02 اکتوبر, 2014 | 6 ذوالحجہ, 1435
ڈان نیوز پیپر

کرپشن کی وجہ غیر ملکی حکومتیں ہیں، کرزئی

افغانستان کے صدر حامد کرزئی ۔ فائل فوٹو اے ایف پی۔
افغانستان کے صدر حامد کرزئی ۔ فائل فوٹو اے ایف پی۔

کابل: افغانستان کے صدر حامد کرزئی نے انکے ملک میں بڑے پیمانے پر جاری کرپشن کا الزام انکی حکومت اور فوج کو فنڈز پہنچانے والے ممالک پر عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسکی وجہ سے افغانستان میں قانون کی حکمرانی نہیں ہورہی۔

 ہفتے کو ملک کے قومی ٹیلی ویژن چینل پر نشر ہونے والے خطاب میں انہوں نے کہا کہ افغان حکومت ملک میں کرپشن کو ختم کرنے کے لیے اقدامات کررہی ہے۔

 انکا کہنا تھا کہ ابھی بہت کام کیا جانا باقی ہے تاہم اندرونی کرپشن غیر ملکی حکومتوں کے سودوں میں ہونے والی کرپشن کے مقابلے میں نہ ہونے کے برابر ہے۔

 بین الاقوامی ڈونرز کا موقف ہے کہ وہ کرزئی کی اس حوالے سے مدد کرنا چاہتے ہیں تاہم سیاسی اتحادیوں کے خلاف کارروائی نہ کرنے کی وجہ سے انکی حوصلہ شکنی ہوتی ہے۔

 کرزئی اکثر غیر ملکی اتحادیوں پر افغانستان کو درپیش مسائل کا الزام عائد کرتے ہیں۔

اس حصے سے مزید

کابل میں دو خودکش بم دھماکے، چھ ہلاک

پولیس حکام کے مطابق چھ اہلکار ہلاک ہوئے ہیں، جبکہ طالبان کا دعویٰ ہے کہ ان حملوں میں کم سے کم بیس فوجی ہلاک ہوئے ہیں۔

افغان امریکا دوطرفہ سیکیورٹی معاہدے پر دستخط

افغانستان اور امریکا نے منگل کو افغان صدارتی محل میں دوطرفہ سیکیورٹی کے معاہدے پر دستخط کردیئے۔

افغان صدر اشرف غنی اور چیف ایگزیکٹیو عبداللہ نے حلف اٹھا لیا

حلف برداری کی تقریب کے موقع پر دارالحکومت کابل میں سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماؤں اور بچوں کے قاتل ہم

پاکستان سے کم فی کس آمدنی رکھنے والے ممالک پیدائش کے دوران ماؤں اور بچوں کی اموات پر قابو پا چکے ہیں۔

تبدیلی کا پیش خیمہ

اکثر ایسے بڑے واقعات پیش آتے ہیں جو تبدیلی کے عمل کو تیز کردیتے ہیں، مگر ایسے حالات کسی فرد کے پیدا کردہ نہیں ہوتے۔

بلاگ

!گو نواز گو

اس ملک میں پڑھے لکھے لوگوں کی قدر ہی نہیں۔ جب تک پڑھے لکھوں کو وی آئی پی پروٹوکول نہیں دیا جاتا یہ ملک ترقی نہیں کرسکتا

قدرتی آفات اور پاکستان

قدرتی آفات سے پہلے انتظامات پر ایک ڈالر جبکہ بعد میں سات ڈالر خرچ ہوتے ہیں، اس کے باوجود ہم پہلے سے انتظامات نہیں کرتے۔

مقابلہ خوب ہے

کوئی دنیا کے در در پر پھیلے ہمارے کشکول کی زیارت کرے، پھر اس میں خیرات ڈالنے والوں کو فتح کرنے کے ہمارے عزم بھی دیکھے۔

پاکستان میں ذہنی بیماریاں اور ہماری بے حسی

آخر ذہنی بیماریوں کے شکار کتنے اور لوگوں کو اپنے گھرانوں کی بے حسی، اور معاشرے کی جانب سے ٹھکرائے جانے کو جھیلنا پڑے گا؟