03 ستمبر, 2014 | 7 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

شام: حلب میں دھماکے سے 80 افراد ہلاک

شام میںسیکیورٹی اہلکار اور شہری حلب میں دھماکے کےمقام پر جمع ہیں۔ رائٹرز تصویر
شام میں سیکیورٹی اہلکار اور شہری حلب میں دھماکے کےمقام پر جمع ہیں۔ رائٹرز تصویر

حلب:  شام کے شہر حلب کی ایک یونیورسٹی میں ایک کے بعد ہونے والے دھماکوں میں 80 سے زائد افراد ہلاک ہوگئےہیں۔  منگل کے روز حلب کے گورنر محمد وحید عکاد اور یونیورسٹی  ہسپتال کے ذرائع نے ان ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے۔

' حلب یونیورسٹی میں طالبعلموں کو امتحان کے پہلے روز حملے کا نشانہ بنایا گیا جس میں 82 ہلاکتیں ہوئیں اور 160 سے زائد افراد زخمی ہوئےہیں،' عکاد نے خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کو فون پر بتایا۔

شام میں برطانیہ کی انسانی حقوق کی تنظیم نے کہا کم ازکم  52 افراد ہلاک ہوئے تھے لیکن بعد میں ان کی تعداد میں ڈرامائی انداز میں اضافہ ہوگیا۔

اس کیمپس میں طالبعلموں کے ساتھ ساتھ تیس ہزار افراد رہتے ہیں جو لڑائی کے بعد یہاں پناہ لینے پر مجبور تھے۔

طلبا کی جانب سے انٹرنیٹ پر ویڈیو بھی پوسٹ کی گئی ہے جہاں بچ جانے والے افراد کیمپس کی عمارت میں پناہ لینے پر مجبور ہیں۔

انسانی حقوق کے کارکنوں کے مطابق حکومتی جیٹ طیاروں کی جانب سے فائر کئے گئے میزائل ہلاکتوں کے ذمے دار ہیں۔ جبکہ فوجی ذرائع کا اصرار ہے کہ یہ زمین سے زمین تک مار کرنے والے وہ میزائل ہیں جو باغیوں نے فائر کئے اور نشانہ چوکنے پر یہاں آگرے تھے۔

آبزرویٹری کے مطابق، دھماکے آرکیٹیکچر مرکز کے قریب ہوئے۔

حکومتی ٹی وی نے کہا کہ ' دہشتگردوں نے دو راکٹ لانچ کئے ' جو حکومت کے زیرِ کنٹرول علاقے میں واقع یونیورسٹی کمپلیکس میں گرے۔

اس حصے سے مزید

داعش کے ہاتھوں ایک اور امریکی صحافی قتل

انٹرنیٹ پر جاری ویڈیو میں سوٹلوف کو نارنجی رنگ کے لباس میں دیکھا جا سکتا ہے،ایک نقاب پوش ان کے سر پر خنجر تانے کھڑا ہے

مصر: بم دھماکے میں 8پولیس اہلکار ہلاک

ایک اور واقعے میں غزہ جانے والی شاہراہ پر حملے میں 4 اہلکار زخمی ہوئے،انصار بیت المقدس نامی گروہ نے ذمہ داری قبول کی ہے

اقوام متحدہ کافلسطینی زمینوں پراسرائیلی قبضے پر اظہار تشویش

بان کی مون نے بیت اللحم کے ایک ہزار ایکڑ رقبے کو خودساختہ" ریاستی زمین" قرار دینے پر تشویش کا اظہار کیا ہے


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا'...الجھتے رشتوں کی کہانی

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔