22 اگست, 2014 | 25 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

راولاکوٹ: ہندوستانی فوج کی فائرنگ سے شہری زخمی

فائل فوٹو رائٹرز۔۔۔

مظفرآباد: راولا کوٹ کے قریب بٹل سیکٹر میں ہندوستانی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے ایک شہری زخمی ہوگیا۔

بارسوخ ذرائع کے مطابقہندوستانی فوج نے ایک بار پھر سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے لائن آف کنٹرول پر بلااشتعال فائرنگ کی، بٹل سیکٹر میں کی گئی فائرنگ کے نتیجے میں ایک شہری زخمی ہو گیا۔

یاد رہے کہ اس سے 10 جنوری کو بھی ہندوستانی فوج کی جانب سے فائرنگ کی گئی تھی جس کے نتیجے میں متعدد مکانوں کو نقصان پہنچا تھا۔

اس سے قبل پاکستان اور ہندوستان کے عسکری حکام کے درمیان فلیگ میٹنگ ہوئی جس میں پاکستان نے پڑوسی ملک سے مطالبہ کیا کہ وہ سیز فائر معاہدے کی پاسداری کرے۔

لائن آف کنٹرول پر پونچھ سیکٹر  کے مقام  پر پاکستان اور ہندوستانی فوجی کمانڈرز کی فلیگ میٹنگ ہوئی جس میں دونوں جانب سے اہم نمائندوں نے شرکت کی۔

عسکری ذرائع کے مطابق ہدوستانی کمانڈر نے پاکستان پر جارحیت کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ پاک فوج کی جانب سے فائرنگ کی گی، پاکستانی حکام نے نے ہندوستانی الزامات کو سختی سے مسترد کردیا۔

حکام نے اجلاس میں لائن آف کنٹرول پر ہندوستانی خلاف ورزیوں پر شدید احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستان سیز فائر کے معاہدے کی پاسداری نہیں کر رہا، انہوں نے مطالبہ کیا کہ پڑوسی ملک سیز فائر معاہدے  کی پاسداری یقینی بنائے۔

 یاد رہے کہ اس سے میٹنگ سے گھنٹہ قبل ہندوستانی آرمی چیف نے نئی دہلی میں پریس کانفرنس کی تھی جس میں انہوں نے کرتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستان پر کشمیر کی متنازع سرحد پر حملے کی پلاننگ کا الزام عائد کیا تھا۔

اس حصے سے مزید

اسلام آباد دھرنے: سیاسی بے یقینی برقرار

ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا کہ تحریک انصاف اور عوامی تحریک کے دھرنوں کے باعث موجودہ سیاسی صورتحال کیا رخ اختیار کرے گی۔

حکومت سے مذاکرات کے لیے تیار ہیں، عمران خان

ایک انٹرویو میں پی ٹی آئی سربراہ عمران خان نے کہا کہ انہیں ایسا تحقیقاتی کمیشن قبول نہیں جس کا سربراہ حکومتی نمائندہ ہو۔

عدالت سیاسی معاملات میں مداخلت نہیں کر سکتی، عوامی تحریک

دوسری جانب ممکنہ ماورائے آئین اقدام کیخلاف درخواست کی سماعت کے دوران پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ احتجاج کرنا آئینی حق ہے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مضبوط ادارے

ریاستی اداروں پر تمام جماعتوں کی جانب سے حملہ تب کیا گیا جب وہ ابتدائی طور پر ہی سہی پر قابلیت کا مظاہرہ کرنے لگے تھے۔

آئینی نظام کو لاحق خطرات

پی ٹی آئی کی سیاست کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ یہ کسی طرح موجودہ آئینی صورت حال میں ممکن سیاسی حل کیلئے تیار نہیں ہے-

بلاگ

عمران خان کے نام کھلا خط

گزشتہ ایک ہفتے کے واقعات پی ٹی آئی ورکرز کی تمام امیدوں اور توقعات کو بچکانہ، سادہ لوح اور غلط ثابت کر رہے ہیں۔

جعلی انقلاب اور جعلی فوٹیجز

تحریک انصاف اور عوامی تحریک کی غیر آئینی حرکتوں کی وجہ سے اگر فوج آگئی تو چینلز ایسی نشریات کرنا بھول جائیں گے۔

!جس کی لاٹھی اُس کا گلّو

ہر دکاندار اور ریڑھی والے سے پِٹنا کوئی آسان عمل نہیں ہوگا شاید یہی وجہ ہے کہ سول نافرمانی کوئی آسان کام نہیں۔

ہمارے کپتانوں کے ساتھ مسئلہ کیا ہے؟

اس بات کا پتہ لگانا مشکل ہے کہ مصباح الحق اور عمران خان میں سے زیادہ کون بچوں کی طرح اپنی غلطی ماننے سے انکاری ہے۔