21 اپريل, 2014 | 20 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

ٹی ٹی پی ترجمان کی اطلاع پر بیس کروڑ کا انعام

وفاقی وزیرداخلہ رحمان ملک ۔ اے پی پی تصویر

اسلام آباد: وفاقی وزیرداخلہ رحمان ملک نے تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے ترجمان احسان اللہ احسان کی کے بارے میں معلومات فراہم کرنے والے کو بیس کروڑ روپے انعام دینے کا اعلان کردیا ہے۔

 منگل کو اسلام آباد میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے رحمان ملک نے کہا ہے کہ   احسان اللہ احسان کا تعلق ٹی ٹی پی سے نہیں ہے بلکہ یہ گروپ ملک میں بیرونی عناصر کیلئے کام کررہا ہے۔

 انکا کہنا تھا کہ وہ جلد عوام کے سامنے ٹی ٹی پی ترجمان کی حقیقت پیش کریں گے۔

 وفاقی وزیرداخلہ نے کہا کہ اس وقت تحریک طالبان پاکستان مختلف گروپوں میں تقسیم ہو چکی ہے جس میں ولی الرحمان گروپ، حکیم اللہ محسود گروپ اور دیگر چھوٹے گروپ بھی شامل ہیں۔

 اس موقع پر انہوں نے کہا کہ احسان اللہ احسان ملک میں کون سی شریعت نافذ کرنا چاہتا ہے جس میں معصوم انسان کو قتل کرنا اور خود کش دھماکے کرنا جائزہ ہیں۔

 رحمان ملک نے کہا کہ دہشت گرد  پیسوں کیلئے اسلام، قرآن اور شریعت کو بدنام کررہے ہیں ۔

 ایک سوال پر وفاقی وزیر داخلہ نے کہا سوات میں ٹی ٹی پی کے ساتھ امن معاہد ہ کیا تھا تاہم انہوں نے معاہدے کی خود خلاف وزی کی ۔

 انکا مزید کہنا تھا کہ اگر شرپسند اور دہشت گرد ہتھیار پھینک دیں تو ان کو عام معافی دی جاسکتی ہے۔

اس حصے سے مزید

آئی ایم ایف اسٹیٹ بینک کی خودمختاری کے بل سے غیرمطمئن

آئی ایم ایف مشن کے سربراہ نے ڈان کوبتایا کہ آئی ایم ایف کو اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ترمیمی ایکٹ میں کچھ تحفظات ہیں۔

ای سی ایل سے متعلق مشرف کی سندھ ہائی کورٹ میں درخواست

درخواست میں کہا گیا کہ مشرف اپنی والدہ سے ملنے دبئی جانا چاہتے ہیں، لہٰذا ان کا نام ای سی ایل سے خارج کیا جائے۔

کراچی پُرتشدد واقعات میں پانچ افراد ہلاک

اسی دوران شہر میں رینجرز اور پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے کم از کم بارہ مشتبہ افراد کو حراست میں لے لیا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

نریندر مودی اور نواز شریف ساتھ ساتھ

اگر بی جے پی حکومت بنانے میں کامیاب ہوتی ہے تو 1998 کی طرح آج بھی پاکستان میں نواز شریف کی ہی حکومت ہوگی۔

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے