16 اپريل, 2014 | 15 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی، سندھ کے دیگر بڑے شہروں میں رات گئے کشیدگی

کراچی پولیس۔ فائل تصویر
کراچی پولیس۔ فائل تصویر

کراچی: کراچی اور سندھ کے دیگر بڑے شہروں میں رات گئے اچانک کشیدگی پھیل گئی۔ مختلف علاقوں میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے دکانیں اور کاروباری مراکز بند کرادیئے۔

جبکہ مقامی انتظامیہ اور سیکیورٹی ادارے اس بارے میں خاموش رہے اور نہ ہی اس کی کوئی وجہ بیان کرسکے۔

اچانک فائرنگ سے لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا۔

سندھ وزیر اعلی نے پولیس اور رینجرز کو حساس علاقوں میں گشت کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔

علاوہ ازیں ایم کیو ایم کے ترجمان کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ ایم کیو ایم کا اس معاملے سے کچھ لینا دینا نہیں۔

فائرنگ اور دکانیں بند کرانے کا آغاز کراچی کے علاقے گلستان جوہر سے ہوا۔ اس کے بعد شہر کے دیگر علاقوں ناظم آباد ، گرومندر،اورنگی ٹاؤن،ملیر، جمشید روڈ، لانڈھی ، کورنگی میں بھی بازار ، پیٹرول پمپس ، سی این جی اسٹیشن اور دیگر دکانیں مکمل طور پر بند ہوگئیں۔

لطیف آباد ، پریٹ آباد، پھلیلی ، گاڑی کھاتہ میں بھی دکانیں بند کرادی گئیں۔۔میرپور خاص، سکھر ، نواب شاہ، کوٹری، ٹنڈو الہیار میں بھی فائرنگ کے بعد دکانیں بند ہوگئیں۔

اس حصے سے مزید

خیرپور میں گیس پائپ لائن دھماکے سے تباہ

پولیس کے مطابق دھماکے کے بعد سندھ کے مختلف شہروں میں گیس کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔

کراچی کی دوسری خاتون پولیس ایس ایچ او

پولیس حکام نے ادارے میں صنفی توازن قائم کرنے کے لیے ایک اور خاتون کو سٹیشن ہاؤس افسر تعینات کیا ہے۔

الطاف حسین نفرت اور تفریق ختم کرنے کے خواہاں

ایم کیو ایم کے قائد نے کہا کہ سندھی عوام کو اپنے حقوق کے لیے ایک ہو کر متحرک ہونا پڑے گا۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (2)

altaf ka baap
15 دسمبر, 2012 04:53
altaf tujhay ab zameen per panah nahen milay ge qatil
عثمان
15 دسمبر, 2012 06:46
اگرچہ خبر کا متن شہر بند کروانے والوں کی شناخت کے بارے میں خاموش ہے مگر اس کا یو آر ایل سب کچھ بتا رہا ہے.
مقبول ترین
بلاگ

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟

جادو کا چراغ: نبض کے بھید اور ایک برباد محبت

بوڑھے دانا طبیب نے مختلف ناموں پر بدلتی نبض کو دیکھ کر لڑکی کی پراسرار بیماری کا علاج کیا-

سارے جہاں سے مہنگا - ریویو

فلم میں ایک اچھوتا خیال پیش کیا گیا ہے کہ کس طرح 'جگاڑ' کر کے ایک مڈل کلاس آدمی مہنگائی کا توڑ نکالتا ہے۔