23 ستمبر, 2014 | 27 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

پاکستان ہندوستان کیساتھ دوستانہ تعلقات کا خواہاں ہے: صدر زرداری

صدر آصف علی زرداری اور بھارتی ریاست بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار کے درمیان ملاقات کا ایک منظر۔ – اے پی پی فوٹو

اسلام آباد: صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان ہندوستان کے ساتھ دوستانہ اور تعاون پر مبنی تعلقات کا خواہش مند ہے اور دونوں ممالک کے درمیان تعاون بڑھانے کے شاندار مواقع موجود ہیں۔

منگل کی شام ایوان صدر میں ہندوستانی ریاست بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار اور ان کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے صدر نے تعلیم ‘ صحت اور کمیونٹی ڈویلپمنٹ کے شعبوں میں تعاون تلاش کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

صدر نے دونوں ممالک کے درمیان جاری مذاکراتی عمل پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی تمام مرکزی سیاسی جماعتوں میں ہندوستان کے ساتھ اچھے تعلقات کے لئے عمومی اتفاق رائے پایا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم خطے میں دیر پا امن کے لئے تمام تصفیہ طلب تنازعات کا پرامن حل چاہتے ہیں۔

صدر نے ہندوستانی وفد کو دیوالی کی مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان اس طرح کے پارلیمانی تبادلے انتہائی حوصلہ افزاء ہیں اور ان سے عوامی روابط مضبوط ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک اپنی صوبائی اسمبلیوں میں فرینڈ شپ گروپ تشکیل دینے پر غور کرسکتے ہیں۔

صدر نے بہار کے شاندار ثقافتی اور تہذیبی ورثے کو سراہتے ہوئے کہا کہ عوام کے درمیان زیادہ رابطوں اور وسیع تر تعاون سے دونوں ممالک کو فائدہ پہنچے گا۔

انہوں نے بہار کے ترقیاتی ماڈل کو سراہا جس میں سماجی شعبے خصوصاً تعلیم ‘صحت اور کمیونٹی ڈویلپمنٹ پر زور دیا گیا ہے۔اس موقع پر صدر نے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کا ذکر کیا جس کی بدولت ملک بھر میں لاکھوں غریب لوگوں کو فائدہ پہنچ رہا ہے۔ انہوں نے پروگرام کے مختلف حصوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو غربت اور بے روزگاری کے خاتمے میں اپنے تجربے کے تبادلے پر مسرت ہوگی۔

نتیش کمار نے صدر کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستان کے عوام بھی پاکستان کے ساتھ اچھے اور دوستانہ تعلقات خواہش مند ہیں۔

ملاقات کے دوران ہندوستانی وفد کے ارکان قائم مقام ہائی کمشنر گوپال بگلے ‘ بہار کی وزیر انڈسٹری رینو کماری ‘ وزیر ثقافت سکھادا پانڈے ‘ ڈپٹی چیئرمین بہار قانون ساز کونسل سلیم پرویز ‘ بہار کے اقلیتی کمیشن کے چیئرمین نوشاد احمد ‘ رکن راجیہ سبھا این کے سنگھ‘ چیف سیکرٹری بہار اشوک کمار سنہا کے علاوہ وزیر خارجہ حنا ربانی کھر ‘ بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کی چیئرپرسن فرزانہ راجہ ‘ قومی ہم آہنگی کے وزیر ڈاکٹر پال بھٹی ‘ رکن قومی اسمبلی اسماء ارباب عالمگیر ‘ رکن صوبائی اسمبلی انور سیف اللہ خان اور دیگر اعلیٰ حکام بھی موجود تھے۔

بعد میں صدر نے نتیش کمار اور ان کے وفد کے اعزاز میں عشائیہ بھی دیا ۔

اس حصے سے مزید

لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر ڈی جی آئی ایس آئی مقرر

رضوان اختر اب تک ڈائریکٹر جنرل رینجرز کے عہدے پر کام کررہے تھے، وہ جلد ہی اپنی نئی ذمہ داری سنبھال لیں گے۔

سرکاری اداروں میں بھرتیوں پرپابندی ختم

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سیلاب متاثرین کو فی خاندان 25 ہزار روپے امداد دی جائے۔

گورنر پنجاب کا شریف برادران سے اختلافات کی تردید

میں مستعفی نہیں ہورہا، اس حوالے سے رپورٹس میں کوئی صداقت نہیں ہے کہ لندن سے واپسی پر میں استعفیٰ دے دوں گا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مڑی تڑی باتیں اور مقاصد

چیزوں کو اپنی مرضی کے مطابق توڑ مروڑ کر پیش کرنے، اور غیر آئینی اقدامات سے پاکستان کے مسائل میں صرف اضافہ ہی ہوگا۔

ذمہ داری ضروری ہے

سرکلر ڈیٹ کے لاعلاج مرض کی بدولت عالمی مالیاتی ادارے ہمارے توانائی کے منصوبوں میں سرمایہ کاری میں دلچسپی نہیں رکھتے۔

بلاگ

خواب دو انقلابیوں کے

ایک انقلابی خود کو وزیر اعظم بنتا دیکھ رہا ہے تو دوسرا صدارتی محل میں مریدوں سے ہاتھ پر بوسے کروانے کے خواب دیکھ رہا ہے۔

کوئی ان سے نہیں کہتا۔۔۔

ریڈ زون کے محفوظ باسیو! ہمیں دہشت گردوں، ڈاکوؤں، چوروں، اغواکاروں، تمہاری افسر شاہی اور پولیس سے بچانے والا کوئی نہیں۔

بلوچ نیشنلزم میں زبان کا کردار

لسانی معاملات پر غیر دانشمندانہ طریقہ سے اصرار مزید ناراضگی اور پیچیدگیوں کا سبب بن سکتا ہے، جو شاید مناسب قدم نہیں۔

خواندگی کا عالمی دن اور پاکستان

تعلیم کو سرمایہ کاروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے جن کے لیے تعلیم ایک جنس ہے جسے بیچ کر منافع کمایا جاسکتا ہے-