02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

خیرپور: پیپلز پارٹی کے جلسے میں فائرنگ سے چھ افراد ہلاک

پولیس نے واقعے کو ذاتی دشمنی کا شاخسانہ قرار دیا ہے۔ فائل فوٹو

خیرپور: خیرپورمیں پیپلز پارٹی کے جلسے عام میں نامعلوم افرادکی فائرنگ سے نجی ٹی وی کے رپورٹر سمیت چھ افراد جاں بحق اور چار زخمی ہوگئے۔ صدر اور وزیراعظم نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے تحقیقات کا حکم دیدیا۔

خیرپور کے علاقے جانوری گوٹھ میں رکن قومی اسمبلی سیدہ نفیسہ شاہ کے جلسہ عام میں اس وقت نامعلوم افراد نے اندھا دھند فائرنگ کردی جب وہ خطاب کرنے جارہی تھیں، فائرنگ کے نتیجے میں ٹیکنیکل کالج کے پروفیسر اور نجی ٹی وی کے صحافی سمیت چھ افراد ہلاک اور چار زخمی ہو گئے۔

فائرنگ کے بعد بھگدڑ مچ گئی اور پولیس کی بھاری نفری نے موقع پر پہنچ کر فوری طور پر علاقے کا محاصرہ کرلیا۔

جلسے پر فائرنگ کی خبر پھیلتےہی مشتعل افراد نے تمام دکانیں اور کاروباری مراکز بند کروادیے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ واقعہ دیرینہ دشمنی کا شاخسانہ ہے، جلسہ گاہ کے باہر جانوری برداری کے  دو متحارب گروپوں میں فائرنگ کا تبادلہ ہوا، جس میں جلسہ گاہ کے اندر موجود لوگ بھی نشانہ بن گئے۔

صدر پاکستان آصف علی زرداری اور اور وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے اس کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے بھی واقعے کی تحقیقات اور اس میں ملوث افراد کی فوری گرفتاری کا حکم دیدیا ہے۔

اس حصے سے مزید

قحط کا شکار تھر، لوگ غربت کے باعث خودکشی کر رہے ہیں

محض سات مہینوں کے اندر تھرپارکر ضلع میں اکتیس افراد غربت کے باعث موت کو گلے لگا چکے ہیں۔

وزیراعظم، وزیرداخلہ کی نااہلی کے لیے درخواست دائر

سندھ ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ نواز شریف کو آرٹیکل باسٹھ اور تریسٹھ کے تحت نااہل قرار دیا جائے

کراچی: دو پولیس اہلکار ٹارگٹ کلنگ میں ہلاک

آج صبح نامعلوم دہشت گردوں نے گشت پر مامور موٹر سائکل سوار پولیس اہلکاروں کو فائرنگ کا نشانہ بنایا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا'...الجھتے رشتوں کی کہانی

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔