20 ستمبر, 2014 | 24 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

سرفراز، گل کی بلے بازی کی بدولت پاکستان میچ میں واپس

عمر گل۔ – اے ایف پی فائل فوٹو

ایسٹ لندن: وکٹ کیپر سرفراز احمد اور فاسٹ بالر عمر گل کی شاندار بلے بازی کی بدولت ہفتہ کے روز ساوتھ افریقہ انویٹیشن الیون کیخلاف کھیلے جارہے چار روزہ وارم اپ میچ کے دوسرے دن پاکستان کی کھیل میں واپسی ممکن ہو پائی۔

سرفراز کے ترانوے اور گل کے انچاس رنز نے مجموعی اسکور کو کل کے اسکور ایک سو اٹھتر سات آوٹ سے بڑھا کر تین سو انتیس تک پہنچا دیا۔

اسکے بعد عمر گل نے بہترین بالنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے شروع ہی میں دو وکٹیں حاصل کرکے انویٹیشن الیون کو دباو کا شکار کردیا۔ میزبان ٹیم دوسرے روز کھیل کے اختتام تک سات وکٹوں پر دو سو تیرہ رنز بنانے میں کامیاب رہی۔

جنوبی افریقہ کیخلاف جمعہ سے شروع ہونے والے پہلے ٹیسٹ میچ سے پہلے یہ پاکستان کا واحد وارم اپ میچ ہے۔

پچیس سالہ سرفراز احمد نے، جو سابق انڈر نائینٹین کپتان بھی ہیں اور اس سے پہلے آسٹریلیا کیخلاف ٹیسٹ میں پاکستان کی نمائندگی کرچکے ہیں، عمر گل کیساتھ ساتویں وکٹ کی شراکت میں اکیاسی قیمتی رنز جوڑے۔

حالانکہ سعید اجمل نئی بال لئے جانے کے فوراً بعد ہی پویلین لوٹ گئے تاہم سرفراز نے نویں وکٹ پہ پہلے جنید خان کیساتھ پینتالیس اور پھر آخری وکٹ کیلئے محمد عرفان کیساتھ انچاس رنز کا اضافہ کیا۔ وہ آوٹ ہونے والے آخری کھلاڑی تھے اور ہارمر کی گیند پر باونڈری پر کیچ آوٹ ہوئے۔

سرفراز نے ایک سو اکسٹھ بالوں کا سامنا کیا اور ایک چھکا اور بارہ چوکے لگانے میں کامیاب رہے۔

انویٹیشن الیوں کیجانب سے آف اسپنر ہارمر سب سے کامیاب بالر ثابت ہوئے انہوں نے اٹھاسی رنز دیکر پانچ وکٹیں حاصل کیں۔

بائیں ہاتھ سے بیٹنگ کرنے والے وان وین جارسفیلڈ نے جارحانہ انداز میں کھیلتے ہوئے بیانونے رنز جوڑے اور سعید اجمل کی بالنگ پر ایل بی ڈبلیو آوٹ ہوئے۔

اس حصے سے مزید

سلیکٹرز ون ڈے ٹیم سے یونس خان کے اخراج کے خواہش مند

سلیکٹرز نے ون ڈے ٹیم سے یونس خان کے اخراج پر غوراور مصباح الحق سے ون ڈاﺅن پوزیشن پر کھیلنے کا مطالبہ کیا ہے۔

مشکوک باؤلنگ ایکشن کے لیے سافٹ ویئر درآمد کرنے کا فیصلہ

ڈومیسٹک کرکٹ ہیڈ انتخاب عالم کے مطابق اس سافٹ ویئر سے باؤلرز کے مشکوک ایکشن کی نشاندہی کی جاسکے گی۔

’ورلڈ کپ امیدوں کا محور صرف اجمل نہیں‘

صرف اجمل ہی پوری ٹیم نہیں،ہمیں ایک کھلاڑی پر انحصار نہیں کرنا چاہیے، میانداد


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

رودرہیم کا سبق

بچوں پر ہونیوالے جنسی تشدد پر ہماری شرمندگی کی سمت غلط ہے۔ شرم کی بات تو یہ ہے کہ ہم اس کو روکنے کی کوشش نہ کریں-

رکاوٹیں توڑ دو

اشرافیہ تعلیمی نظام کا بیڑہ غرق کرنے پر تلی ہوئی ہے جو خاص طور سے 1970ء کی دہائی کے بعد سے بد سے بدتر ہورہاہے۔

بلاگ

مووی ریویو: دختر -- دلوں کو چُھو لینے والی کہانی

اپنی تمام تر خوبیوں اور کچھ خامیوں کے ساتھ اس فلم کو پاکستانی نکتہ نگاہ سے پیش کیا گیا ہے۔

پھر وہی ڈیموں پر بحث

ڈیموں سے زراعت کے لیے پانی ملتا ہے، پانی پر کنٹرول سے بجلی پیدا کی جاسکتی ہے اور توانائی بحران ختم کیا جاسکتا ہے۔

شاہد آفریدی دوبارہ کپتان، ایک قدم آگے، دو قدم پیچھے

اس بات کی ضمانت کون دے گا کہ ماضی کی طرح وقار یونس اور شاہد آفریدی کے مفادات میں ٹکراؤ پیدا نہیں ہوگا۔

وارے نیارے ہیں بے ضمیروں کے

ماضی ہو یا حال، اربابِ اختیار و اقتدار کی رشوت اور بدعنوانی کے خلاف کھوکھلی بڑھکوں کی حیثیت محض لطیفوں سے زیادہ نہیں۔