21 ستمبر, 2014 | 25 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

سپریم کورٹ کے فیصلے پر ایم کیو ایم کی درخواستیں

ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینئرڈاکٹر فاروق ستار۔ – فائل فوٹو
ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کے ڈپٹی کنوینئرڈاکٹر فاروق ستار۔ – فائل فوٹو

کراچی: متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) نے کراچی میں نئی حلقہ بندیوں سے متعلق سپریم کورٹ کے فیصلے کیخلاف دو درخواستیں دائر کردی ہیں۔

پیر کو ایم کیو ایم کے سینیٹر ایڈووکیٹ فروغ نسیم کی جانب سے دائر کی گئی درخواستوں میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ مردم شماری کے بغیر نئی حلقہ بندیاں غیرآئینی اور غیرقانونی ہیں۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری کے باہر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ مردم شماری کے بغیر ازسرنو حلقہ بندیاں کرانا غیرآئینی اور غیر قانونی ہے۔

انکا کہنا تھا کہ حلقہ بندیاں کرانا ہی ہیں تو صرف کراچی میں نہیں پورے ملک میں کرائی جائیں۔

ڈاکٹر فاروق ستار کے مطابق، وہ سمجھتے ہیں کہ مردم شماری کے بغیر کراچی میں حلقہ بندیاں کراکر ایم کیو ایم کو دیوار سے لگایا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے 26 نومبر کو کراچی میں ازسر نو حلقہ بندیاں کروانے کا حکم دیا تھا۔

فیصلے سے متعلق اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے متحدہ کے قائد الطاف حسین نے 29 نومبر کو اپنے خطاب میں سپریم کورٹ کے ایک جج  کے ریمارکس کو سراسر غیرآئینی، غیر جمہوری اور متعصبانہ قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ کسی بھی جماعت کو مینڈیٹ دینا عدالت کا نہیں بلکہ عوام کا جمہوری حق ہے۔

اس پر چودہ دسمبر کو سپریم کورٹ نے متحدہ کے قائد کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کرتے ہوئے سات جنوری کو طلب کیا تھا۔

عدالت کا کہنا تھا کہ الطاف حسین کا کراچی بدامنی کیس کی سماعت کرنے والے ججوں سے متعلق خطاب توہین اور دھمکی آمیز تھا۔

اس حصے سے مزید

عمران خان الزامات ثابت کریں یا عدالت کا سامنا، خورشید شاہ

اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے خبردار کیا کہ اگر عمران خان نے ایسا نہیں کیا تو وہ ان کے خلاف عدالت میں جائیں گے۔

تبدیلی کا نعرہ لیے عمران خان کی آج کراچی آمد متوقع

پی ٹی آئی کا کہنا ہے کہ اسلام آباد میں دھرنے کے بعد اب وقت آگیا ہے کہ اسے ملک کے دیگر شہروں کی جانب منتقل کیا جائے۔

پشاور: سخت سیکیورٹی میں انسدادِ پولیو مہم جاری

حکام کے مطابق پشاور کی 96 یونین کونسلوں میں آج سات لاکھ 54 ہزار بچوں کو پولیو سے بچائو کے قطرے پلائے جا رہے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

پاکستان کی "مڈل کلاس" بغاوت

پاکستان کے مڈل کلاس لوگ ہی جمہوریت کے سب سے بڑے مخالف ہیں اور کچھ کیسز میں تو جمہوریت کی مخالفت بغاوت کی حد تک شدید ہے۔

!میرے پیارے اسلام آباد

میں آپ سے معافی چاہتا ہوں کہ میں نے آپ کی جانب دو دھرنے بھیجے ہیں، جنہوں نے آپ کا امن و سکون تباہ کر دیا ہے۔

بلاگ

بلوچ نیشنلزم میں زبان کا کردار

لسانی معاملات پر غیر دانشمندانہ طریقہ سے اصرار مزید ناراضگی اور پیچیدگیوں کا سبب بن سکتا ہے، جو شاید مناسب قدم نہیں۔

خواندگی کا عالمی دن اور پاکستان

تعلیم کو سرمایہ کاروں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے جن کے لیے تعلیم ایک جنس ہے جسے بیچ کر منافع کمایا جاسکتا ہے-

ڈرامہ ریویو: چپ رہو - حساس ترین موضوع پر بہترین پیشکش

زیادتی جیسے واقعات ہر وقت خبروں میں رہتے ہیں اس حوالے سے یہ ڈرامہ شعور اجاگر کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔

میں باغی ہوں

اس ملک میں کہیں قانون کی حکمرانی نہیں، ہر جگہ لوٹ مار مچی ہے- کسی کو قانون کا پاس نہیں- تبدیلی آئی تو سب کا احتساب ہوگا-