28 جولائ, 2014 | 29 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

ہندوستانِ، پاکستان کشیدگی کم کرنے پر متفق

دونوں ممالک کے سینیئر فوجی حکام کے درمیان کشیدگی کو کم کرنے پر مفاہمت ہوگئی ہے، ترجمان انڈین فوج۔ اے پی فوٹو۔
دونوں ممالک کے سینیئر فوجی حکام کے درمیان کشیدگی کو کم کرنے پر مفاہمت ہوگئی ہے، ترجمان انڈین فوج۔ اے پی فوٹو۔

نئی دہلی: ہندوستانی فوج اور پاکستان کے درمیان کشمیر میں ہونے والی حالیہ کشیدگی کے بعد بڑھنے والی کشیدگی کو کم کرنے پر مفاہمت ہوگئی ہے۔

اے یف پی کی ایک رپورٹ کے مطابق، انڈین فوج کے ترجمان جگدیپ داہیہ نے کہا ہے کہ 'دونوں ممالک کی ملٹری آپریشنز کے ڈائریکٹر جنرلز کے درمیان کشیدگی کو کم کرنے پر مفاہمت ہوگئی ہے'

داہیہ کے مطابق، دونوں ممالک کے سینیئر فوجی حکام کے درمیان ٹیلی فون پر دس منٹ گفتگو ہوئی جس میں یہ معاہدہ طے پایا۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ گفتگو صبح دس بجے ہوئی جبکہ ڈی جی ایم او پاکستان کا کہنا ہے کہ فائر بندی نہ توڑنے کے سخت احکامات جاری کردیئے گئے ہیں۔

داہیہ نے بھی ان ہی کی بات دہراتے ہوئے کہا کہ ان کی جانب سے بھی فائر بندی کی خلاف ورزی نہیں کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ان کی جانب سے کبھی بھی اس کی خلاف ورزی نہیں ہوئی، انہوں نے ہمیشہ جوابی کارروائی کی ہے۔

ترجمان نے ہندوستان کے ڈی جی ایم او جنرل ونود بھاٹیہ اور انکے پاکستان ہم منصب جنرل اشفاق ندیم کے درمیان ہوئی اس گفتگو کی مزید معلومات فراہم نہیں کیں۔

اس حصے سے مزید

تین سالہ بچی کے ریپ کا ملزم گرفتار

پولیس کے مطابق ملزم متاثرہ بچی کا کزن ہے۔

گوجرانوالہ: مبینہ توہین مذہب پر تین احمدی ہلاک

مشتعل ہجوم نے فیس بک پر مبینہ ’توہین آمیز مواد کی اشاعت‘ کے بعد احمدیوں کے 5 گھر نذرِ آتش کر دیے، رپورٹ۔

کراچی: لیاقت علی خان کے بیٹے انتقال کر گئے

اشرف علی خان اپنے والد کی وفات کے وقت محض 14 برس کے تھے، اُن کو کراچی میں سپرد خاک کیا جا ئے گا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

جنگ اور ہوائی سفر

پرواز کرنے کا معجزہ، جو انسانی ذہانت کا خوشگوار مظہر ہے، انسان کے انتقامی جذبات اور خون کی پیاس کی نذر ہوگیا ہے

تھوڑا سا احترام

آپ ایک مایوس، خوفزدہ بیوروکریسی سے کیا توقع کرسکتے ہیں جنہیں اپنی سمت کا علم نہ ہو؟

بلاگ

ترغیب و خواہشات: رمضان کا نیا چہرہ؟

کسی مقامی رمضان ٹرانسمیشن کو لگائیں اور وہ سب کچھ جان لیں جو اب اس مقدس مہینے کے نئے چہرے کو جاننے کے لیے ضروری ہے

نائنٹیز کا پاکستان -- 1

ضیا سے مشرف کے بیچ گیارہ سال میں کبھی کرپشن کے بہانے تو کبھی وسیع تر قومی مفاد کے نام پر پانچ جمہوری حکومتیں تبدیل ہوئیں

ٹوٹے برتن

امّی کا خیال ہے کہ ایسے برتن پورے گاؤں میں کسی کے پاس نہیں۔ وہ تو ان برتنوں کو استعمال کرنے ہی نہیں دیتی

مجرم کون؟

کچھ چیزیں ڈنڈے کے زور پہ ہی چلتی ہیں، پھر آہستہ آہستہ عادت اور عادت سے فطرت بن جاتی ہیں۔