18 اپريل, 2014 | 17 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

'رحمان ملک، جہانگیر بدر نے توقیر صادق کو فرار کروایا'

سپریم کورٹ آف پاکستان۔ فائل فوٹو۔۔۔
سپریم کورٹ آف پاکستان۔ فائل فوٹو۔۔۔

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے اوگرا کے سابق چیرمین توقیر صادق کے فرار ہونے میں ملوث افراد کیخلاف ایک ہفتے میں ریفرنس دائر کرنے کا حکم دے دیا ہے جبکہ نیب حکام کا کہنا ہے کہ توقیر صادق کو فرار کروانے والوں میں رحمان ملک اور جہانگیر بدر بھی شامل ہیں۔

جمعرات کو سپریم کورٹ کے جسٹس عظمت سعید اورجسٹس جواد ایس خواجہ پرمشتمل بینچ نے کیس کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران عدالت نے اوگرا کے سابق چیرمین توقیر صادق کی عدم گرفتاری پربرہمی کااظہارکیا۔

عدالت نے نیب حکام سے دریافت کیا کہ توقیر صادق کس طرح فرارہوئے جس پرنیب حکام نے انکشاف کیا کہ ان کو فرار کرانے والوں میں رحمان ملک اور جہانگیر بدر کے نام بھی شامل ہیں۔

نیب حکام کا یہ بھی کہنا تھا کہ توقیر صادق کی تقرری کرنے والی کمیٹی کی سربراہی راجہ پرویز اشرف کررہے تھے جن کے خلاف تحقیقات کی جارہی ہیں۔

اس پرعدالت نے ریمارکس دیے کہ جب دستاویزات موجود ہیں تو پھرتفتیش کس بات کی ہورہی ہے۔

نیب کے پراسیکوٹر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ پولیس نے توقیر صادق کو متحدہ عرب امارات میں پکڑا اور پھرچھوڑ دیا۔

اس پرجسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس دیے نیب اتنا معصوم نہیں جتنا بتایا جارہا ہے، پولیس کی ٹیم بغیروارنٹ لیے متحدہ عرب امارات پہنچی تھی۔

جسٹس خلجی عارف نے ریمارکس دیے کہ آپ یہ بیان دے دیں کہ نیب کا موٹو ہی بڑے کرپٹ لوگوں کو نہ پکڑنا ہے۔

ڈائریکٹر نیب کا کہنا تھا کہ توقیر صادق کا تقرر کرنے پر راجا پرویز اشرف کیخلاف تحقیقات جاری ہیں۔

عدالت کا کہنا تھا کہ جب دستاویزات موجود ہیں تو مزید کس چیز کی تفتیش ہورہی ہے۔

اس حصے سے مزید

چیئرمین پیمرا، واپڈا عہدوں سے فارغ

وزیراعظم نے چیئرمین واپڈا سے استعفیٰ لیکر ظفر محمود کو نیا چیئرمین مقرر کردیا ہے۔

فیصل رضا عابدی کا استعفیٰ منظور

سینیٹ کے اجلاس میں فیصل نے استعفیٰ ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کو پیش کیا جسے منظور کرلیا گیا ہے۔

تھری، فور جی نیلامی کے لیے چاروں کمپنیاں اہل قرار

دوسری جانب، سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی کی ذیلی کمیٹی نے پی ٹی اے اور حکومت کو نیلامی سے روک دیا۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Israr Muhammad
24 جنوری, 2013 18:46
اب مجھے یقین هوگیا هے کۂ واقعی اس کیس میں اندازے سے زیادہ ڈاکها ڈالا گیا هے اور ملک کو زبردست ٹیکہ لگایا گیا اور یۂخبر بھی اب خبر نہیں رہی کۂ خواجہ آصف کو 25کروڑ کی پیشکش هویی هے کیس سے پیچھے هٹنے کیلئے کمال هے اور کمال کے لوگ کمال کے ملک میں
مقبول ترین
بلاگ

میانداد کا لازوال چھکا

جب بھی کوئی بیٹسمین مقابلے کی آخری گیند پر اپنی ٹیم کو چھکے کے ذریعے جتواتا ہے تو سب کو شارجہ ہی یاد آتا ہے۔

جمہوریت، سیکولر ازم اور مذہبی سیاسی جماعتیں

مذہب کے نام پر کوئی متفقہ سیاسی نظام بن ہی نہیں سکتا کیونکہ مذاہب کے درجنوں دھڑے کسی ایک ایشو پر متفق نہیں ہو سکتے۔

یکسانیت اور رنگا رنگی

یکسانیت جانی پہچانی بلکہ اطمینان بخش بھی ہوسکتی ہے، لیکن اس کا مطلب ہے چیلنج سے بچنا، جس کے بغیر کامیابی ممکن نہیں۔

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے