01 اکتوبر, 2014 | 5 ذوالحجہ, 1435
ڈان نیوز پیپر

'اصغر خان کیس کا فیصلہ من و عن تسلیم کرتے ہیں'

shahbaz-sharif-670
وزیراعٰلی پنجاب شہباز شریف۔ —فائل فوٹو

اسلام آباد: وزیر اعلٰی پنجاب شہباز شریف نے کہا ہے کہ اصغر خان کیس کے فیصلے کو من و عن تسلیم کرتے ہیں۔

ہفتے کے روز ضلع چکوال کی تحصیل کلر کہار  کیڈٹ کالج میں سالانہ اسپورٹس ڈے پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ صدر آصف علی زرادری نے بھی انٹیلیجنس بیورو (آئی بی) سے پچاس کروڑ روپے لیے تھے، ان کا بھی حساب ہونا چاہیے۔

 ان کا کہنا تھا کہ ملک کو توانائی بحران سمیت کئی چیلجنز کا سامنا ہے۔ ان کے مطابق پنجاب کا تعلیمی نظام عالمی معیار کا ہوگیا ہے۔

 اس موقع پر وزیر اعلٰی پنجاب نے لڑکیوں کے لیے دانش اسکول قائم کرنے کا اعلان کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ دسمبر میں مزید دو لاکھ لیپ ٹاپ تقسیم کیے جائیں گے۔

اس حصے سے مزید

کھاریاں: فوج کانیشنل کاؤنٹر ٹیررزم سینٹر قائم

انسداددہشت گردی مرکزمیںٰ فوجی دستوں،پولیس، کانسٹیبلری،لیویزسمیت غیرملکی فورسزکو دہشت گردی سے نمٹنے کی تربیت دی جائے گی۔

صوبائی وزیر خوراک بھی 'گو نواز گو' کی زد میں

بلال یاسین نے انسداد ڈینگی سے متعلق تقریب میں شرکت کی، جہاں طالب علموں نے 'گو نواز گو' کے نعرے لگا دیئے۔

کمسن بہنوں کی شادی کروانے پر پیش امام سمیت تین افراد گرفتار

گاؤں کی پنچایت نے دو کم سن لڑکیوں کے ساتھ دو کم سن لڑکوں کا والدین کی مرضی کے خلاف نکاح پڑھوایا۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Talib Hussain
20 اکتوبر, 2012 17:48
Laptop distribution is good to obtain a good survey report. weldone shehbaz.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

فائرنگ کی زد میں

پولیس کی قیادت کو ادراک ہوا ہے کہ اسے صاحب اختیار لوگوں کے غیر قانونی مطالبات کو نا کہنے کی ہمت دکھانے کی ضرورت ہے.

پالیسی سازی کا فن

پنجاب میں باربارآنے والے سیلاب نے فیصلہ سازی اور پالیسی سازی کے درمیان خلا کو بےنقاب کردیا ہے۔

بلاگ

مقابلہ خوب ہے

کوئی دنیا کے در در پر پھیلے ہمارے کشکول کی زیارت کرے، پھر اس میں خیرات ڈالنے والوں کو فتح کرنے کے ہمارے عزم بھی دیکھے۔

پاکستان میں ذہنی بیماریاں اور ہماری بے حسی

آخر ذہنی بیماریوں کے شکار کتنے اور لوگوں کو اپنے گھرانوں کی بے حسی، اور معاشرے کی جانب سے ٹھکرائے جانے کو جھیلنا پڑے گا؟

مووی ریویو: دی پرنس — انسپائر کرنے میں ناکام

مجموعی طور پر روبوٹ جیسی پرفارمنسز اور کمزور پلاٹ کی وجہ سے یہ فلم ناظرین کی دلچسپی قائم رکھنے میں ناکام رہی-

مخلص سیاستدانوں کے سچے بیانات

جب سے دھرنے جاری ہیں، تب سے ہم نے سیاستدانوں سے طرح طرح کی باتیں سنی ہیں جن میں سے کچھ پیش خدمت ہیں۔