30 ستمبر, 2014 | 4 ذوالحجہ, 1435
ڈان نیوز پیپر

من موہن کا دورہ پاکستان کھٹائی میں؟

نیو یارک: پاکستان کے صدر آصف علی زرداری پچیس ستمبر کو اقوام متحدہ کے جنرل اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کر رہے ہیں۔— اے پی

نئی دہلی: کیا پاکستان کے اقوام متحدہ میں مسئلہ کشمیر کے ذکر سے ہندوستانی وزیر اعظم کے جلد دورے کے امکانات معدوم ہو گئے ہیں؟

پاکستان کے صدر آصف علی زرداری نے اقوام متحدہ میں اپنی تقریر کے دوران دونوں ملکوں میں دہائیوں سے اہم مسئلہ کا حوالہ دیا تھا۔

ہمسایہ ملک کے اخبار 'دی ہندوستان ٹائمز' نے اتوار کو اپنی ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ کشمیر کا حوالہ ان اہم عناصر میں سے ایک ہو سکتا ہے جس کی وجہ سے نئی دہلی کو ڈاکٹر من موہن سنگھ کے دورہ پاکستان کی کوئی جلدی نہیں ہے۔

تاہم، اخبار کے مطابق اس معاملے پر اب تک کوئی سرکاری بیان سامنے نہیں آیا۔

اخبار نے پہلی مرتبہ 'ذرائع' کے بجائے 'سرکاری حکام' کے حوالے سے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ 'معاملے سے آگاہ سرکاری عہدے دار من موہن سنگھ کے جلد پاکستان دورے کے حوالے سے پراعتماد نہیں ہیں' ۔

اخبار کے مطابق دورے میں تاخیر کی کئی وجوہات ہیں جن میں پاکستان فوج کے ساتھ براہ راست اہم تنازعات پر پیش رفت کا نہ ہونا اور مقامی طور پر مذاکارتی عمل کو بڑھانے کی حمایت نہ ملنا قابل ذکر ہیں۔

ایک سرکاری عہدے دار کا کہنا ہے کہ حتی کہ امن بات چیت کے سب سے زیادہ حامی سمجھے جانے والے  پنجاب میں بھی اس حوالے سے زیادہ گرم جوشی نہیں پائی جاتی۔

دی ہندوستان ٹائمز کے مطابق، پاکستانی فوج کی جانب سے ویزہ ، تجارتی تعلقات میں بہتری اورعوامی سطح کے تعلقات جیسے معاملات پر پی پی پی کی حکومت کو کھلی چھوٹ سے ان معاملوں پر پیش رفت نظر آ رہی ہے۔

اخبار نے انتہائی با اعتماد ذرائع کے حوالے سے مزید بتایا کہ پاکستان میں'جی ایچ کیوکی زیر نگرانی' اہم معاملات جیسے کہ سرحد پار حملوں، سیاچن، سر کریک اور افغانستان پر آگے نہیں بڑھا جا سکا۔

اخبار نے دعوی کیا ہے کہ پاکستان فوج ایک مرتبہ پھر اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے تحت کشمیریوں کے لیے حق خود ارادیت کے اپنے پرانے موقف پر واپس آ چکی ہے جبکہ ہندوستان کے خیال میں شملہ معاہدہ ان قرار دادوں پر غالب آ چکا ہے۔

اس موقف کی ایک جھلک صدر زرداری کی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلا س میں تقریر کے دوران  بھی نظر آئی جب انہوں نے کشمیر کا حوالہ دیتے ہوئے اقوام متحدہ کی ناکامیوں کا ذکر کیا تھا۔

پاکستانی صدر کی تقریر پر ہندوستان کے وزیر خارجہ ایس ایم کرشنا نے اپنے سخت ردعمل میں کہا تھا کہ کشمیر ہندوستان کا اٹوٹ انگ ہے۔

اس حصے سے مزید

مودی کا بیوروکریٹس کو باتھ روم صاف کرنیکا حکم

ہندوستانی وزیر اعظم نےمہاتما گاندھی کی سالگرہکے موقع پر بیورو کریٹس کو آفسز اور باتھ روم کی صفائی کا حکم دیا ہے۔

مودی، اوباما ملاقات، کشمیریوں کا احتجاج

اس ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے دہشت گردی سے نمٹنے اور تباہ کن ہتھیاروں کا پھیلاؤ روکنے پر اتفاق کیا۔

گجرات میں ہندو مسلم فساد، 200 سے زائد گرفتاریاں

ہندوستان میں وزیر اعظم مودی کی ریاست گجرات میں ہندو مسلم فسادات کے بعد پولیس نے 200 سے زائد افراد کو گرفتار کر لیا ہے۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

jsharma1234
09 اکتوبر, 2012 03:06
karodon muslim india me, karodon muslim pakistan me dono ek doosre ke saath dosti aur bhaichare ke saath rishta rakhna chahte hain eak doosre se mil kar tijarat our rishtedari kayam rakhna chahte hai, chand kashmiri logon ki vajah se karodon yahan aur karodon vahan bahut se faydon se masroof hain ,kashmir ko darkinar kar ,dono mulkon ke log karib aa saken aisa kuchch kiye jaane ki jaroorat hai,
سروے
مقبول ترین
قلم کار

فائرنگ کی زد میں

پولیس کی قیادت کو ادراک ہوا ہے کہ اسے صاحب اختیار لوگوں کے غیر قانونی مطالبات کو نا کہنے کی ہمت دکھانے کی ضرورت ہے.

پالیسی سازی کا فن

پنجاب میں باربارآنے والے سیلاب نے فیصلہ سازی اور پالیسی سازی کے درمیان خلا کو بےنقاب کردیا ہے۔

بلاگ

مقابلہ خوب ہے

کوئی دنیا کے در در پر پھیلے ہمارے کشکول کی زیارت کرے، پھر اس میں خیرات ڈالنے والوں کو فتح کرنے کے ہمارے عزم بھی دیکھے۔

پاکستان میں ذہنی بیماریاں اور ہماری بے حسی

آخر ذہنی بیماریوں کے شکار کتنے اور لوگوں کو اپنے گھرانوں کی بے حسی، اور معاشرے کی جانب سے ٹھکرائے جانے کو جھیلنا پڑے گا؟

مووی ریویو: دی پرنس — انسپائر کرنے میں ناکام

مجموعی طور پر روبوٹ جیسی پرفارمنسز اور کمزور پلاٹ کی وجہ سے یہ فلم ناظرین کی دلچسپی قائم رکھنے میں ناکام رہی-

مخلص سیاستدانوں کے سچے بیانات

جب سے دھرنے جاری ہیں، تب سے ہم نے سیاستدانوں سے طرح طرح کی باتیں سنی ہیں جن میں سے کچھ پیش خدمت ہیں۔