29 اگست, 2014 | 2 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

قومی مینڈیٹ پر ڈاکہ مارنے کی معافی مانگی جائے، کائرہ

وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات قمر زمان کائرہ اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے ہیں۔ فوٹو اے پی پی

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات قمر زمان کائرہ نے کہا ہے کہ قوم کے مینڈیٹ پر ڈاکہ مارنے کی معافی مانگی جائے، چوری کے مینڈیٹ پر بننے والی حکومت کا فیصلہ ہونا ابھی باقی ہے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات قمر زمان کائرہ کا کہنا تھا کہ دہائیوں کے بعد تاریخ نے سچ اُگل دیا ہے۔ سیاستدانوں میں رقوم کی تقسیم پر سپریم کورٹ کا فیصلہ تاریخی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے مخالفین غیرقانونی ہتھکنڈوں سے اقتدار میں آتے رہے۔1990 کے انتخابات میں عوامی مینڈیٹ پر ڈاکہ مارا گیا جبکہ 1993 اور 1997 کے انتخابات میں بھی دھاندلی کی گئی۔

قمر زمان کائرہ کا کہنا تھا کہ سابق صدر جنرل (ر) ضیا الحق کا طیارہ پھٹنے کے بعد آئی ایس آئی کے سابق سربراہ جنرل(ر) حمید گُل نے آئی جے آئی کی بنیاد رکھی تھی۔ 25 اکتوبر 1990 میں سابق وزیراعظم محترمہ بینظیر بھٹو شہید نے کہہ دیا تھا کہ عوامی مینڈیٹ چُرا لیا گیا۔

وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات نے کہا کہ بینظیر بھٹو کو دھمکی دی گئی کے اگر انہوں نے فیصلہ تسلیم نہ کیا تو ان کے شوہر کو قتل کر دیا جائے گا اور سابق صدر جسٹس (ر) رفیق تارڑ کو محترمہ بینظیر بھٹو کے خلاف فیصلہ دینے کے انعام میں صدر پاکستان بنا دیا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ جو گنہگار ہیں وہ بھی آج اصغر خان کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے پر اعتراض کر رہے ہیں۔

وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ قائد حزب اختلاف چودھری نثار اتنے سادہ نہ بنیں کیونکہ وہ بھی تمام کاموں میں حصہ دار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ اس بار 1990 سے بڑا ڈاکہ مارنے کا کوئی پروگرام ہے لیکن اس بار جھوٹے پراپیگنڈے سے الیکشن نہیں جیتا جا سکتا۔

اس حصے سے مزید

آرمی چیف نے عدالتی کمیشن بنانے کی ضمانت دی ہے، عمران خان

جب تک وزیراعظم نواز شریف کا استعفیٰ نہیں آتا، دھرنا جاری رہےگا، سربراہ پاکستان تحریک انصاف۔

ہندوستان کشمیر پر بات کرنے کو تیار

شملہ معاہدے کے تحت دونوں ممالک کے درمیان کشمیر سمیت تمام مسائل پر بات چیت ہوسکتی ہے، ترجمان وزرات خارجہ

وزیر اعظم کی فوج سے کردار ادا کرنے کی درخواست

تین دن میں ہونےوالی دوسری ملاقات میں نوازشریف کی جانب سے گفتگو میں کہا گیا کہ فوج بحران حل کرنے کیلئے اپنا کردارادا کرے


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

متوازی سیاست

بعض لحاظ سے ان میں اور ان لوگوں میں کوئی بہت زیادہ فرق نہیں ہے جنھیِں وہ ہٹانا چاہتے ہیں-

انتخابی اصلاحات کی فوری ضرورت

پاکستان میں انتخابی عمل کوشفاف اور غیر متنازعہ بنانے کے لیے انتخابات کے آٹھ شعبوں میں اصلاحات کی ضرورت ہے۔

بلاگ

پاکستان کی نوجوان نسل اور غیرت بریگیڈ

"فحاشی" ایک دماغی بیماری ہے جس کا شکار ذہن عورت کو گھر کی دہلیز سے باہر دیکھ کر شدید 'صدمے' کا شکار ہو جاتا ہے۔

ڈی چوک، گدھا اور نا تجربہ کار حجام

آپ کے لیڈر رہیں یا چلے جائیں، یا رسی سے گدھا بندھا ہو یا نہیں، لیکن کسی نا تجربہ کار شخص کو اپنی حجامت مت بنانے دیجئے گا

دھرنے بمقابلہ جمہوریت

جمہوریت میں ہر بندے کی رائے برابر کی اہمیت رکھتی ہے۔ ممکن ہے کہ وہ سیاست دان بھی منتخب ہوجائیں، جو لیڈرشپ کے قابل نہیں۔

آزادی کے سائیڈ افیکٹس

اس قوم کا مزید آزادی کی بات کرنا بہت حیران کن ہے۔ یہ قوم تو آزادی کے سائیڈ افیکٹس کا شکار ہے۔