02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

شمالی وزیرستان آپریشن سے ملک مزید غیرمحفوظ ہوجائیگا: نثار

مسلم لیگ ن کے رہنماء چوہدری نثار علی۔ فوٹو آن لائن

اسلام آباد: وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ شمالی وزیرستان میں آپریشن کا فیصلہ سیاسی وعسکری قیادت مشاورت کے بعد مشترکہ طور پر کرے گی۔ جبکہ چوہدری نثار نے خبردار کیا ہے کہ آپریشن کیا گیا تو ملک مزید غیر محفوظ ہو جائے گا۔

بدھ کے روز سینٹ اجلاس کے دوران وزیرداخلہ رحمان ملک نے بتایا کہ تحریک طالبان کےترجمان  احسان اللہ احسان کے سر کی قیمت  دس کروڑروپے مقرر کردی گئی ہے۔

وزیر داخلہ کا کہنا تھا خفیہ اطلاعات کے مطابق مولوی فضل اللہ کو کالعدم ٹی ٹی پی کا سربراہ بنایا جا رہا ہے۔ وزیر داخلہ نےکہا کہ طالبان اگرہتھیار پھینک دیں تو ان کے لیےعام معافی ہے۔ رحمان ملک نےکہا کہ بلوچستان میں شرپسندوں کیخلاف  کارروائی جاری ہے، آئندہ چار سے پانچ ماہ بہت اہم ہیں۔

دوسری جانب قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری نثار علی خان نے کہا

کہ حکومت شہریوں کے تحفظ کیلیے توکچھ کر نہیں رہی البتہ بغیر کسی ہوم ورک کے وزیرستان آپریشن کی باتیں کی جارہی ہیں۔

۔چوہدری نثار نے خبردار کیا کہ فوجی آپریشن ہوا توملک مزید غیرمحفوظ ہوجائے گا۔

اس حصے سے مزید

برطانیہ کا شہریوں کو پاکستان کے سفر پر انتباہ

سفارت کار، سرکاری وفود اور شہریپاکستان کے اپنے سفر پر نظرثانی کریں، دفتر خارجہ و کامن ویلتھ۔

'سفارت کار نقل و حرکت میں احتیاط برتیں'

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق احتیاط کی ہدایات دی گئیں تاہم سفارتخانوں کی بندش کی کوئی ہدایت جاری یا موصول نہیں ہوئی ہے۔

وزیراعظم نیٹو سمٹ میں شرکت نہیں کریں گے

سیاسی بحران کے باعث وزیراعظم کا دورہ منسوخ کرکے جونیئر سفارتی عہدیدار کو پاکستان کی نمائندگی کے لیے بھیجا جائے گا۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

بو لان کاکڑ
18 اکتوبر, 2012 03:38
وزیرستان اپریشن سے ملک نہیں بلکہ اقتدار کے بھوکے سیاستدان غیر محفوظ ہو جائینگے ملک اب کونسا محفوظ ہے ؟ جو غیر محفوظ ہوجا ئیگا اگر پاکستان کو بچانا ہے تو نہ صرف آ خری دہشت گرد تک کو ختم کرنا ہوگا بلکہ ان کے ہمدردوں کیخلاف بھی کارروائی ناگزیر ہوچکی ہے اگر حکومت نے اور ریاستی اداروں نے اپنی رٹ قائم نہیں کی تو عوام خود اپنی حفاظت کیلئیے اٹھ کھڑے ہو نگے اور پھر اس ملک کو خانہ جنگی سے کوئی نہیں روک سکے گا اب بھی وقت ہے طالبان سمیت دیگر بنیاد پرست ، فرقہ پرست اور شرپسند کالعدم گرہوں کیخلاف بھر پور ایکشن لیا جائے ،ایکشن ہر اس شخص کے خلاف جو حکومتی رٹ کو چیلنج کرتا ہے جو کسی بھی شکل میں طالبان کا حمایتی اور انکا مدد گار ہے تب ہی یہ ملک محفوظ ہوسکتا ہے
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا'...الجھتے رشتوں کی کہانی

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔