22 اگست, 2014 | 25 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

اوپنرز کی بدولت پاکستانیز کی میچ پر گرفت مضبوط

حفیظ (83) اور جمشید (51) نے ایک مرتبہ پھر شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 142 رنز کی شراکت قائم کی۔ فائل فوٹو رائٹرز۔
حفیظ (83) اور جمشید (51) نے ایک مرتبہ پھر شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 142 رنز کی شراکت قائم کی۔ فائل فوٹو رائٹرز۔

ایسٹ لندن: اوپننگ بلے باز محمد حفیظ اور ناصر جمشید کی میچ میں دوسری سنچری پارٹنرشپ کی بدولت 'پاکستانیز' نے ساؤتھ افریقن انویٹیشن الیون کے خلاف اتوار کو بفالو پارک میں نمایاں برتری حاصل کرلی۔

مہمان ٹیم دن کے اختتام تک پانچ کھلاڑیوں کے نقٓصان پر 240 رنز بنا چکی تھی جبکہ اسے 312 رنز کی مجموعی برتری حاصل ہے۔

حفیظ (83) اور جمشید (51) نے ایک مرتبہ پھر شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 142 رنز کی شراکت قائم کی۔ واضح رہے کہ پہلی اننگز میں بھی دونوں اوپننگ بلے بازوں نے 105 رنز کی شراکت قائم کی تھی۔

حفیظ نے ایک بار پھر جارحانہ بلے بازی کی اور اپنی اننگ میں 13 دلکش چوکے اور ایک چھکا لگایا تاہم وہ پارٹ ٹائم سیمر اسٹیان وان زل کی بال پر آؤٹ ہوگئے۔

اگلے ہی اوور میں جمشید آؤٹ ہوگئے۔ انہوں نے 122 گیندیں کھیلیں جبکہ سات چوکے بھی انکی اننگز میں شامل تھے۔

تاہم ایک مرتبہ پھر پاکستانی مڈل آرڈر مشکلات سے دوچار رہا۔ اظہر علی، یونس خان اور اسد شفیق میچ میں دوسری بار خاطر خواہ کاکردگی دکھانے میں ناکام رہے۔ اس موقع پر کپتان مصباح الحق نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 51 ناقابل شکست رنز جوڑے۔

اوپنرز خصوصاً ناصر جمشید کی شاندار بلے بازی نے سیلیکٹرز کے لیے مشکل کھڑی کردی ہے کہ جعمے کو جوہانسبرگ میں شروع ہونے والے پہلے ٹیسٹ میں اننگ اوپن کون کرے گا۔ واضح رہے کہ توفیق عمر اس چار روزہ میچ میں پیر میں ہوئی انجری کے باعث شرکت نہیں کرسکے تھے۔

یاد رہے کہ توفیق عمر نے 2002-03 کے دورے پر جنوبی افریقہ کے خلاف شاندار بلے بازی تھی جہاں انہوں نے 70 رنز کی اوسط سے مجموعی طور پر 280 رنز بنائے تھے جس میں کیپ ٹاؤن میں اسکور کی گئی سنچری بھی شامل ہے۔

اس حصے سے مزید

زخمی جنید کی جگہ عرفان سری لنکا طلب

ٹیم انتظامیہ نے زخمی جنید خان کے کور کے طور پر عرفان کو بلوانے کی درخواست کی تھی، پی سی بی۔

انڈین کرکٹ کی قسمت بدلنے کیلئے شاستری میدان میں

انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں 1-3 کی شرم ناک شکست کے بعد انڈین بورڈ نے ہیڈ کوچ فلیچر کو سائڈ لائن کر دیا۔

'پاکستان زمبابوے جیسی ٹیموں کیلئے ہی بہتر'

ہم سری لنکا، جنوبی افریقہ اور انگلینڈ جیسی مضبوط ٹیموں کی بجائے صرف کمزور ٹیمیں جیسے زمبابوے کا ہی مقابلہ کرسکتے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مضبوط ادارے

ریاستی اداروں پر تمام جماعتوں کی جانب سے حملہ تب کیا گیا جب وہ ابتدائی طور پر ہی سہی پر قابلیت کا مظاہرہ کرنے لگے تھے۔

آئینی نظام کو لاحق خطرات

پی ٹی آئی کی سیاست کے ساتھ مسئلہ یہ ہے کہ یہ کسی طرح موجودہ آئینی صورت حال میں ممکن سیاسی حل کیلئے تیار نہیں ہے-

بلاگ

عمران خان کے نام کھلا خط

گزشتہ ایک ہفتے کے واقعات پی ٹی آئی ورکرز کی تمام امیدوں اور توقعات کو بچکانہ، سادہ لوح اور غلط ثابت کر رہے ہیں۔

جعلی انقلاب اور جعلی فوٹیجز

تحریک انصاف اور عوامی تحریک کی غیر آئینی حرکتوں کی وجہ سے اگر فوج آگئی تو چینلز ایسی نشریات کرنا بھول جائیں گے۔

!جس کی لاٹھی اُس کا گلّو

ہر دکاندار اور ریڑھی والے سے پِٹنا کوئی آسان عمل نہیں ہوگا شاید یہی وجہ ہے کہ سول نافرمانی کوئی آسان کام نہیں۔

ہمارے کپتانوں کے ساتھ مسئلہ کیا ہے؟

اس بات کا پتہ لگانا مشکل ہے کہ مصباح الحق اور عمران خان میں سے زیادہ کون بچوں کی طرح اپنی غلطی ماننے سے انکاری ہے۔