18 اپريل, 2014 | 17 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی میں فائرنگ اور پر تشدد واقعات، چار ہلاک

کراچی میں نامعلوم نشانہ باز قاتلوں کی کارروائیاں بدستور جاری ہیں۔۔ رائٹرز تصویر

کراچی: کراچی میں فائرنگ اور پر تشدد واقعات میں سیاسی جماعت کے کارکن سمیت مزید چار افراد قتل کردیے گئے۔

کراچی میں نامعلوم نشانہ باز قاتلوں کی کارروائیاں بدستور جاری ہیں۔

گزشتہ شب کھارادر ککری گراونڈ کے قریب سے ایک شخص کی تشدد زدہ ہاتھ پاوں بندھی لاش ملی۔

علاقہ قصبہ کالونی میں فائرنگ سے نوجوان ہلاک ہوگیا۔

نیو کراچی سیکٹر فائیو جی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے سیاسی جماعت کے دو کارکن زخمی ہوئے جن میں سے ایک شخص زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگیا۔

دوسرے زخمی کی حالت بھی تشویشناک بتائی جاتی ہے۔

جبکہ سولجر بازار میں فائرنگ سے ایک شخص ہلاک ہوگیا۔

محمود آباد میں دو گروپوں میں فائرنگ کے تبادلہ میں ایک شخص زخمی ہوگیا۔

اس کے علاوہ بھیم پورہ میں فائرنگ سے ایک شخص زخمی ہوا۔

اس حصے سے مزید

ایم کیو ایم کا کارکنوں کے ماورائے عدالت قتل پر احتجاج

شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے متحدہ کے رہنماؤں نے تحفظ پاکستان آرڈیننس کو کالا قانون قرار دیا۔

علماء و مشائخ کنونشن میں مذہب کے نام پر ناانصافی کی مذمت

کنونشن میں حکومت پر زور دیا گیا کہ وہ ان افراد کے خلاف کارروائی کرے، جو شدت پسندی اور دیگر واقعات میں ملوث ہیں۔

خیرپور میں گیس پائپ لائن دھماکے سے تباہ

پولیس کے مطابق دھماکے کے بعد سندھ کے مختلف شہروں میں گیس کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

میانداد کا لازوال چھکا

جب بھی کوئی بیٹسمین مقابلے کی آخری گیند پر اپنی ٹیم کو چھکے کے ذریعے جتواتا ہے تو سب کو شارجہ ہی یاد آتا ہے۔

جمہوریت، سیکولر ازم اور مذہبی سیاسی جماعتیں

مذہب کے نام پر کوئی متفقہ سیاسی نظام بن ہی نہیں سکتا کیونکہ مذاہب کے درجنوں دھڑے کسی ایک ایشو پر متفق نہیں ہو سکتے۔

یکسانیت اور رنگا رنگی

یکسانیت جانی پہچانی بلکہ اطمینان بخش بھی ہوسکتی ہے، لیکن اس کا مطلب ہے چیلنج سے بچنا، جس کے بغیر کامیابی ممکن نہیں۔

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے