21 اپريل, 2014 | 20 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

ہنگامہ آرائی کے ملزمان کے ریمانڈ میں توسیع

ہنگامہ آرائی کے الزام میں گرفتار باون ملزمان کے جوڈیشل ریمانڈ میں تیرہ اکتوبر تک توسیع کر دی گئی۔ اے ایف پی فوٹو

راولپنڈی:انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے یوم عشق رسول کے موقع پر ہنگامہ آرائی کے الزام میں گرفتار باون ملزمان کے جوڈیشل ریمانڈ میں تیرہ اکتوبر تک توسیع کر دی ہے۔

 اکیس ستمبر کو یوم عشق رسول کے موقع پر توڑ پھوڑ اور ہنگامہ آرائی کے الزام میں گرفتار ملزمان کو جوڈیشل ریمانڈ مکمل ہونے پر راولپنڈی میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج چوہدری حبیب الرحمان کی عدالت میں پیش کیا گیا۔

 اس موقع پر وفاقی پولیس نے عدالت سے استدعا کی کہ ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے اور چالان مکمل کرنے کیلئے مہلت چاہیئے لہٰذا کچھ مزید وقت دیا جائے جس پر فاضل عدالت نے پولیس کی استدعا منظور کرتے ہوئے ملزمان کے جوڈیشل ریمانڈ میں تیرہ اکتوبر تک توسیع کر دی۔

 واضح رہے کہ وفاقی پولیس نے یوم عشق رسول کے موقع پر ہنگامہ آرائی اور توڑ پھوڑ کرنے کے الزام میں ملزمان کو تھانہ سبزی منڈی، تھانہ پیرودھائی، تھانہ آبپارہ اور تھانہ سیکریٹریٹ کی حدود سے گرفتار کیا تھا۔

اس حصے سے مزید

وزیرِ اعظم نے حامد میر حملے کی جوڈیشل تحقیقات کا حکم دیدیا

کمیشن کیلئے سپریم کورٹ سے درخواست کی جائے گی، قاتلوں کی اطلاع پر ایک کروڑ روپے انعام کا اعلان۔

اقوامِ متحدہ نے اپنے دوکارکن لاپتہ ہونے کی تصدیق کردی

اقوامِ متحدہ کی ذیلی تنظیم یونیسیف کے مقامی ارکان کراچی کے باہر ایک تفریحی مقام سے لاپتہ ہوئے ہیں۔

'دہشت گردی ختم کیے بغیر مضبوط دفاع کا قیام ناممکن'

مضبوط معیشت اور دہشت گردی ختم کیے بغیر ملکی دفاع کا قیام ناممکن ہے،وزیر اعظم کا کاکول اکیڈمی میں پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔