22 اگست, 2014 | 25 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

قادری کے مطالبات غیر آئینی ہیں، کائرہ

اے پی پی فوٹو

اسلام آباد :  وفاقی وزیر اطلاعات قمر زمان کائرہ نے منہاج القران کے سربراہ ڈاکٹر طاہرالقادری کے مطالبات کو غیر آئینی قرار دیدیا ہے۔

 ڈان نیوز کے مطابق بدھ کے روز اسلام آباد میں  وفاقی وزیر اطلاعات قمر زمان کائرہ نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ  سیاسی قوتوں نے آئین میں متفقہ ترمیم کے ذریعے نگران حکومت کے قیام کا پرانا طریقہ کار ختم کیا ہے۔

 وزیر اطلاعات نے کہا کہ سیاسی جماعتیں انتخابات کے انعقاد پر متفق ہیں۔ طاہر القادری عوام کو بہکانے کیلئے ہتکھنڈے استعمال نہ کرے۔

 انہوں نے کہا کہ پاکستان کو کسی بھولو پہلوان کی نہیں بلکہ ایک ذہین چیف الیکشن کمشنر کی ضرورت ہے۔

 قمر زمان کائرہ  نے کہا کہ کسی کی خواہش پر ادارے ختم نہیں کرسکتے،  ڈاکٹر قادری نے خواتین اور بچوں کو ڈھال بنایا ہوا ہے۔

 وفاقی وزیر نے کہا کہ لانگ مارچ سے آئین و قانون کے مطابق نمٹا جائےگا۔

 کائرہ کا کہنا تھا کہ حکومت نے تو طالبان کے ساتھ بھی مذاکرات سے انکار نہیں کیا طاہر القادری آئین کے دائرے میں رہیں تو ان سے بات ہوسکتی ہے۔

  وفاقی وزیر نے کہا حکومت اپنی مدت پوری کرے گی انتخابات 5 اور 15 مئی کے درمیان منعقد ہوں گے۔

اس حصے سے مزید

اسلام آباد دھرنے: سیاسی بے یقینی برقرار

ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا کہ تحریک انصاف اور عوامی تحریک کے دھرنوں کے باعث موجودہ سیاسی صورتحال کیا رخ اختیار کرے گی۔

حکومت سے مذاکرات کے لیے تیار ہیں، عمران خان

ایک انٹرویو میں پی ٹی آئی سربراہ عمران خان نے کہا کہ انہیں ایسا تحقیقاتی کمیشن قبول نہیں جس کا سربراہ حکومتی نمائندہ ہو۔

عدالت سیاسی معاملات میں مداخلت نہیں کر سکتی، عوامی تحریک

دوسری جانب ممکنہ ماورائے آئین اقدام کیخلاف درخواست کی سماعت کے دوران پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ احتجاج کرنا آئینی حق ہے۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Israr Muhammad
16 جنوری, 2013 18:02
موجود خالات میں تمام سیاسی جماعتوں کااس وقت ایک اور دوٹوک موقف اپنانا نہایت هی خوش آئند هے آج کا دن پاکستان کی سیاسی تاریخی کاایک اہم موڑ هےاوراس کیلئےهم تمام سیاسی لیڈروں اورسیول سوسائٹی کے رہنماؤں اورکارکنوں اور میڈیاکو خراج عقیدت اور سلام پیش کرتےهیں اسکےبعد بھی اگرکوئی اپنی هٹ درمی پر قائم رہتا هے تو ؟
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مضبوط ادارے

ریاستی اداروں پر تمام جماعتوں کی جانب سے حملہ تب کیا گیا جب وہ ابتدائی طور پر ہی سہی پر قابلیت کا مظاہرہ کرنے لگے تھے۔

آئینی نظام کو لاحق خطرات

پی ٹی آئی کی سیاست کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ یہ کسی طرح موجودہ آئینی صورت حال میں ممکن سیاسی حل کیلئے تیار نہیں ہے-

بلاگ

عمران خان کے نام کھلا خط

گزشتہ ایک ہفتے کے واقعات پی ٹی آئی ورکرز کی تمام امیدوں اور توقعات کو بچکانہ، سادہ لوح اور غلط ثابت کر رہے ہیں۔

جعلی انقلاب اور جعلی فوٹیجز

تحریک انصاف اور عوامی تحریک کی غیر آئینی حرکتوں کی وجہ سے اگر فوج آگئی تو چینلز ایسی نشریات کرنا بھول جائیں گے۔

!جس کی لاٹھی اُس کا گلّو

ہر دکاندار اور ریڑھی والے سے پِٹنا کوئی آسان عمل نہیں ہوگا شاید یہی وجہ ہے کہ سول نافرمانی کوئی آسان کام نہیں۔

ہمارے کپتانوں کے ساتھ مسئلہ کیا ہے؟

اس بات کا پتہ لگانا مشکل ہے کہ مصباح الحق اور عمران خان میں سے زیادہ کون بچوں کی طرح اپنی غلطی ماننے سے انکاری ہے۔