20 اپريل, 2014 | 19 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

پاکستان سے تعلقات پہلے جیسے نہیں رہے، منموہن

ہندوستانی وزیر اعظم منموہن سنگھ۔ فائل فوٹو۔۔۔

نئی دہلی: ہندوستانی وزیر اعظم نے متنبہ کیا ہے کہ گزشتہ ہفتے پاکستان کی جانب سے کشمیر کی متنازع سرحد پر دو ہندوستانی فوجیوں کی ہلاکت کے بعد پڑوسی ملک پاکستان کے ساتھ تعلقات اب پہلے جیسے نہیں رہے۔

آرمی فنکشن کے موقع پر صحافیوں سے  گفتگو کرتے ہوئے ہندوستانی وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان سے تعلقات اب پہلے جیسے نہیں رہے۔

انہوں نے دو ہندوستانی فوجیوں کی ہلاکت اور ان میں سے ایک کی سربریدہ لاش ملنے کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ جو کچھ ہوا وہ ناقابل قبول ہے۔

منموہن نے کہا کہ ذمے داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے۔

دونوں ملکوں کی افواج کی جانب سے فائرنگ کے تبادلے کے بعد فلیگ میٹنگ میں احتجاج درج کرایا گیا تھا اور اسی روز میٹنگ سے تقریباً ایک گھنٹے قبل ہندوستانی آرمی چیف نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انڈین آرمی کو سرحد پر کسی بھی قسم کے فائرنگ کے تبادلے کے نتیجے میں جارحانہ اقدام اٹھانے کی ہدایت کی تھی۔

ہندوستانی حکومت نے آٹھ جنوری کو پاکستان پر اس کی حدود میں فائرنگ کرنے اور دو فوجی ہلاک کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔

پاکستان کی جانب سے ہندوستانی الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ اس کی فوجی ایسے کسی واقعے میں ملوث نہیں اور اس کےساتھ ساتھ پڑوسی ملک پر پاک فوج کے دو جوانوں کی ہلاکت کا الزام عائد کیا تھا۔

اس حصے سے مزید

وزیرِ اعظم نے حامد میر حملے کی جوڈیشل تحقیقات کا حکم دیدیا

کمیشن کیلئے سپریم کورٹ سے درخواست کی جائے گی، قاتلوں کی اطلاع پر ایک کروڑ روپے انعام کا اعلان۔

اقوامِ متحدہ نے اپنے دوکارکن لاپتہ ہونے کی تصدیق کردی

اقوامِ متحدہ کی ذیلی تنظیم یونیسیف کے مقامی ارکان کراچی کے باہر ایک تفریحی مقام سے لاپتہ ہوئے ہیں۔

'دہشت گردی ختم کیے بغیر مضبوط دفاع کا قیام ناممکن'

مضبوط معیشت اور دہشت گردی ختم کیے بغیر ملکی دفاع کا قیام ناممکن ہے،وزیر اعظم کا کاکول اکیڈمی میں پاسنگ آؤٹ پریڈ سے خطاب


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Sardar KHAN
15 جنوری, 2013 18:11
As usual,the Indian PM has scumed to the demands of Shive Sinna.They always make a U-Turn when they pressed.We do not need any trade with them.Our soldiers value for us is 100 times more than any of their's.It is a blessing and we should stop talking to them until they mend their ways.
مقبول ترین
بلاگ

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔