27 اگست, 2014 | 30 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

ووٹرز تصدیقی عمل میں فوج کی عدم شمولیت کیخلاف احتجاج

صوبائی الیکشن کے دفتر کے باہر اپوزیشن جماعتوں کا احتجاج پی پی آئی فوٹو

 ڈان نیوز کے مطابق بدھ کے روز کراچی میں صوبائی الیکشن کمیشن کے دفتر کے باہر جماعت اسلامی، ن لیگ،  تحریک انصاف، سنی تحریک، جے یو پی، عوامی تحریک سمیت دیگر اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے احتجاجی دھرنا دیا گیا۔

 اس موقع پر رہنماؤں کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے احکامات کو نظر انداز کرکے ووٹرز کے تصدیقی عمل کو مشکوک بنایا گیا ہ

 مظاہرین کا کہنا تھا کہ چیف الیکشن کمشنر فخر الدین جی ابراہیم نےکراچی میں حلقہ بندیاں نا ہونے کے متعلق بیان دیکر توہین عدالت کی ہے۔

 اپوزیشن جماعتوں کا کہنا ہے کہ شہر میں امن وامان کے قیام کے لئے شفاف انتخابات ناگزیر ہیں۔

 اسکے علاوہ رہنماؤں نے چھبیس جنوری سے تین روز تک الیکشن کمیشن کے دفتر کے باہر احتجاجی دھرنا دینے کا بھی اعلان کیا۔

اس حصے سے مزید

سخت سیکیورٹی میں آرمی چیف کی کراچی آمد

پاک فوج کے سربراہ کی کراچی آمد پر شاہراہِ فیصل کے ساتھ ساتھ سیکیورٹی کے غیر معمولی انتظامات دیکھے گئے۔

کراچی اسٹاک ایکسچینج 514 پوائنٹس تک گر گیا

مارکیٹ میں مسلسل گراوٹ کی وجہ غیر ملکی سرمایہ کاروں کی جانب سے فروخت ہے، اگر یہ سلسلہ نہ رُکا تو مزید مندی کا اندیشہ ہے

متحدہ اور پیپلزپارٹی حکومت سے ’کچھ قربانی‘ کی متقاضی

سید خورشید شاہ سے ملاقات کے بعد فاروق ستار نے کہا کہ حکومت کوچاہیٔے کہ وہ انا چھوڑ کر سیاسی بحران کا حل نکالے۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Israr Muhammad
23 جنوری, 2013 18:42
آجکل ملک کے اندر مک مکا کا بڑا چرچا هے ممکن یہاں بھی مک مکا اثرانداز هوا هو سپریم کورٹ کے احکامات بڑے واضح هیں پھر بھی "مشکل هے" والا جملہ معنی خیز هے اور ساتھ میں یہی جملہ الیکشن کمیشن کی کمزوری بھی ظاہر کرتی هے پہلے سارے ملک میں خلقۂ بندی اور اب خاموشی کیوں
سروے
مقبول ترین
قلم کار

دو کشتیوں کے سوار نواز شریف

نواز شریف کے مطابق اگر ان کو طاقت کے زور پر نکالا گیا تو پاکستان کو سنبھالنا مشکل ہوجائے گا۔

پاکستان میں جمہوریت

کیا جمہوریت پاکستان میں عوام کیلیے ہے یا حکمرانوں کو انتخابات میں دوبارہ منتخب ہونے کی یقین دہانی کیلیے ہے؟

بلاگ

مووی ریویو: ٹین ایج میوٹنٹ ننجا ٹرٹلز

تباہی و بربادی کے سینز، سپر ہیروز اور ایک حسینہ والے کامیاب ثابت شدہ فارمولے فلم کا حصہ رہے۔

تجزیوں کا بخار

گھر کے تمام افراد کو اتنے گروپس میں تقسیم کیا جا سکتا ہے، جتنے کہ تجزیہ کار موجود ہیں۔

بڑے بوٹ اور چھوٹے بوٹ

پاکستانی عوام کا مزاج کہہ لیں اور ہماری سیاسی قوتوں کی کمزوری کے ہر مشکل گھڑی میں نظریں فوج کی جانب ہی اُٹھتی ہیں۔

!ٹی وی پر انقلاب دیکھنا مشکل کام

مارچ دیکھتے رہنے سے دوسرے مسائل پر سے توجہ ہٹ رہی ہے، جو زیادہ شرمناک ہیں اور جن پر کم ہی بات کی جاتی ہے۔