23 ستمبر, 2014 | 27 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

'امن مذاکرات متاثر نہیں ہوئے'

پاکستانی وزیرِخارجہ، حنا ربانی کھر۔—فائل فوٹو
پاکستانی وزیرِخارجہ، حنا ربانی کھر۔—فائل فوٹو

اسلام آباد: پاکستان کی وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ لائن آف کنٹرول پر فائر بندی کی حالیہ خلاف ورزیوں کے باوجود ہندوستان کے ساتھ امن مذاکرات متاثر نہیں ہوئے۔

جمعرات کو دفتر خارجہ میں منعقد ہونے والی ایک پریس کانفرنس میں حنا ربانی کھر نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ہندوستان کی جانب سے اشتعال انگیز بیانات کے باوجود انہیں مذاکرات کا عمل رکتا نظر نہیں آتا۔

ان بیانات کی وجہ سے ماحول میں تناؤ کو تسلیم کرتے ہوئے کھر نے کہا کہ تحمل کا مظاہرہ جاری رکھا جائے گا۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ ہندوستانی فوجیوں کی ایل او سی کے پار کارروائی میں پاکستانی فوجی کی ہلاکت کے بعد پڑوسی ملک کے بیانات پر اسلام آباد کو ناخوش گوار حیرت ہوئی ہے۔

انہوں نے امید ظاہر کی کہ ہندوستان بھی صورتحال کو ٹھیک کرنے میں اسی طرح دلچسپی لے گا جس طرح 'ہم نے اتوار کو پاکستانی چیک پوسٹ پر حملے کے بعد کیا تھا'۔

اس موقع پر وزیر خارجہ نے ایک مرتبہ پھر فائر بندی کی خلاف ورزی کی یہاں موجود اقوام متحدہ کے عسکری جائزہ گروپ سے تحقیقات کی پیشکش کو دہرایا۔

حنا کھر نے بتایا کہ پاکستان نے ہندوستان کی طرح اشتعال انگیز بیانات سے تناؤ میں اضافہ کرنے کے بجائے ایک طریقہ کار کے ذریعے صورتحال سے نمٹا۔

انہوں نے پاکستان کی جانب سے اٹھائے گئے اقدامات کے حوالے سے بتایا کہ دونوں ملکوں کے ملٹری آپریشنز کے ڈائریکٹر جنرلز کے درمیان فوری طور پر رابطہ قائم کیا گیا اور پھر ہندوستان کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو طلب کیا گیا۔

کھر کا کہنا تھا کہ پاکستان نے اسی طرح کی مشکل صورت حال میں ہمیشہ ذمہ داری کا مظاہرہ کیا ہے۔

ادھر، فوجی ذرائع نے بتایا ہے کہ جمعرات کو ایک اور پاکستانی فوجی ہندوستان کی جانب سے نئے سال کے پہلے دس دنوں میں فائر بندی کی دسویں خلاف ورزی میں ہلاک ہوا ہے۔

اس حصے سے مزید

الیکشن کمیشن نے تحریک انصاف کے موقف کی توثیق کردی، شاہ محمود

الیکشن کمیشن کی رپورٹ نےسب کچھ عیاں کردیا اور یہ چارج شیٹ کی حیثیت رکھتی ہے، رہنما پی ٹی آئی۔

عمران خان استعفی کی تصدیق کیلئے 13اکتوبر کو طلب

اسپیکرقومی اسمبلی نے تحریک انصاف کے ارکان کو 25ستمبر سےطلب کرنے کااعلان کیا ہےجبکہ 31ارکان کو 3گروپس میں بلایا جائے گا

ای او بی آئی کرپشن اسکینڈل کا مرکزی ملزم گرفتار

پولیس اور ایف آئی اے نے ملزم ظفر گوندل کو سپریم کورٹ کے باہر سے گرفتار کرکے تھانہ سیکریٹریٹ منتقل کردیا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

سوشلزم کیوں؟

اگر ہم مسلسل بحث کرسکتے ہیں کہ جمہوریت کیوں نہیں، شریعت کیوں نہیں، تو اس سوال پر بھی بحث ضروری ہے کہ سوشلزم کیوں نہیں؟

مڑی تڑی باتیں اور مقاصد

چیزوں کو اپنی مرضی کے مطابق توڑ مروڑ کر پیش کرنے، اور غیر آئینی اقدامات سے پاکستان کے مسائل میں صرف اضافہ ہی ہوگا۔

بلاگ

مووی ریویو: 'خوبصورت' - فواد اور سونم کی خوبصورت کہانی

اپنے پُر مزاح کرداروں کے باوجود فلم شوخ اور رومانٹک ڈرامہ ہے، جسے آپ باآسانی ڈزنی کی طلسماتی کہانی کہہ سکتے ہیں-

کراچی میں بجلی کا مسئلہ اور نیپرا کا منفی کردار

اپنی نااہلی کی وجہ سے نیپرا نے بیرونی سرمایہ کاروں کو مشکل میں ڈال رکھا ہے، جن میں سے کچھ تو کام شروع کرنے کو تیار ہیں۔

خواب دو انقلابیوں کے

ایک انقلابی خود کو وزیر اعظم بنتا دیکھ رہا ہے تو دوسرا صدارتی محل میں مریدوں سے ہاتھ پر بوسے کروانے کے خواب دیکھ رہا ہے۔

کوئی ان سے نہیں کہتا۔۔۔

ریڈ زون کے محفوظ باسیو! ہمیں دہشت گردوں، ڈاکوؤں، چوروں، اغواکاروں، تمہاری افسر شاہی اور پولیس سے بچانے والا کوئی نہیں۔