوج کا معاملہ پارلیمنٹ میں

پی پی پی نے اسلام آباد میں فوج طلب کرنے کا حکومتی فیصلے پارلیمنٹ میں اٹھانے کا فیصلہ کر لیا۔

آرٹیکل 245 کا نفاذ: حکومتی اعلامیے کی نقل پیش کرنیکا حکم

اسلام آباد ہائی کورٹ نے دارالحکومت میں آئین کے آرٹیکل 245 کے نفاذ کے حکمنامے کی نقل پیش کرنے کا نوٹس جاری کردیا۔

فوج طلب کرنے پر وزارت داخلہ و دیگر کو نوٹسز جاری

اگر اسلام آباد میں ایسا قدم اٹھایا گیا تو اس سے حکومتی رٹ کمزور ہوگی، درخواست گزار۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

جنگ اور ہوائی سفر

پرواز کرنے کا معجزہ، جو انسانی ذہانت کا خوشگوار مظہر ہے، انسان کے انتقامی جذبات اور خون کی پیاس کی نذر ہوگیا ہے

تھوڑا سا احترام

آپ ایک مایوس، خوفزدہ بیوروکریسی سے کیا توقع کرسکتے ہیں جنہیں اپنی سمت کا علم نہ ہو؟

بلاگ

ترغیب و خواہشات: رمضان کا نیا چہرہ؟

کسی مقامی رمضان ٹرانسمیشن کو لگائیں اور وہ سب کچھ جان لیں جو اب اس مقدس مہینے کے نئے چہرے کو جاننے کے لیے ضروری ہے

نائنٹیز کا پاکستان -- 1

ضیا سے مشرف کے بیچ گیارہ سال میں کبھی کرپشن کے بہانے تو کبھی وسیع تر قومی مفاد کے نام پر پانچ جمہوری حکومتیں تبدیل ہوئیں

ٹوٹے برتن

امّی کا خیال ہے کہ ایسے برتن پورے گاؤں میں کسی کے پاس نہیں۔ وہ تو ان برتنوں کو استعمال کرنے ہی نہیں دیتی

مجرم کون؟

کچھ چیزیں ڈنڈے کے زور پہ ہی چلتی ہیں، پھر آہستہ آہستہ عادت اور عادت سے فطرت بن جاتی ہیں۔