21 اپريل, 2014 | 20 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

لکی مروت میں خودکش حملہ ناکام، بمبار ہلاک

خود بمبار کی جیکٹ پھٹنے کے بعد پولیس اہلکار جائے وقوعہ کا جائزہ لے رہا ہے۔ فوٹو ظاہر شاہ

لکی مروت: محلہ سیداں میں جمعے کی رات پولیس نے ایک خود کش حملہ ناکام بناتے ہوئے مشتبہ خود کش بمبار کو ہلاک کردیا جبکہ گلگت میں شرپسندوں نے ایک مکان پر دستی بم سے حملہ کیا تاہم اس میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

ڈان ڈاٹ کام کے نمائندے ظاہر شاہ شیرازی کے مطابق آٓفیشلز نے بتایا کہ محلہ سیداں میں ایک چیک پوائنٹ پر امام بارگاہ کے قریب پولیس نے مشتبہ خودکش بمبار کو رکنے کا اشارہ کیا تو اس نے فائرنگ کردی جس پر پولیس کی جوابی فائرنگ کے نتیجے میں مشتبہ بمبار مارا گیا۔

 ضلع پولیس افسر ادریس خان نے بتایا کہ محلہ باغبانن میں مسجد غوثیہ کے قریب چیک پوائنٹ جو شیعہ برادری کے سیداں محلے میں جانے کا داخلی داستہ بھی ہے پر کمبل اوڑھے ایک خودکش بمبار کو روکا تاہم وہ پولیس پر فائرنگ کرتے ہوئے ایک گلی میں بھاگ گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس دوران اس نے پولیس پر ایک دستی بم بھی پھینکا جس کے جواب میں پولیس کی فائرنگ سے اس کی خود کش جیکٹ پھٹ گئی اور وہ موقع پر ہی ہلاک ہو گیا۔

دیگر ذرائع کے مطابق مشتبہ بمبار ایک رکشا میں سوار تھا اور روکنے پر اس نے پولیس پر فائرنگ کرنے کے ساتھ ساتھ دستی بم سے بھی حملہ کیا۔

لکی مروت کے پولیس آفیشلز کے مطابق حملے سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا اور خود بمبار کی جیکٹ پھٹنے سے دو اہلکار معمولی زخمی ہوئے ہیں۔

آفیشل نے کہا کہ خود کش بمبار کا ممکنہ ہدف شیعہ رہنما کے گھر جاری مجلس عزا یا محلہ سیداں کی امام بارگاہ تھی تاہم پولیس کی بروقت کارروائی سے ایک بڑا جانی نقصان ہونے سے بچ گیا۔

دوسری جانب گلگت کے علاقہ کنوداس میں شرپسندوں نے ایک مکان  پر دستی بم کا حملہ کیا گیا تاہم اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

اس حصے سے مزید

خیبر پختونخوا کے تمام تھانوں میں 'خواتین ڈیسک'

ڈیسک تشکیل دینے کا مقصد خواتین کو سہولت فراہم کرنا ہے، وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک۔

آئی ایم ایف اسٹیٹ بینک کی خودمختاری کے بل سے غیرمطمئن

آئی ایم ایف مشن کے سربراہ نے ڈان کوبتایا کہ آئی ایم ایف کو اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ترمیمی ایکٹ میں کچھ تحفظات ہیں۔

چمن: ڈپٹی کمشنر کے دفتر کے باہر دھماکا، تین زخمی

واقعے کے نتیجے میں دو خواتین سمیت تین افراد زخمی ہوئے جنہیں طبی امداد دی جارہی ہے، پولیس۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

نریندر مودی اور نواز شریف ساتھ ساتھ

اگر بی جے پی حکومت بنانے میں کامیاب ہوتی ہے تو 1998 کی طرح آج بھی پاکستان میں نواز شریف کی ہی حکومت ہوگی۔

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔