03 ستمبر, 2014 | 7 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

'رحمان ملک، جہانگیر بدر نے توقیر صادق کو فرار کروایا'

سپریم کورٹ آف پاکستان۔ فائل فوٹو۔۔۔
سپریم کورٹ آف پاکستان۔ فائل فوٹو۔۔۔

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے اوگرا کے سابق چیرمین توقیر صادق کے فرار ہونے میں ملوث افراد کیخلاف ایک ہفتے میں ریفرنس دائر کرنے کا حکم دے دیا ہے جبکہ نیب حکام کا کہنا ہے کہ توقیر صادق کو فرار کروانے والوں میں رحمان ملک اور جہانگیر بدر بھی شامل ہیں۔

جمعرات کو سپریم کورٹ کے جسٹس عظمت سعید اورجسٹس جواد ایس خواجہ پرمشتمل بینچ نے کیس کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران عدالت نے اوگرا کے سابق چیرمین توقیر صادق کی عدم گرفتاری پربرہمی کااظہارکیا۔

عدالت نے نیب حکام سے دریافت کیا کہ توقیر صادق کس طرح فرارہوئے جس پرنیب حکام نے انکشاف کیا کہ ان کو فرار کرانے والوں میں رحمان ملک اور جہانگیر بدر کے نام بھی شامل ہیں۔

نیب حکام کا یہ بھی کہنا تھا کہ توقیر صادق کی تقرری کرنے والی کمیٹی کی سربراہی راجہ پرویز اشرف کررہے تھے جن کے خلاف تحقیقات کی جارہی ہیں۔

اس پرعدالت نے ریمارکس دیے کہ جب دستاویزات موجود ہیں تو پھرتفتیش کس بات کی ہورہی ہے۔

نیب کے پراسیکوٹر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ پولیس نے توقیر صادق کو متحدہ عرب امارات میں پکڑا اور پھرچھوڑ دیا۔

اس پرجسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس دیے نیب اتنا معصوم نہیں جتنا بتایا جارہا ہے، پولیس کی ٹیم بغیروارنٹ لیے متحدہ عرب امارات پہنچی تھی۔

جسٹس خلجی عارف نے ریمارکس دیے کہ آپ یہ بیان دے دیں کہ نیب کا موٹو ہی بڑے کرپٹ لوگوں کو نہ پکڑنا ہے۔

ڈائریکٹر نیب کا کہنا تھا کہ توقیر صادق کا تقرر کرنے پر راجا پرویز اشرف کیخلاف تحقیقات جاری ہیں۔

عدالت کا کہنا تھا کہ جب دستاویزات موجود ہیں تو مزید کس چیز کی تفتیش ہورہی ہے۔

اس حصے سے مزید

مناسب خوراک کی کمی اور تھکاوٹ انقلابیوں پر اثرانداز ہونے لگی

یہ بدقسمتی ہے کہ یہ احتجاجی مظاہرین اس طرح کے مضر صحت ماحول میں رہنے پر مجبور ہیں۔

زرغون گیس فیلڈ سے جزوی فراہمی شروع

گیس کے اس ذخیرے کی مقدار 77 ارب مکعب فٹ ہے، یہاں سے پندرہ سال تک روزانہ دو کروڑ مکعب فٹ کی پیداوار حاصل کی جاسکتی ہے۔

برطانیہ کا شہریوں کو پاکستان کے سفر پر انتباہ

سفارت کار، سرکاری وفود اور شہریپاکستان کے اپنے سفر پر نظرثانی کریں، دفتر خارجہ و کامن ویلتھ۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Israr Muhammad
24 جنوری, 2013 18:46
اب مجھے یقین هوگیا هے کۂ واقعی اس کیس میں اندازے سے زیادہ ڈاکها ڈالا گیا هے اور ملک کو زبردست ٹیکہ لگایا گیا اور یۂخبر بھی اب خبر نہیں رہی کۂ خواجہ آصف کو 25کروڑ کی پیشکش هویی هے کیس سے پیچھے هٹنے کیلئے کمال هے اور کمال کے لوگ کمال کے ملک میں
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا'...الجھتے رشتوں کی کہانی

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔