17 اپريل, 2014 | 16 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کشمیریوں کو ایٹمی حملے کیلئے تیار رہنے کی ہدایات

لائن آف کنٹرول۔ فوٹو رائٹرز۔۔۔

سری نگر: ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر میں حکام نے مکینوں کو ممکنہ ایٹمی جنگ کیلیے تیار رہنے کی وارننگ دیتے ہوئے کہا ہے کہ وہ بم پروف گھر بنانے کے ساتھ ساتھ دو ہفتوں کا پانی اور کھانے پینے کی اشیا جمع کرنے کی ہدایت بھی دی ہے۔

خطے میں اچانک اس ایٹمی حملے کی فی الحال کوئی وجوہات نہیں بتائی گئی ہیں تاہم حال ہی میں دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات اس وقت اس وقت کشیدہ صورتحال اکتیار کر گئے تھے جب لائن آف کنٹرول پر دونوں جانب سے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کی گئی تھی۔

کشمیری پولیس نے یہ پیغام پیر کو گریٹر کشمیر اخبار میں چھپوایا تھا۔

نوٹس میں لوگوں کو مشورہ دیا گیا ہے کہ وہ بم پروف گھر بنانے کے ساتھ ساتھ کھانے پینے کی اشیا بھی جمع کر لیں۔

اس میں اس بات کا بھی مشورہ دیا گیا ہے کہ کیمیائی ہتھیاروں کے حملوں کی صورت میں سک طریقے سے خود کو محفوظ رکھا جا سکتا ہے۔

اس حوالے سے جب مقامی حکام سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے کوئی جواب نہیں دیا۔

اس حصے سے مزید

ہندوستانی انتخابات: پانچویں مرحلے میں پولنگ کا آغاز

اس اہم مرحلے میں حکمران جماعت کانگریس اور اپوزیشن جماعت جی جے پی کئی ریاستوں میں مدِ مقابل ہے۔

ایٹمی ہتھیاروں میں پہل نہ کرنے کی پالیسی برقرار رکھیں گے ، مودی

بے جی پی نے پہلے کہا تھا کہ وہ حکومت بنانے کے بعد انڈیا کی ایٹمی پالیسی پر نظر ثانی اور تبدیلیاں کرے گی۔

ہندوستان میں بس حادثہ، چھ افراد ہلاک

حکام کے مطابق یہ حادثہ بس میں آگ لگنے سے پیش آیا جس میں کم ازکم چھ افراد جھلس کر ہلاک ہوگئے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

جمہوریت، سیکولر ازم اور مذہبی سیاسی جماعتیں

مذہب کے نام پر کوئی متفقہ سیاسی نظام بن ہی نہیں سکتا کیونکہ مذاہب کے درجنوں دھڑے کسی ایک ایشو پر متفق نہیں ہو سکتے۔

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

یکسانیت اور رنگا رنگی

یکسانیت جانی پہچانی بلکہ اطمینان بخش بھی ہوسکتی ہے، لیکن اس کا مطلب ہے چیلنج سے بچنا، جس کے بغیر کامیابی ممکن نہیں۔

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟