20 اگست, 2014 | 23 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی میں پرتشدد واقعات جاری، سات ہلاک

کراچی میں تعینات پولیس۔ فائل فوٹو

کراچی: کراچی میں قتل و غارت کا سلسلہ جاری ہے جس کے نتیجے میں مزید سات ہلاک ہوگئے۔

کراچی میں لسبیلہ پل کے قریب دہشت گردوں کی فائرنگ سایک شخص ہلاک ہوگیا۔ ہلاک ہونے والا نوجوان مجلس وحدت المسلمین کا کارکن تھا۔

واقعہ کے بعد علاقہ مکین سڑک پر نکل آئے اور احتجاج کیا۔

اس دوران کاروبار اور دکانیں بھی بند ہوگئیں اور علاقے میں فائرنگ کا سلسلہ بھی شروع ہوگیا۔

فائرنگ کی زد میں آکر دیگر چار افراد زخمی ہوگئے جبکہ ۔زخمی ہونے والا ایک شخص نجی اسپتال میں دوران علاج دم توڑ گیا۔

احتجاج کے باعث لسبیلہ پل سے گولی مار جانے والی سڑک ٹریفک کے لیے بند کردی گئی جس کے بعد پولیس اور رینجرز کی اضافی نفری طلب کرکے تعینات کردی گئی۔

تاہم علاقے میں صورتحال کشدگی برقرار ہے۔

دوسری جانب سولجر بازار کے دکانداروں نے تھانے کےباہر احتجاج کیا۔

مظاہرین نے پولیس کے خلاف نعرے بازی کی۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ موٹر سائیکل سوار ملزمان نے پولیس کی موجودگی میں دودھ فروش کو گولیوں کا نشانہ بنایا اور وہاں موجود افراد نے تعاقب کے بعد ایک ملزم کو پکڑ لیا جسے پولیس چھڑا کر لے گئی۔

مظاہرین نے  مطالبہ کیا کہ ملزم کو ان کے حوالے کیا جائے۔

دوسری جانب بھینس کالونی میں فائرنگ سے ایک شخص ہلاک ہوگیا۔

سہراب گوٹھ جمالی گوٹھ میں سیکیورٹی گارڈ جبکہ نرسری پر ڈاکوؤں کی فائرنگ سے ایک شخص ہلاک اور پیرآباد سیکٹر فور ای میں فائرنگ سے سیاسی جماعت کا کارکن ہلاک جبکہ اسکے دو بھائی زخمی ہوگئے۔

ادھر گلشن اقبال میں پولیس نے کارروائی کرکے دو مبینہ بھتہ خوروں کو گرفتار کرکے اسلحہ برآمد کرنے کا دعوی کیا ہے۔

اس حصے سے مزید

کراچی: دو بچوں میں پولیو وائرس کی تصدیق

محکمہ صحت کے مطابق پاکستان میں رواں برس پولیو کیسز کی تعداد سترہ ہوگئی ہے، جن میں کراچی کے کیسز کی تعداد دس ہے۔

سیاسی بے یقینی سے کراچی اسٹاک ایکسچینج بھی متاثر

ہفتے کے دوسرے روز آج مارکیٹ میں صرف دو کروڑ شیئرز کا کام ہوا ہے اور دیکھو اور انتظار کرو کی صوتحال نظر آرہی ہے۔

'عمران خان ریڈ زون میں داخلے کے فیصلے پر نظرِ ثانی کریں'

ایم کیو ایم کے قائد نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ملک کی سلامتی اور عوام کی فلاح تمام تر اختلافات سے بالاتر ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

نمبروں کی غلط فہمی

یہ ایک افسوسناک بات ہے کہ سوئس بینک میں رقم کے بارے میں ایک بالکل بے تکا اندازہ اتنے عرصے سے خبروں میں گردش کررہا ہے۔

اگر مگر سے کام نہ لیں

مسلم لیگ ن کے پاس کھونے کے لیے سب سے زیادہ چیزیں ہیں، اس لیے امید ہے کہ دانشمندی سے کام لیا جائے گا۔

بلاگ

انقلاب کو میرے لان سے ہٹاؤ

اسلام آباد کے رہائشی اس بات کو قبول نہیں کریں گے، کہ انقلابی ان کے لان میں ڈیرے ڈال کر بیٹھ جائیں۔

انقلاب کا ترپ پتّہ

اگر اسمبلی یا وزیراعظم ہاؤس میں چند ہزار کارکن گھسا کر ہی حکومت میں آنا ہے تو پھر ملک میں انتخابات کروانے کا کیا فائدہ

تماشا، تماشائی اور مداری

ہم مڈل کلاس لوگ بھی عجیب ہیں، بڑے ہی نہیں ہوتے، ہوبھی جایئں تو کھلونوں سے بہل جاتے ہیں۔ یونہی تماشا دیکھتے رہتے ہیں۔

مووی ریویو: '‫سنگھم ریٹرنز' کا جادو سنگھم جیسا نہیں

ایک ڈائریکٹر کی حیثیت سے روہت شیٹھی نے خاصا معقول کام کیا ہے اور ناظرین کو مراٹھی ڈائیلاگز و اسٹائل سے محظوظ کرایا ہے۔