02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

ممبئی حملوں کے مبینہ ماسٹر مائنڈ کیخلاف چارج شیٹ فائل

ممبئی حملوں میں نشانہ بنائے گئے ہوٹل کی تصویر۔ فائل فوٹو

ممبئی: ہندوستانی پولیس نے ممبئی حملوں مبینہ ماسٹر مائنڈ کیخلاف چارج شیٹ فائل کرلی ہے۔ مذکورہ حملوں میں 166 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

پولیس کے جوائنٹ کمشنر ہیمانشو رائے نے اے ایف پی کو بتایا کہ پولیس افسران نے مقامی کورٹ میں جون میں حملوں کی منصوبہ بندی کے الزام میں گرفتار کیے جانے والے اہم ملزم زبی الدین انصاری کیخلاف مقامی عدالت میں متعدد دستاویزات فائل کی ہیں۔

انہوں نے پریس ٹرسٹ آف انڈیا نیوز ایجنسی کو بتایا کہ چودہ ہزار سے زائد صفحات پر مشتمل چارج شیٹ میں 1783 گواہوں اور حملوں کے الزام میں مطلوب 47 ملزمان کے نام شامل ہیں۔

ابو حمزہ اور ابو جندل کے نام سے مشہور زبی الدین انصاری ہندوستان میں پیدا ہوئے تاہم ان پرپاکستانی عسکریت پسند گروپ لشکر طیبہ کا رکن ہونے کا الزام ہے، انہیں 21 جون کو مشرق وسطیٰ سے واپسی پر دہلی ایئرپورٹ پر گرفتار کیا گیا تھا۔

ان پر نومبر 2008 میں حملہ کرنے والے دس دہشت گردوں کو پاسکتان کے شہر کراچی سے ٹیلیفون پر ہدایات دینے کا بھی الزام ہے۔

مسلح دہشت گردوں نے حملے میں ممبئی شہر سمیت وہاں کے  ایک پرتعیش ہوٹل، ایک یہودی عبادت گاہ، اسپتال اور مصروف ٹرین اسٹیشن کو نشانہ بنایا تھا۔

تیس سالہ انصاری پر ان مسلح افراد کو ہندی سکھانے کا بھی الزام عائد ہے، ان حملہ آوروں میں زندہ بچنے والے واحد شخص اجمل قصاب کو حملوں کے الزام میں موت کی سزا سنائی گئی تھی۔

چارج شیٹ میں کہا گیا ہے کہ انصاری نے تفتیش کے دوران ممبئی حملوں میں کردار ادا کرنے کا الزام قبول کر لیا ہے۔

اس حصے سے مزید

پاکستان نے دو طرفہ مذاکرات کا 'تماشہ' بنا دیا، مودی

پاکستان کی جانب سے ہمارے مذاکرات سے متعلق اقدامات کا تماشہ بنانے پر مایوسی ہوئی، ہندوستانی وزیراعظم

پاکستان، ہندوستان تنازعات بات چیت سے حل کریں، اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کے سربراہ بان کی مون نے موجودہ کشیدہ صورتحال میں دونوں ممالک کے سربراہان کو مذاکرات کا مشورہ دیا ہے۔

مودی جرائم میں ملوث وزراء نہ چنیں، سپریم کورٹ

ہندوستان میں کرپٹ وزراء کے انتخاب کی تاریخ بہت پرانی ہے اور زیادہ ترکو ذات پات یا مذہب کی بنیاد پر منتخب کیا جا تا ہے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

احتیاطی نظربندی کا غلط قانون

فوجی اور سویلین حکومتوں نے باقاعدگی سے احتیاطی نظربندی کو اپنے مخالفین کو خاموش کرنے اوردھمکانے کے لیے استعمال کیا ہے۔

توجہ طلب شعبہ

بجلی کی لائنیں لگانے اور مرمت کرنے کو دنیا کے دس خطرناک ترین پیشوں میں شمار کیا جاتا ہے-

بلاگ

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔

تاریخ کی تکرار

پولیس پر تشدد اور دہشت گردی کا الزام لگانے والے کیا اپنے گھروں پر کسی ایرے غیرے نتھو خیرے کو چڑھائی کی اجازت دیں گے؟

آبی مسائل کا ذمہ دار ہندوستان یا خود پاکستان؟

پاکستان میں پانی اور بجلی کے بحران کی وجہ پچھلے 5 عشروں سے پانی کے وسائل کی خراب مینیجمنٹ ہے۔

نوازشریف: قوت فیصلہ سے محروم

نواز شریف اپنے بادشاہی رویے کی وجہ سے پھنس چکے ہیں، جو فیصلے انہیں چھ ماہ پہلے کرنے چاہیے تھے وہ آج کر رہے ہیں۔