25 جولائ, 2014 | 26 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

ٹنڈولکر ایک روزہ کرکٹ سے ریٹائر

سچن ٹنڈولکر ۔ فائل تصویر اے ایف پی
سچن ٹنڈولکر ۔ فائل تصویر اے ایف پی

نئی دہلی: ہندوستان کے ممتاز بیٹس مین سچن ٹنڈولکر اتوار کے روز ون ڈے انٹرنیشنل سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا ہے۔

عالمی شہرت یافتہ کرکٹر نے کہا کہ ' میں کرکٹ کے ون ڈے فارمیٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کرتا ہوں، ' ٹنڈولکر نے اپنے اعلان میں کہا۔ ' میں خوش نصیب ہوں کہ ورلڈ کپ جیتنے والی انڈین ٹیم کا حصہ بنا۔ 2015 میں ورلڈ کپ ٹائٹل کے دفاع کیلئے تیاری جتنی جلدی ممکن ہو شروع کردی جائے۔

انہوں نے کہا ' میں مسقبل کیلئے اپنی ٹیم کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کرتا ہوں۔ میں اپنے تمام چاہنے والوں کی غیرمشروط سپورٹ اور پیار کیلئے ان کا ہمیشہ شکرگزار رہوں گا۔ '

'ٹنڈولکر نے اپنے ون ڈے کیریئر میں 463 میچ کھیلے ۔ وہ سب سے ذیادہ رنز (18,426) اورسنچری (49)  بنانے والے کھلاڑی ہیں۔ انہوں نے اپنی ریٹائرمنٹ کا اعلان اس وقت کیا ہے جب کچھ دنوں بعد ہندوستان کی سرزمین پر پاکستان اور ہندوستان کے درمیان محدود اوورز کی ایک سیریز کھیلی جائے گی۔

ہندوستان کے سابق چیف سلیکٹر، کرشنا مچاری سری کانت، نے کہا ہے کہ وہ اس اعلان کے وقت پر حیران ہیں۔

انہوں نے سی این این ۔ آئی بی این نیوز سے بات کرتے ہوئے کہا کہ 'سچن کا اعلان ایک بڑا سرپرائز ہے، میں سمجھتا تھا کہ وہ پاکستان کیخلاف ون ڈے سیریز کھیلیں گے'۔

اس حصے سے مزید

پاکستان کی ڈومیسٹک لیگ کا نیا منصوبہ متعارف

پاکستانی کرکٹ کی انتظامیہ نے ڈومیسٹک لیگ کے ڈھانچے میں تبدیلیاں کرتے ہوئے دو ڈویژنز پر مشتمل نیا منصوبہ متعارف کرایا ہے

پاکستان کرکٹ کے نئے آئین کا خواب شرمندہ تعبیر

بالآخر پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) کے نئے آزاد آئینی مسودہ کی نقل منگل کو منظر عام پر آ گئی ہے۔

پاکستانی کرکٹروں کو پھنسانے والا رپورٹر معطل

مظہر محمود عرف 'جعلی شیخ' کی معطلی کا فیصلہ لندن کی ایک عدالت میں جھوٹ بولنے کے الزامات لگنے کے بعد ہوا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ایک عہد ساز فیصلہ

مذہب کا مطلب صرف بے لچک پن اور سخت گیری نہیں ہوتا، مذہبی آزادی میں ضمیر، خیالات، احساسات، عقیدہ سب شامل ہونا چاہئے-

بے وجہ پوائنٹ اسکورنگ

ہوسکتا ہے عمران خان پی ایم ایل-ن کی حکومت گرانا چاہتے ہوں لیکن کیا وہ واقعی ملک اور اسکے جمہوری اداروں کے لئے خطرہ ہیں؟

بلاگ

صحت عامہ کا بنیادی مسئلہ

سیاسی جماعتیں اپنے حامیوں کو محض نعرے لگوانے کے بجاۓ تعمیری سرگرمیوں کے لئے کیوں متحرک نہیں کرتیں؟

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔

شکایتوں کا بن جو میرا دیس ہے

شکایتی ٹٹو زنده قوم کی نشانی ہوتے ہیں۔ مستقل شکایت کرتے رہنا اب ہماری پہچان بن چکا ہے۔

کھیلنے دو: گراؤنڈز کہاں ہیں؟

سیدھی سی بات ہے، ملائی تبھی زیادہ اور بہترین ہوگی جب دودھ زیادہ ہوگا-